BN

اوریا مقبول جان

بھارت کے شام بننے کا خوف

بدھ 20 جون 2018ء
یہ زبان تو اقوام متحدہ کی لگتی ہی نہیں، یہ اچانک کیا ہو گیا، محوِ حیرت ہوں کہ جس ایوان میں کشمیر کا ذکر زبان پر لانا ناممکن سا ہو گیا تھا اس عالمی ادارے کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر کے دفتر سے 14جون 2018ء کو پچاس صفحات پر مشتمل ایک رپورٹ جاری ہوئی ہے۔ جس کا عنوان ہے "Report on the situation of human Rights in Kashmir"یہ رپورٹ جون 2016ء سے لے کر اپریل 2018ء تک کی ہے۔ 8جولائی 2016ء کو برہان الدین وانی کی شہادت سے لے کر تازہ ترین پرتشدد واقعات تک یوں تو یہ رپورٹ
مزید پڑھیے


قومی ریاستوں کے بت اور چاند کا اختلاف

جمعه 15 جون 2018ء
عید یا رمضان آنے سے چند دن قبل ماہرین فلکیات کی جانب سے ایک نقشہ گردش کرنے لگتا ہے کہ چاند کی عمر کس ملک کی سرحد پر کتنی ہو گی اور وہ کس ملک میں واضح نظر آئے گا اور کس ملک میں اس کے آسمان پر دکھائی دینے کے آثار بہت کم ہیں۔ مسجدوں میں بیٹھے ہوئے وہ علماء امام اور پوری دنیا میں پھیلے ہوئے فقیہہ جو اس امت کو ایک جسد واحد کہتے ہیں‘ جن کی تقریروں کی شعلہ بیانیاں مراکش سے لے کر برونائی تک ملکوں ملکوں بسنے والے کلمہ گو مسلمانوں کو ایک امت
مزید پڑھیے


چشم مسلم دیکھ لے تفسیر حرف ’’یَنسلْون‘‘

بدھ 13 جون 2018ء
ڈیڑھ ارب مسلمانوں کے اس جم غفیر کو اس بات کا اندازہ تک نہیں کہ 1920 سے جو یہودی یورپ اور امریکہ سے اپنی پرآسائش زندگی چھوڑ کر بحر طبریہ کے کنارے وسیع و عریض صحرا میں آباد ہونا شروع ہوئے تھے۔ وہ اس وقت آسمان کی فضاؤں میں موجود دنیا کی سب سے بڑی جاسوسی کرنے والی قوت "Espionage Power"بن چکے ہیں۔ پوری دنیا میں بسنے والے سات ارب سے بھی زیادہ انسان ان کی براہ راست نگرانی میں ہیں۔ پہلی جنگ عظیم میں جنم لینے والی جاسوسی یا خفیہ ایجنسیاں جو دوسری جنگ عظیم کے بعد بہت زیادہ
مزید پڑھیے


اجنبی ہونے کے دن قریب ہیں

پیر 11 جون 2018ء
ایک وسیع و عریض ہال میں جمع ہونے والے اٹھارہ ہزار پرجوش مردوزن سے وہ انتہائی جوشیلے اور پرعزم لہجے میں گفتگو کر رہا تھا۔ ایک بڑے سٹیج کے پیچھے ایک دیوقامت سکرین تھی جس پر کبھی کبھی اس کے اشارہ ابرو پر سلائیڈ چلنا شروع ہو جاتیں۔ ایسی ہی ایک سلائیڈ پر دنیا کا نقشہ بنا ہوا تھا۔ اس میں اکثر ممالک میں نیلا رنگ بھرا ہوا تھا جبکہ باقی ممالک سرمئی رنگ کے تھے۔ اس نے نقشے کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا، کہ اب ہم دنیا کی ترقی و خوشحالی کیلئے ایک ضرورت بن چکے ہیں۔ آج
مزید پڑھیے


شرمندہ قوم کے شرمندہ دانشور

جمعه 08 جون 2018ء
وہ خدائے بزرگ و برتر، مالک کون و مکاں جس نے اس کائنات کو خلق کیا، پھر اسے زمین پر اتارے جانے والے خلیفہ فی الارض کے لیے مسخر کیا، اسی نے اس خلیفہ کی ہدایت اور رہنمائی کے لیے ہر قوم اور علاقے میں اپنے نبی اور رسول بھیجے، صحیفے نازل کئے، پھر اس دنیا کے اختتام سے قبل آخری نبی سید الانبیاء رسول مکرم حضرت محمد مصطفی ﷺکو مبعوث کیا اور رہتی دنیا تک قرآن کو کتاب ہدایت کے طور پر نازل کیا۔ وہ جو دلوں کے بھید خوب جانتا ہے اور دلوں میں گھس جانے والے
مزید پڑھیے


اسلام سے بغض و حسد کی آگ میں جلنے والے

بدھ 06 جون 2018ء
دنیا بھر میں بہت سے لوگ خصوصاََ سیکولر، لبرل، آزاد منش اور اسلام سے خصوصی بغض و عناد رکھنے والے دانشور ایک عجیب و غریب جلن اور کڑھن میں مبتلا رہتے ہیں۔ انہیں مسجدوں کی طرف ذوق و شوق سے جاتے ہوئے لوگ اچھے نہیں لگتے، روزانہ حرم پاک و مسجد نبوی میں بڑھتی ہوئی زائرین کی تعداد ان کے دلوں پر چھریاں چلاتی ہے، یہاں تک کہ انہیں عید قرباں پر لوگوں کا ایک اشتیاق کے ساتھ جانور خرید کر سنت ابراہیمی ادا کرنا بھی سخت برا لگتا ہے۔ اپنی اس جلن، کڑھن اور اسلام دشمنی کی وجہ سے
مزید پڑھیے


غیر نظریاتی، مفاداتی جمہوری سیاست

پیر 04 جون 2018ء
جدید تاریخ میں 25 دسمبر 1991 کا دن ایک غیر معمولی دن تھا۔ یادش بخیر سوویت یونین کے دارالحکومت کی عمارتوں پر پچہتر سال تک لہرائے جانے والا ہتھوڑے اور درانتی کی تصاویر سے مزین سرخ پرچم اتار دیا گیا، اس کی جگہ روس کے تین رنگوں والے جھنڈے نے لے لی۔ کیمونسٹ نظریے کی بنیاد پر جو حکومت 1917 میں لینن نے قائم کی تھی، اس مزدور و کسان کی بادشاہت کے آخری تاجدار گورباچوف نے نیا جھنڈا لہرانے کی تقریب سے پہلے، صبح کے وقت استعفیٰ دے دیا اور آزاد خودمختار روس کے صدر بورس یلسن نے اقتدار
مزید پڑھیے


اپ رائٹ بیوروکریٹس کا پاکستان کے زوال میں حصہ

جمعه 01 جون 2018ء
سپریم کورٹ کا تین رکنی بینچ ایک دم غصے میں آگیا۔ تمہیں قانون کا علم ہے؟ پہلے اسٹبلشمنٹ ڈویژن میں اپیل کرو، مسترد ہو جائے تو پھر سروسز ٹربیونل میں جاؤ، وہاں بھی ناکامی ہو تو پھر ہمارے پاس آؤ۔ ایک تمہاری پرموشن نہیں ہوئی تو اس کا انسانی حقوق کے ساتھ کیا تعلق ہے، پھر یہ معاملہ عوامی اہمیت کا کیسے ہو گیا۔ یہی اعتراضات لگا کر سپریم کورٹ کے رجسٹرار نے میری درخواست کو ناقابل سماعت قرار دے دیا تھا۔ رجسٹرار جو ایک اہلکار ہوتا ہے، اس نے درخواست مسترد کر دی تھی، اب یہ چیف
مزید پڑھیے


خضرِ وقت از خلوتِ دشتِ حجاز آید بروں

بدھ 30 مئی 2018ء
ہم جس دور میں زندہ ہیں، جس ماحول میں جی رہے ہیں، کیا ایسی حالت اس امت مسلمہ پر گزشتہ چودہ سو سال میں پہلے کبھی آئی ہے۔ ہمارے ہاں مسلکی اختلاف صدیوں سے چلا آرہا ہے۔ دو بڑے مسالک شیعہ اور سنی اپنے اپنے نظریات کے ساتھ تیونس و الجزائر کے ساحلوں سے لے کر برونائی کے جزیرے تک گلی محلے میں ایک ساتھ زندگی گزارتے چلے آرہے ہیں۔ ان دونوں بڑے مسالک میں بھی لاتعداد فقہی اختلافات، مذاہب کی صورت زمانہ قدیم سے ہمارے درمیان موجود ہیں۔ سنیوں میں حنفی، مالکی، شافعی اور حنبلی فقہوں کو ماننے والے
مزید پڑھیے


جمہوری تسلسل کے دس بدترین سال

پیر 28 مئی 2018ء
پاکستان کے کسی بھی "عظیم" دانشور، "نامور" صحافی اور "قابل احترام" تجزیہ نگار سے گزشتہ دس سالوں میں کسی نمایاں کارکردگی کے بارے میں سوال کریں کہ وہ کونسی ہے تو وہ سینہ پھلا کر کہیں گے کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی دفعہ جمہوری تسلسل قائم ہوا ہے۔ ایک حکومت نے اپنی آئینی مدت پوری کی اور اب دوسری حکومت بھی اپنی آئینی مدت تقریبا مکمل کر چکی ہے اور کس قدر خوش قسمتی کی بات ہے کہ ان دونوں کے درمیان انتقال اقتدار کس قدر آسانی کے ساتھ ممکن ہو گیا۔ صرف اسی ایک نمایاں کارکردگی کے علاوہ
مزید پڑھیے