لاہور(خبرنگارخصوصی) حمزہ شہباز کو پبلک اکائونٹس کمیٹی ٹوکارکن نہ بنانے اور سلمان ر فیق کے پروڈکشن آرڈر جاری نہ کرنے پر لیگ ن نے کمیٹی کے اجلاس کا بائیکاٹ کردیا ، ن لیگ نے کمیٹی کے اجلاس میں کورم پورا نہ ہونے کی نشان دہی کردی جس پر چیئر مین نے اجلاس آج تک ملتوی کردیا ،اس سے قبل ان کیمرہ بریفنگ بھی ہوئی ۔اس موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے عظمیٰ بخاری نے کہاکہ ارکان اسمبلی کے جو آئینی و قانونی حق ہیں ان کو سلب کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں، حکومتی اراکین کے تو پروڈکشن آرڈر جاری ہوتے رہے مگر اب اپوزیشن لیڈرحمزہ شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈر جاری نہیں کیے جارہے ،وزیراعظم کے پاس کوئی اختیار نہیں کہ سپیکر پنجاب اسمبلی کو پروڈکشن آرڈر کے حوالے سے ڈکٹیشن دے سکیں۔ عطا اﷲ تارڑ نے کہاکہ نیب نے حکومتی و اپوزیشن ارکان کے لیے الگ الگ قانون بنائے ہوئے ہیں،یہ جو ڈرامہ چل رہا ہے یہ کھل کر عوام کے سامنے آچکا ہے ۔مجتبیٰ شجاع الرحمان نے کہاکہ گرفتار ارکان اسمبلی کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنا ان کاآئینی وقانونی حق ہے ،ایسا تو آمریت کے دور میں بھی نہیں ہوتا تھا ، اب سویلین مارشل لاء کی کیفیت بنی ہوئی ہے ۔