اسلام آباد،راولپنڈی(سپیشل رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک)آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہاہے کہ حربی صلاحیتوں میں اضافے کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے ہم آہنگ ہونا ہو گا۔ دشمن کیخلاف بالادستی کیلئے روایتی صلاحیتوں کی متواتر بہتری ناگزیر ہے ۔ وی ٹی فور ٹینک پاک چین دفاعی تعاون کی ایک اور مثال ہے ۔آئی ایس پی آر کے مطابق گزشتہ روزآرمی چیف نے دورہ گوجرانوالہ کے موقع پر چینی ساختہ وی ٹی فور ٹینک کی سٹرائیک فارمیشن میں شمولیت کی تقریب میں شرکت کی اور اس جدید ترین ٹینک کا عملی مظاہرہ بھی دیکھا۔ ٹینک جدید آرمر پروٹیکشن، متحرک، غیر معمولی فائر پاور کا حامل ہے ،وی ٹی فور ٹینک کا موازنہ دنیا کے کسی بھی جدید ٹینک سے کیا جا سکتا ہے ،ٹینک آٹو ٹرانسمیشن نظام کا حامل اور گہرے پانی میں بھی آپریشن کی صلاحیت رکھتا ہے ۔ٹینک سٹرائیک فارمیشنز کا ایک طاقتور ہتھیار سمجھا جاتا ہے ۔ آرمی چیف نے وی ٹی فور کے ڈائنامک انٹیگریٹڈ ٹریننگ سمولیٹر کا بھی دورہ کیا اوراس موقع پر افسروں اورجوانوں سے خطاب میں مزید کہاکہ کسی بھی جارحیت کا مقابلہ کرنے کیلئے روایتی استعداد کار میں اضافہ اہم ہے ۔ وی ٹی فور ٹینک پاکستان اور چین کے تزویراتی تعاون کا استعارہ ہے ۔وی ٹی فور ٹینک کی شمولیت سے پاک فوج کی کاری ضرب لگانے کی استعداد بڑھے گی۔ جنگ کی تیزی سے بدلتی ہیت اعلیٰ پیمانے کی پیشہ ورانہ مہارت، سخت تربیت کی متقاضی ہے ۔