لاہور(اشرف مجید)ٹریفک ہیڈ کوارٹر پنجاب کی جانب سے ٹریفک جرمانوں کا25فیصد حصہ ٹریفک پولیس کو دینے کی تجویز بنا کر پنجاب حکومت کو بھیج دی گئی ہے جس پر پنجاب حکومت نے باقاعدہ غور کرتے ہوئے محکمہ فنانس سے تفصیلی رائے مانگ لی ہے ،ٹریفک پولیس کو ملنے والی رقم کو اہلکاروں کی ویلفیئر ،سامان کی خریداری کے ساتھ ایک حصہ درجہ بندی کے حساب سے ٹریفک افسران واہلکاروں کو بھی دیا جائے گی ۔ ذرائع کے مطابق سمری میں درخواست کی گئی ہے کہ ٹریفک پولیس پنجاب کی جانب سے کئے جانے والے ٹریفک جرمانوں کا 25فیصد حصہ پنجاب ٹریفک پولیس کو دیا جائے تا کہ اس میں ٹریفک پولیس اپنے سامان کی خریداری کے ساتھ ٹریفک اہلکاروں کی ویلفیئر پر خرچ کر سکے ،اسکے ساتھ جرمانوں کا کچھ حصہ چالان کی شرح کے حساب سے تمام بڑے شہروں سمیت تمام اضلاع کے ٹریفک پولیس افسران و اہلکاروں میں بھی تقسیم ہو ۔ذرائع کے مطابق ٹریفک ہیڈ کوارٹر پنجاب کی جانب سے بنائی گئی سمری پر پنجاب حکومت کی جانب سے باقاعدہ غور کیا جا رہا ہے جس پر سمری کو محکمہ خزانہ کو بھجوایا گیا ہے تا کہ اس سے پنجاب ٹریفک پولیس کی سالانہ آمدنی کی تفصیل اور اگر اس سمری کو منظور کر لیا جاتا ہے تو ٹریفک پولیس کو کتنا حصہ جائے گا تمام تفصیلات مانگ لی گئی ہیں ،ذرائع کا کہنا ہے کہ اگر پنجاب حکومت کی جانب سے سمری کو منظور کر لیا جاتا ہے تو اسے پنجاب میں نافذ کرنے کے لئے پنجاب اسمبلی سے باقاعدہ منظور کرایا جائے گا ۔