لاہور، اسلام آباد، لندن ( خبر نگار خصوصی،سٹاف رپورٹر،نامہ نگار،کر ائم رپورٹر، وقائع نگار خصوصی، مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ اور سابق خاتون اول بیگم کلثوم نواز کی نماز جنازہ لندن کے ریجنٹ پارک اسلامک سنٹر میں ادا کر دی گئی ۔نماز جنازہ امام شیخ خلیفہ عزت نے پڑھائی۔نماز جنازہ میں شہباز شریف ، حسن اور حسین نواز ، اسحٰق ڈار،چودھری نثار،ثناء اﷲ زہری،پاکستانی ہائی کمیشن کے حکام،ن لیگ کے رہنماؤں، کارکنوں اور برطانیہ میں مقیم پاکستانیوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔شہبازشریف بھابھی کی میت لے کر قومی ائیر لائن کی پرواز پی کے 758 کے ذریعے پاکستان کیلئے روانہ ہو چکے ہیں۔پروازسوا گھنٹے تاخیرسے روانہ ہوئی جو آج صبح 8 بجے لاہور ایئرپورٹ پراترے گی ۔میت لانے کیلئے 7 گاڑیوں اور ایک ایمبولینس کو ایئرپورٹ کے اندر جانے کی اجازت دی گئی ہے ۔ترجمان ( ن) لیگ مریم اورنگزیب کے مطابق بیگم کلثوم نوازکی نمازجنازہ آج شام 5بجے شریف میڈیکل سٹی میں اداکی جائیگی ۔ نماز جنازہ مولانا طارق جمیل پڑھائیں گے ۔ بیگم کلثوم نواز کو ان کے سسرمیاں شریف کے پہلو میں دفن کیا جائے گا۔ رسم قل اتوارکو عصر تا مغرب جاتی عمرہ میں ہوگی۔دوسری جانب سابق وزیر اعظم نواز شریف نے اپنے داماد کیپٹن (ر) صفدر، جنید صفدر اور سلیمان شہباز کے ہمراہ سخت سکیورٹی حصار میں شریف میڈیکل سٹی( جنازہ گاہ ) کا دورہ کیا اور نماز جنازہ کے انتظامات کا جائزہ لیا۔نواز شریف نے اپنے والد اور بھائی کی قبروں پر حاضری دی اور فاتحہ خوانی کی۔ انہوں نے شریف میڈیکل سٹی میں طبی معائنہ بھی کرایا۔ ادھرشریف خاندان سے اظہار تعزیت کیلئے سیاسی و مذہبی رہنماؤں اور کارکنوں کی جاتی عمرہ آمد کاسلسلہ جاری ہے ۔ تعزیت کیلئے آنیوالوں میں سابق صدر ممنون حسین، صدر آزاد کشمیر مسعود خان، وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر، سپیکر شاہ غلام قادر ، وزیراعلی گلگت بلتستان حفیظ الرحمن، مولانا فضل الرحمٰن ،مولانا طارق جمیل، خورشید قصوری،یاسین ملک، راجہ ظفرالحق ،مہتاب عباسی ، ظفر اقبال جھگڑا ،احسن اقبال،شاہد خاقان عباسی ،خرم دستگیر ، غلام بلور، دانیال عزیز،سعدرفیق،شکیل اعوان،طارق فاطمی،رانا تنویر،امیر مقام، ڈاکٹر راغب نعیمی ،لیاقت بلوچ،میر حاصل بزنجو،زاہد حامد،ایرانی قونصل جنرل،نجم سیٹھی،ایازصادق ، نصیر بھٹہ ،پرویز ملک،سردار یعقوب ناصر، مئیر لاہور کرنل ریٹائرڈ مبشر،لیاقت بلوچ، عبد الغفور حیدری،فرید پراچہ سمیت مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے افرادکی بڑی تعداد شامل تھی ۔ مریم نواز بھی تعزیت کیلئے آنے والی خواتین سے باہر آ کر ملیں، لیگی کارکن خواتین نے ان سے والدہ کی وفات پر تعزیت کی۔ تعزیت کیلئے آنے والوں کی بڑی تعداد کے باعث گاڑیوں کی دوکلومیٹر طویل قطاریں لگ گئیں ۔علاوہ ازیں بیگم کلثوم نواز کی نماز جنازہ میں پیپلز پارٹی اور تحریک انصاف کا وفد بھی شریک ہوگا جبکہ چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو نواز شریف سے اظہار تعزیت کریں گے ۔ حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق نے بھی بیگم کلثوم نواز کے انتقال پرتعزیت کا اظہار کیا ہے ۔ ٹوئٹر پیغام میں انہوں نے کہا میاں نواز شریف کی اہلیہ کلثوم نواز کے انتقال پر بیحد دکھ ہوا۔ غم کی اس گھڑی میں کشمیری عوام ان کیساتھ ہیں۔ آزادکشمیر حکومت کی جانب سے یوم سوگ کے موقع پر مختلف مساجد میں دعائیہ تقاریب منعقد کی گئیں جبکہ آج مساجد میں کلثوم نواز کے ایصال ثواب کیلئے دعا ئیں کی جائیں گی۔ ٹوکیو میں (ن )لیگ جاپان سمیت پاکستانی کمیونٹی کی بڑی تعداد نے محترمہ کلثوم نواز کی مغفرت کیلئے خصوصی دعائیہ تقریب میں شرکت کی۔ پاکستان سے آئے معروف اداکار سہیل احمد بھی شریک ہوئے ۔ مسلم لیگ ہاؤس کارساز کراچی میں بیگم کلثوم نواز کی غائبانہ نماز جنازہ شام 5 بجے ادا کی جائے گی۔