لاہور(نامہ نگار )آل پاکستان انجمن تاجران کے جنرل سیکرٹری نعیم میر نے کہا ہے کہ حکومت نے شناختی کارڈ کی شرط میں 31دسمبر تک توسیع کردی۔اب 31جنوری تک تاجروں کو شناختی کارڈ کی شرط پر مطمئن کرنے کی کوشش کرینگے ۔ پہلی مرتبہ پاکستان کے تاجر متحد ہوئے ،حکومت نے احتجاج کرتے تاجروں کے ساتھ تعاون کیا۔آئی ایم ایف اور معیشت کے جال میں پھنسی حکومت نے ہمیں کچھ ریلیف دیا ہے ۔کم آمدنی والے تاجروں کو تو 0.5 فیصد ٹیکس بھی قابل قبول نہیں۔اب تاجروں کے مسائل کے حل کے لیے تاجروں کی ہی کمیٹی بنے گی۔تاجر کی دکان پر ٹیکس دینے کا اعلان ایف بی آر نہیں تاجروں کی کمیٹی کرے گی۔جو دکان ایک ہزار مربہ سکیئر فٹ میں ہو گی وہ سیلز ٹیکس دے گی۔سبزیوں منڈیوں پر بھی ٹیکس بڑھادیا گیا تھا اس مسئلے پر بھی حکومت کی توجہ دلائی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملک امانت،چوہدری امجد،شیخ عمر حیات،سہیل محمود بٹ، ملک خالد،میاں خلیل ،شاہد نذیر،امین مظہر بٹ،عببدالودود علوی،رضوان بٹ،ملک کلیم،سید عظمت علی شاہ، آغاذوالفقار،شیخ عرفان اقبال،فاروق حفیظ ودیگر لاہور پریس کلب میں تاجر تنظیموں کے رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔