دبئی (مانیٹرنگ ڈیسک )سابق صدر پرویز مشرف نے کہا ہے کہ میں نے پاکستان جانے کا فیصلہ ابھی نہیں کیا۔خلیجی اخبار کو انٹرویو میں انہوں نے کہا پاکستان جانے یا نہ جانے کا فیصلہ چند روز میں کروں گا،پاکستان جانے کا سوال کروڑوں ڈالر کا ہے ،پاکستان واپسی کے محرکات پر ابھی غور کررہا ہوں،رکاوٹیں ختم ہوجائیں تو واپس جاسکتا ہوں،میری واپسی میں بہت سے امور حائل ہیں،مجھے گرفتار نہ کیا جائے ، ملک کے اندر اور باہر جانے پر پابندیاں نہ ہوں، جنرل (ر) اسد درانی محب وطن پاکستانی ہیں، میرا نہیں خیال کہ فوج عمران خان کی حمایت کررہی ہے ،نوازشریف اور آصف زرداری ماضی کے اقدامات کی وجہ سے فوج کو پسند نہیں، میں نے ہمیشہ پاکستان کی خود مختاری اور مفاد کو ترجیح دی، واجپائی اورمن موہن سنگھ پاکستان کے ساتھ مذاکرات کے خواہش مند تھے ۔