اسلام آباد، لاہور (نمائندہ خصوصی،سٹاف رپورٹر، نمائندہ خصوصی سے ، سپیشل رپورٹر ) الیکشن سے قبل بیوروکریسی میں اعلیٰ سطح پر تقرر و تبادلوں کا جھکڑ چل گیا، چاروں صوبائی چیف سیکرٹریز اور آئی جی پولیس تبدیل کر دئے گئے ۔ نگران وزیراعظم جسٹس (ر) ناصر الملک کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں اعلیٰ سطح پر تقرریوں اور تبادلوں کی منظوری دی گئی۔نگران وفاقی کابینہ کے اجلاس سے قبل وزیراعظم ناصرالملک اور چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ کے درمیان ملاقات بھی ہوئی جس میں اچھی شہرت کے حامل افسران کی تقرریوں پر اتفاق کیا گیا۔وفاقی کابینہ کی منظوری کے بعد بیورو کریسی میں اعلیٰ سطح پر تقرر و تبادلوں کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے ۔نوٹیفکیشن کے مطابق اکبر حسین درانی پنجاب، اعظم سلیمان خان سندھ، نوید کامران بلوچ خیبر پختونخوا اورڈاکٹر اختر نذیر بلوچستان کے چیف سیکرٹری ہوں گے ۔ نوٹیفکیشن کے مطابق انسپکٹر جنرل (آئی جی ) پولیس سندھ اے ڈی خواجہ کی جگہ امجد سلیمی کو نیا آئی جی لگانے کی منظوری دی گئی ہے ۔ پنجاب میں عارف نواز کی جگہ ڈاکٹر سیدکلیم امام کو آئی جی پولیس تعینات کیا گیا ہے ۔ خیبرپختونخوا میں صلاح الدین محسود کاتبادلہ کرکے محمد طاہر کو نیا آئی جی پولیس تعینات کیا گیا ہے جبکہ آئی جی بلوچستان معظم جاہ انصاری کی جگہ محسن بٹ کو آئی جی پولیس تعینات کردیا گیا ہے ۔ جودت ایاز کو اسلام آباد کا چیف کمشنر اور جان محمد کو آئی جی اسلام آباد لگادیا گیاہے ۔پہلے سے تعینات آئی جیز اور چیف سیکرٹریز کو او ایس ڈی بنا دیا گیا۔ کابینہ کے اجلاس سے قبل نگران وزیراعظم نے نگران وزیراعلی پنجاب حسن عسکری رضوی، وزیراعلی سندھ فضل الرحمن ،وزیراعلی خیبر پختوانخوا جسٹس (ر)دوست محمد خان اور وزیراعلی بلوچستان علاؤالدین مری کے ساتھ عام انتخابات کے انعقاد میں شفافیت لانے ، امن و امان کا قیام یقینی بنانے پر بھی مشاورت کی تھی ۔ ادھر الیکشن کمیشن کو انتظامی افسروں کی فہرستیں پیش کر دی گئی ہیں ۔چیف سیکرٹریز اور آئی جیز کے بعد دوسرے مرحلے میں انتظامی افسران کو ادھر ادھر کیا جائے گا۔ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت اور الیکشن کمیشن کے مابین آئندہ عام انتخابات میں شفافیت کے عمل کو غالب رکھنے کیلئے صوبائی انتظامی سیکرٹریز، ڈویژنل کمشنرز، ڈپٹی کمشنرز کو تبدیل کر نے پر اتفاق رائے ہو گیا ہے ۔ ذرائع نے بتا یا کہ الیکشن کمیشن کی جانب سے پنجاب سمیت چاروں صوبائی حکومتوں سے افسروں کی فہرستیں طلب کی گئیں جوفراہم کر دی گئی ہیں۔ واضح رہے آئی جی پنجاب تعینات ہونے والے ڈاکٹر سید کلیم امام کا شمارانتہائی پڑھے لکھے ،قابل اور پروفیشنل پولیس افسران میں ہوتا ہے ۔ انہوں نے سیاسیات اور انٹرنیشنل ریلیشنز میں پی ایچ ڈی کے علاوہ برطانیہ سے ایل ایل ایم اور فلسفہ میں ماسٹر ڈگری حاصل کی ۔ وہ بطور ایس پی سبی ، نصیر آباد ، ایس ایس پی کوئٹہ ، راولپنڈی ، اسلام آباد ، ایف آئی اے امیگریشن کے ساتھ ساتھ چیف سکیورٹی آفیسر برائے وزیر اعظم ، ڈائریکٹر نیشنل پولیس بیورو ، آئی جی اسلام آباد ، آئی جی نیشنل ہائی ویز اور موٹروے پولیس کے علاوہ یو این او مشن کے تحت سوڈان کے علاقے دارفر میں بطور پولیس کمشنر بھی ذمہ داریاں سر انجام دیتے رہے ہیں ۔انہیں اعلی خدمات پر اقوام متحدہ کی جانب سے تین امن ایوارڈز جبکہ قائد اعظم پولیس میڈل، صدارتی ایوارڈ اور تمغہ امتیاز سے نوازا گیا ۔نجی ٹی وی کے مطابق چیف سیکرٹری بلوچستان اخترنذیرنے عہدے کا چارج سنبھال لیا ہے ۔