رملہ (آن لائن)اسرائیل نے نابلس میں جالود، قریوت گائوں اوررملہ میں ترمسیعا کے مقام پرفلسطینیوں کی 100ایکڑ ارضی غصب کرلی صہیونیوں نے یہاں یہودیی کالونیوں کوتوسیع کا منصوبہ بنایا ہے ۔اسرائیلی جیل میں تشدد سے فلسطینی قیدی شہید ہوگیا جبکہ اگست میں قبلہ اول سمیت مختلف مقامات سے 162فلسطینی گرفتارکئے گئے ،فلسطینی پناہ گزین ایجنسی اونروا کا خسارہ سواارب ڈالرتک ہوگیا ہے ۔مقامی سماجی کارکن غسان دغلس نے نے بتایا کہ اسرائیلی فوج نے قریوت اور جالود کے رہائشیوں کو دونوں دیہات کی تقریبا 100 دونم زمین پر قبضے کے فیصلے سے آگاہ کیا ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ یہ اراضی دو خطوں میں واقع ہے جن میں قریوت کے علاقے کا تین العین اور راس مویس حوض نمبر ایک جب کہ نابلس کے جنوب میں جالود کی زمینوں کے حوض 12 ، حوض 10 اور حوض 3 کی اراضی شامل ہے ،حکومت نے مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی بستیوں کے الحاق کرنے کا پختہ ارادہ کرلیا ہے تاہم وزیراعظم نے پانچ ماہ قبل کیے گئے انتخابی وعدے پرعمل درآمد کی مزید تفصیل نہیں بتائی۔