اسلام آباد (سٹاف رپو رٹر ، 92 نیوزرپورٹ) بینظیر انکم سپورٹ پروگرام سے جعلسازی کے ذریعے رقم بٹورنے والے سرکاری افسروں کے گردگھیراتنگ ہوگیا۔ مستحق لوگوں کا حق کھانے والے افسروں کی ملازمتیں خطرے میں پڑ گئیں۔حکومت نے باقاعدہ کارروائی کاآغازکردیا۔حکومت نے دھوکے بازافسران کونوکریوں سے برطرفی کیلئے شوکاز نوٹسز بھی جاری کر دیئے ۔9سال تک غریبوں کا حق کیوں کھایا؟ افسران کو جواب دینے کیلئے 10 روز کی مہلت دیدی گئی۔ تسلی بخش جواب نہ دینے پر ملازمتوں سے برطرفی عمل میں لائی جائے گی۔ موجودہ حکومت نے گزشتہ ہفتے بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی سکروٹنی کی جس میں اڑھائی ہزار افسران اور ان کی بیگمات کے نام سامنے آئے جو اس وظیفے سے مستفید ہو رہے تھے اور ان کے نام پروگرام سے نکال دیے گئے ۔بی آئی ایس پی ڈیرہ اسماعیل خان کا اسسٹنٹ ڈائریکٹر محمد نعمان ضہیم بھی بہتی گنگا میں ہاتھ دھوتا رہاجسے شوکاز نوٹس جاری کر دیا گیا ہے ۔