BN

آصف محمود


یوسف رضا گیلانی یا حفیظ شیخ؟


اسلام آباد کی نشست سے کون کامیاب ہو گا؟ یوسف رضا گیلانی یا حفیظ شیخ؟ اور اگر یوسف رضا گیلانی کامیاب ہوتے ہیں تو اس کامیابی کے اثرات کیا سینیٹ تک ہی محدود رہیں گے یا عمران خان کی وزارت عظمی بھی اس کی لپیٹ میں آ سکتی ہے؟ دستیاب ووٹوں کے اعتبار سے حفیظ شیخ کا پلڑا بھاری ہے لیکن معاملہ یہ ہے کہ قانون اراکین پارلیمان کو یہ اجازت دیتا ہے کہ وہ چاہیں تو اپنی جماعت کے امیدوار کو ووٹ دیں اور چاہیں تو کسی اور دے لیں ان پر کوئی پابندی نہیں ۔سپریم کورٹ کو بھیجے گئے
پیر 01 مارچ 2021ء

ڈسکہ میں دوبارہ الیکشن: خرچے عوام کیوں برداشت کریں؟

هفته 27 فروری 2021ء
آصف محمود
الیکشن کمیشن نے حکم دیا، ڈسکہ میں ضمنی انتخاب دوبارہ ہو گا۔جان کی امان پائوں تو پوچھوں : کس کے خرچے پر ہو گا؟ اخراجات کون برداشت کرے گا؟ بجلی گیس کے بلوں ، پٹرول اور جانے کس کس مد میں عوام کی رگوں سے لہو نچوڑ کر، کیا اس لیے وسائل اکٹھے کیے جاتے ہیں کہ اداروں میں ایک ضمنی انتخاب کرانے کی اہلیت نہ ہو، تو اس نا اہلی کے تاوان میں برباد کر دیے جائیں؟ الیکشن دو بار نہیں ، دو سو بار کرائیے لیکن اتنا بتا دیجیے کہ اس کے اخراجات غریب عوام کیوں برداشت کرے؟ جن
مزید پڑھیے


مارگلہ پر بہار نہیں،پولن آتی ہے

جمعرات 25 فروری 2021ء
آصف محمود
بہار آتی ہے تو اسلام آباد کے راستے پھولوں سے اور ہسپتال مریضوں سے بھر جاتے ہیں۔ پولن الرجی کا یہ عذاب ہمارے فیصلہ سازوں کے فکری افلاس کا تاوان ہے،جو آج ہم ادا کر رہے ہیں،کل ہماری نسلوں کو ادا کرنا ہو گا۔ اسلام آباد سے پہلے مارگلہ کے پہاڑ خشک اور ویران نہ تھے۔ پرانی تصاویر آج بھی دستیاب ہیں، دیکھا جا سکتا ہے، ان میں وہی حسن تھا، جو پوٹھوہار کے باقی پہاڑوں میں ہے۔غیر ملکی ماہرین شہر کی پلاننگ کر رہے تھے ، انہیں مقامی تہذیب کا کچھ علم نہ تھا ۔ایوب خان صاحب فیصلہ ساز تھے
مزید پڑھیے


موٹر وے : جانوروں کی خونی لکیر

منگل 23 فروری 2021ء
آصف محمود
لائن آف کنٹرول انسانی المیے کا عنوان ہے اور موٹر وے جنگلی جانوروں کے دکھوں کا عنوان۔کیسا لمحہ ہجرت تھا ، ایک سڑک بنی اور صدیوں سے پہاڑوں میں سفر کرتے جانور بٹ کر رہ گئے۔ جو اِدھر رہ گئے وہ اُدھر نہ جا سکے اور اُدھر والے پھر اس پار نہ آسکے۔ سڑک کے کناروں پر خاردار تاریں لگا دی گئیں بے زبان مخلوق پر ایک قیامت بیت گئی۔ مارگلہ سے گزرتی سڑک کا دکھ تو گاہے بے چین کر دیتا تھا لیکن کبھی خیال تک نہ آیا کہ موٹر وے نے پوٹھوہار کے جانوروں پر کیا ظلم ڈھائے ہیں۔برادرم
مزید پڑھیے


مارگلہ کی جڑی بوٹیاں :ایک طبی خزانہ

هفته 20 فروری 2021ء
آصف محمود
بچپن میں ایک نظم پڑھی تھی ، نندیا پور۔اس کے سحرسے آج تک نہیں نکل پایا۔ندی سی اک نکلتی ہے جہاں سے اور جنگل میں ہے بڑھیا کا گھر۔ یہ ندی اور بڑھیا کے اس گھر کے تصور میں بچپن بیت گیا۔ پھر ایک روز مارگلہ کی ندی سے گزر کر پگڈنڈی پر چلتے چلتے سچ مچ میں ایک بڑھیا کا گھر آ گیا۔ وادی میں پھیلے جنگل کے اس اکیلے گھر میںمس مصرو رہتی تھی۔مس مصرو کا انتقال ہوا،تو سی ڈی اہلکاروں نے اس کی جھونپڑی کو مسمار کر دیا۔ حالانکہ تھوڑی سی عقل اور ذوق ہوتا تو جنگل
مزید پڑھیے



رملی : ندی سی اک نکلتی ہے جہاں سے

جمعرات 18 فروری 2021ء
آصف محمود
فروری کی دھوپ میں جھیل کنارے بیٹھا تھا ۔ پانیوں پر تیرتے اس سناٹے میں رملی ندی یاد آگئی۔ جس کے کنارے پھولوں سے بھرے رہتے تھے اورساون جس کی مٹی میں بادل گوندھ دیتا توسوندھی سی مہک پورے جنگل میں پھیل جاتی ۔ پتھریلی ندی پھر ہرن کے حیران بچے کی طرح اس وادی میں دوڑ تی پھرتی۔یادوں نے ہجوم کیا تو میں جھیل سے اٹھا اوروادی رملی کی طرف چل پڑا جہاں مارگلہ کے سارے موسموں کی خوشبو کا بسیرا ہوتا تھا۔ رملی وادی اور میرے بیچ بیس سالوں کی مسافت حائل ہو چکی تھی لیکن کسی
مزید پڑھیے


اہل علم کو بولنے دیجیے!

منگل 16 فروری 2021ء
آصف محمود
کبھی آپ نے سوچا ہماری جامعات میں ایک فکری جمود سا کیوں طاری ہے؟ جدید دنیا میں نئی تحقیقات یونیورسٹیوں میں ہو رہی ہیں۔آئے روز کوئی تحقیق پڑھنے کو ملتی ہے اور معلوم ہوتا ہے یہ فلاں یونیورسٹی کی تحقیق ہے۔ کورونا پر بھی ان جامعات میں مسلسل علم و تحقیق کا کام ہو رہا ہے اور روز کوئی نئی بات سامنے آتی ہے تو پتا چلتا ہے یہ فلاں تعلیمی ادارے کی تحقیق کے نتائج ہیں۔ سوال یہ ہے کہ ایسا تحقیقی کام ہماری جامعات میں کیوں نہیں ہو رہا ؟ ہمارے ادارے فکری جمود کا شکار کیوں ہیں؟
مزید پڑھیے


مارگلہ نیشنل پارک : ایسا ہنگامہ ہے کیوں جنگل میں؟

پیر 15 فروری 2021ء
آصف محمود
مارگلہ کی پہاڑیوں کو نیشنل پارک کادرجہ تو دے دیا گیا لیکن کیا ہمیں کچھ معلوم بھی ہے کہ نیشنل پارک کا مطلب کیا ہوتا ہے اور اس کے تقاضے کیا ہوتے ہیں؟نیشنل پارک کے ساتھ کیا ایسے ہی وحشیانہ سلوک کیا جاتا ہے جو ہم مارگلہ کے ساتھ کر رہے ہیں؟ مارگلہ کے پہاڑوں کا یہ قریب چالیس کلومیٹر کا علاقہ ہے جسے اسلام آباد وائلڈ لائف آرڈی ننس 1979 کے ذریعے نیشنل پارک کی حیثیت دیتے ہوئے جنگلی حیاتیات کے لیے ’’ جائے امان‘‘ قرار دیا گیا ۔ آج چار دہائیوں بعد سوال یہ ہے کہ کیا اس نیشنل
مزید پڑھیے


کیا عمران کا اصل چیلنج ان کی کابینہ ہے؟

هفته 13 فروری 2021ء
آصف محمود
کہیں ایسا تو نہیں کہ عمران خان کے اصل دشمن ان کی اپنی کابینہ ہی میں کہیں چھپے بیٹھے ہوں؟ عمران خان نے سیاست کے روایتی کرداروں کو ایک عرصہ ہدف ملامت بنائے رکھا ، ایسا نہ ہو کہ سیاست کے یہی کردار ان کے وزیر مشیر بن کر ان سے غلط فیصلے کروا رہے ہوں اور رات کو کسی کلب میں آپس میں مل بیٹھتے ہوں تو قہقہے لگاتے ہوں کہ بڑا آیا غیر روایتی سیاست دان، دیکھا کیسے پھنسا یا ۔ عمران خان کا سیاسی بیانیہ روایتی سیاسی کرداروں کی نفی پر کھڑا ہے۔ حصول اقتدار کی خاطر اگر
مزید پڑھیے


منیرہ یامین ستی بنام پنجاب اسمبلی

منگل 09 فروری 2021ء
آصف محمود
کورونا کے مرض میں مبتلا رکن صوبائی اسمبلی محترمہ منیرہ یامین ستی نے بستر مرض سے سپیکر پنجاب اسمبلی کو ایک خط لکھا۔ یہ خط جب اسمبلی میں پڑھ کر سنایا گیا تو منیرہ یامین ستی صاحبہ کا انتقال ہو چکا تھا۔ کوئی اور معاشرہ ہوتا تو ایک بھونچال آ جاتا لیکن ہمارے معزز اراکین اسمبلی نے خط سنا ، ایک لمحے کو جذباتی ہو کر پلکیں بھگوئیں ، آنسو پونچھے او ر پھر اپنے اپنے گھروں کو لوٹ گئے جیسے کچھ ہوا ہی نہیں۔ منیرہ یامین ستی کا تعلق مسلم لیگ ن سے تھا لیکن بستر مرگ سے انہوں نے
مزید پڑھیے