واشنگٹن ( ندیم منظور سلہری سے ) صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان کی ملاقات کے بارے میں ٹرمپ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ دونوں ر ہنماؤں کے درمیان بات چیت حوصلہ افزا رہی ہے ۔ مبصرین کا کہنا ہے کہ 38 منٹ کی یہ ملاقات کو کامیاب تو کہا سکتا ہے لیکن یادگار نہیں کیونکہ دونوں اطراف میں بد اعتمادی کی فضا قائم ہے ۔ریپبلکن سینٹر لینڈسی گراہم کا کہنا ہے کہ صدر ٹرمپ شمالی کوریا کے ساتھ کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کرینگے لہذا ہمارے پاس صرف دو آپشنز ہیں امن یا جنگ ۔ سینٹر باب مینڈیز کا کہنا ہے کہ امن کیلئے آخری حد تک کوششیں کی جانی چاہیئے ۔ اس صورتحال میں سب سے بڑا کھلاڑی جو باہر سے کھیل میں شریک ہے وہ یقیناً چین ہے چین کئی دہائیوں سے شمالی کوریا کا اقتصادی معاون رہا ہے ۔