لاہور (سپیشل رپورٹر) اقبال ٹائون سبزی منڈی میں ٹاؤن انتظامیہ کے تجاوزات کے خلاف آپریشن کے دوران ریڑھی بان انتظامیہ کے مبینہ تشدد کے دوران حرکت قلب بند ہونے سے جاں بحق ہوگیا، سبزی منڈی کے آڑھتیوں اور تاجروں نے لاش ملتان روڈ پر رکھ کر احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ ٹائون انتظامیہ نے متوفی کو تھپڑ مارے اور دھکے دیئے جس کے باعث ریڑھی بان دم توڑ گیا،احتجاج سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو گیا ، گلشن اقبال، سبزہ زار ، مصطفی ٹائون اور ہنجروال تھانوں کی پولیس موقع پر پہنچ گئی، پولیس نے مظاہرین سے مذاکرات کرکے انھیں منتشر کردیا، پولیس کے مطابق ریڑھی بان محمد شریف کی ہلاکت ہارٹ اٹیک سے ہوئی ، 65 سالہ محمد شریف کا تعلق پاکپتن سے ہے ، مظاہرین نے کہا عملے نے تھپڑے مارے جس سے موت ہوئی، پولیس ٹائون انتظامیہ کے عملے کیخلاف قانونی کاروائی کرے ، ذ رائع کے مطابق دوران آپریشن بحث و تکرار پر ٹاؤن انتظامیہ کے اہلکار نے ریڑھی بان شریف کو تھپڑ مارا جس سے وہ بے ہوش ہو کر گر پڑا اور چند منٹ بعد جاں بحق ہو گیا۔ پولیس نے جنرل سیکرٹری سبزی منڈی رانا محمد عمران خان اور دیگر افراد کو احتجاج کرنے پر حراست میں لے لیا۔پولیس کے مطابق کسی کو غیر قانونی حراست میں نہیں لیا جائے گا۔