واشنگٹن ( ندیم منظور سلہری سے ) ٹرمپ اور کم جونگ ملاقات کی بازگشت واشنگٹن میں ابھی جاری ہے ، بظاہر ڈیموکریٹک حلقے مشترکہ اعلامیہ پر متفق نظر نہیں آتے جبکہ ریپبلکن کا کہنا ہے کہ امریکہ نے ایک یادگار فیصلہ کیا ہے ۔ ڈیموکرٹیک سینیٹروں کا کہنا ہے کہ ٹرمپ نے گھاٹے کا سودا کیا ہے ۔ ریپبلکن سینٹر میچ میکونیل نے کہاہے صدر ٹرمپ مبارکباد کے مستحق ہیں کہ انہوں نے وہ کام کر دکھایا جو کسی کے بس میں نہیں تھا۔ ڈیموکرٹیک سینٹر چک شومر نے کہا ہے مشترکہ اعلامیہ میں نہ تو کوئی ٹائم ٹیبل دیا گیا ہے اور نہ ہی کوئی نکات واضح کئے گے ہیں۔ سینٹر باب مینیڈیز کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا کے حوالے سے اتنی کمزور پالیسی کبھی پہلے نہیں دیکھی گئی تھی۔ ڈیموکریٹک سینیٹروں نے کہا ہے کہ صدر کم جونگ ان نے صدر ٹرمپ کو کوئی گارنٹی دئیے بغیر مذاکرات کر کے بہت بڑی کامیابی حاصل کی ہے ۔اگر امریکہ شمالی کوریا کے جوہری پروگرام کو مکمل طور پر ختم کرنے میں کامیاب نہ ہوا تو کم جونگ کے لئے یہ ہی بہت بڑی کامیابی ہو گی۔