واشنگٹن (نیٹ نیوز)امریکی تاریخ کی پہلی نائب خاتون صدر بننے والی کملا ہیرس فروری میں شہرہ آفاق فیشن میگزین 'ووگ' کے سرورق کی زینت بنیں گی ۔عہدہ سنبھالنے سے قبل ہی ان کی جانب سے 'ووگ' کیلئے کرائے گئے فوٹو شوٹ پر فیشن میگزین کو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ۔امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے اپنی رپورٹ میں لکھا کملا ہیرس کی جانب سے 'ووگ' کیلئے کرائے گئے فوٹوشوٹ کی تصاویر سامنے آنے کے بعد میگزین پر نائب امریکی صدر کی انتہائی ناقص کوالٹی کی تصاویر کھینچنے کا الزام عائد کیا گیا۔برطانوی اخبار دی گارجین نے بتایا کمالا ہیرس کی تصاویر سامنے آنے کے بعد لوگوں نے 'ووگ' پر جان بوجھ کر نائب امریکی صدر کا فوٹوشوٹ غیر معیاری بنانے کا الزام عائدکیا۔برطانوی اخبار ڈیلی میل نے اپنی رپورٹ میں لکھا کملا ہیرس کی تصاویر سامنے آنے کے بعد کئی افراد نے 'ووگ' پر الزام عائد کیا کہ انہوں نے نائب امریکی صدر کی رنگت بھی گوری کردی۔'ووگ' کیلئے فوٹوشوٹ میں کملا ہیرس کو سادہ لباس میں دیکھا جا سکتا ہے تاہم ان کی رنگت سیاہ فام یا گہری کے بجائے گوری یا سفید دکھائی دے رہی ہے ۔