لاہور(سپورٹس رپورٹر )پاکستان فٹبال فیڈریشن ہیڈ کوارٹرز پر انجینئر اشفاق گروپ کے قبضہ کا شاخسانہ ،عالمی فٹبال تنظیم فیفا نے پاکستان فٹبال فیڈریشن کی رکنیت معطل کر دی۔معطلی کا فیصلہ لاہور میں واقع فیڈریشن کے ہیڈ کوارٹرز پر انجینئر اشفاق گروپ کے قبضہ اور وارننگ پر عمل درآمد نہ کرنے پر کیا گیا۔ فیفا قوانین کے مطابق کسی ملک کی حکومت یا کوئی گروپ فیفا سے الحاق شدہ فیڈریشن میں مداخلت نہیں کر سکتا۔ قبل ازیں دو متحارب گروپوں فیصل صالح حیات گروپ اور انجینئر اشفاق گروپ کی جانب سے متوازی گروپ بنانے کی وجہ سے فیفا نے فیڈریشن کے عہدیداروں کو معطل کر کے چارج اپنے قوانین کے مطابق نارملائزیشن کمیٹی کے حوالہ کیا تھا اور اسے فیڈریشن کے انتخابات کرانے کی ذمہ داری سونپی تھی جو 19ماہ میں انتخاب نہ کرا سکی۔ حکومتی ارکان کے حمائت یافتہ انجینئر اشفاق گروپ نے دو ہفتہ قبل نارملائزیشن کمیٹی پر عدم اعتماد کرتے ہوئے فٹبال فیڈریشن ہیڈ کوارٹرز پر قبضہ کر لیا تھا۔ اس سلسلے میں فیفا نے باقاعدہ تحریری حکم نامہ جاری کردیا ہے ۔ جس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان فٹبال فیڈریشن نارملازیشن کمیٹی کو اختیارات کی واپسی تک پاکستان کی رکنیت معطل رہے گی۔۔ فیفا کی پی ایف ایف پر پابندی سے پاکستان کئی ایونٹ سے باہر ہوجائے گا۔ سابق کپتان پاکستان فٹبال ٹیم عیسی خان نے کہا ہے کہ فٹبال ہاؤس پرقبضے کے بعد پابندی تو لگنا تھی ، نارملائزیشن کمیٹی کا قصور ہے کہ وہ الیکشن نہیں کراسکی۔ فٹ بالر کلیم اﷲ،قومی ویمن فٹ بالر فاطمہ انصاری نے کہا کہ صورتحال کا سب سے زیادہ نقصان قومی فٹبالرز اور پاکستان کے امیج کا ہے ۔ معاملے کا بیٹھ کر حل نکالا جائے ۔