نیویارک(این این آئی)دنیا کے سب سے بڑے طیارے نے اپنی پہلی پرواز کامیابی سے مکمل کر لی۔یہ طیارہ مائیکرو سافٹ کے شریک بانی پال ایلن کی کمپنی سٹراٹولانچ سسٹم نے تیار کیا ہے جو سیٹلائٹس کیلئے لانچنگ پیڈ کا کام کریگا۔ طیارے کو آسمان میں دس کلومیٹر کی بلندی پر اڑایا جائیگا اور اس پر لادے ہوئے سیٹلائٹ کو خلا میں روانہ کر دیا جائیگا۔کمپنی کا مقصد ایسا طیارہ بنانا ہے جو زمین کے نچلے مدار تک آسان اور قابل بھروسہ رسائی فراہم کرسکے ۔اسکے دونوں پروں کا فاصلہ 385 فٹ ہے اور اس میں چھ انجن نصب کئے گئے ہیں۔اگر یہ منصوبہ کامیاب ہو جاتا ہے تو اس سے سیٹلائٹس بھیجنے کی لاگت میں واضح کمی آئیگی۔ طیارے نے 15 ہزار فٹ کی بلندی تک اڑان بھری اور اسکی تیز ترین رفتار 170 میل فی گھنٹہ تھی۔پائلٹ ایوان تھامس نے بتایا کہ طیارہ اڑانے کا تجربہ انتہائی شاندار تھا اور بڑی حد تک اسکی پرواز ویسی ہی تھی جس کی پیشگوئی کی گئی تھی۔