لاہور، کراچی، کوٹری (اپنے سٹاف رپورٹر سے ، نیوز رپورٹر، سٹاف رپورٹر، نامہ نگار)محکمہ موسمیات نے رواں ہفتہ کے دوران ملک بھر میں مزید مون سون بارشوں کی پیش گوئی کردی، زیریں سندھ میں اربن فلڈنگ یا فلیش فلڈنگ اور نشیبی علاقے زیر آب آنے کے خدشہ کا اظہار کردیا ہے ، محکمہ موسمیات کے مطابق مون سون ہوائیں شدت سے رواں ہفتے کے دوران بھی ملک میں داخل ہوں گی، مون سون ہوائیں پیرسے بدھ کے دوران ملک کے جنوبی علاقوں میں اور منگل سے جمعرات کے دوران ملک کے بالائی علاقوں میں داخل ہوں گی جس کے باعث پیرسے بدھ کے دوران کراچی ، حیدرآباد ، ٹھٹھہ ، بدین ، شہید بینظیرآباد ، دادو ، تھرپارکر ، نگرپارکر ، میرپورخاص ، اسلام کوٹ ، عمر کوٹ ، سانگھڑ ، سکھر اور لاڑکانہ میں موسلادھار بارش کا امکان ہے ، کراچی ، حیدرآباد ، ٹھٹھہ اور بدین میں پیر سے منگل کے دوران موسلا دھار بارش کے باعث اربن فلڈنگ کا خدشہ ہے ، آج منگل کو جنوبی اور بالائی پنجاب سمیت کئی علاقوں میں بارش کا امکان ہے ۔ کراچی میں پیر کے روز بارش اور تیز آندھی سے بھینس کالونی میں سنوکر کلب کی چھت گرگئی اور 2 افراد جاں بحق اور 4 افراد زخمی ہوگئے ، زخمیوں کو جناح ہسپتال منتقل کردیا گیا، 28 سالہ عمران ولد رمضان اور 30 سالہ عمران ولد علی محمد نے دم توڑا۔زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے ۔ پیر کے روز بارش کے باعث ملیر، لانڈھی، کورنگی، صدر،گلشن حدید، گلستان جوہر، اورنگی ٹاؤن سمیت کئی علاقوں میں جل تھل ایک اورموسم خوشگوارہوگیا، گلشن حدید 66 اور لانڈھی میں 32 ملی میٹر بارش ہوئی۔سرجانی ٹاؤن میں سیلابی صورت حال اب تک برقرار ہے ، دو دن تک علاقے میں کشتیاں چلتی رہیں، جبکہ بجلی آج تک غائب اور گیس بھی بند ہے ۔کوٹری ، جامشورو اور سندھ کے دیگر شہروں میں دو روز وقفے کے بعد طوفانی بارش کا سلسلہ دوبارہ شروع ہوگیا ، ندی نالوں میں طغیانی برقرار ہے ۔ بارشوں کے باعث ریلوے سسٹم پر مسافر ٹرینوں کا شیڈول بدستور متاثر رہا۔ لاہور میں کراچی اور کوئٹہ سے آنے والی ٹرینیں 5 گھنٹے تک تاخیر کا شکا ر رہیں۔ لاہور سے جانے والی پاک بزنس ایکسپریس شام اڑھائی گھنٹے تاخیرکا شکار ہوئی ۔