کراچی ( سٹاف رپورٹر ) سپریم کورٹ نے والدین میں علیحدگی کے بعد 9 سالہ بچے ایان علی کی حوالگی سے متعلق کیس میں فریقین کو ایک ماہ میں حل تجویز کرنے کی ہدایت کردی ہے ۔کراچی رجسٹری میں دوران سماعت جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیئے کہ بچے کو ماں باپ دونوں کی ضرورت ہوتی ہے ،بستر پر بچے کے ایک طرف ماں تو دوسری طرف باپ کا ہونا ضروری ہے ،جب ماں باپ کو اپنی اپنی دنیا میں مگن ہونا ہوتا ہے تو بچہ کیوں پیدا کرتے ہیں،شادی کا بندھن سمجھوتے کا نام ہے اور جب بچہ پیدا ہو جائے تو سمجھوتہ ہی سمجھوتہ کرنا پڑتا ہے ،ماں اور باپ کو بچے کی خاطر اپنی اپنی انا کو دفنا دینا چاہئے ۔