اسلام آباد (وقائع نگار) سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ ہم قومی اسمبلی میں تاریخی قانون سازی کرینگے ، ایوان میں معیشت، پانی سمیت دیگر مسائل پر سیر حاصل مباحثہ ہونا چاہیے ، ایوان کو غیر جانبدارانہ اندازمیں قواعد کے مطابق چلانے کی کوشش کر رہے ہیں، حکومت اور اپوزیشن کو ایوان میں اپنا نکتہ نظر بیان کرنے کا موقع دیا جا رہا ہے ، رواں سیشن میں ایوان میں پیش کرنے کیلئے 4حکومتی بلز موصول ہو چکے ہیں، نیب شہباز شریف اور دیگر کیخلاف اپنا کام کر رہا ہے ، عوام نے انکو مینڈیٹ دیا ہے ہم انکے پروڈکشن آرڈر قواعد کے مطابق جاری کرتے ہیں۔ سرکاری ٹیلی ویژن پر اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سپیکر قواعد کے مطابق ایوان چلاتا ہے اور ایوان سے اسے مدد ملتی ہے ، سپیکر سب کا ہوتا ہے ، اس کا کام ایوان کی کارروائی چلانا ہے ، نیب، ایف آئی اے سمیت سب اداروں کا اپنا کام اور اپنی حدود ہیں۔انہوں نے کہاکہ ایوان میں حکومتی اور اپوزیشن اراکین کی جانب سے جو بھی فرمائش کی جاتی ہے اس میں قانون کو دیکھا جاتا ہے ، جو فرمائش قانون کے مطابق ہو اسے ہی ترجیح دی جاتی ہے ، قومی اسمبلی میں قائد ایوان اور قائد حزب اختلاف دونوں محترم ہیں۔