اسلام آباد،مہمند،بنوں ،ڈی جی خان، سرگودھا (خصوصی نیوز رپورٹر،سپیشل رپورٹر،سٹاف رپورٹر، نمائندگان) ضلع مہمند میں پاک افغان سرحدی علاقہ پیشتو کنڈائو میں بارودی سرنگ دھماکہ کے نتیجے میں مہمند رائفلز کے کیپٹن شہید جبکہ ایک سکیورٹی اہلکار زخمی ہوگیا جبکہ شمالی وزیرستان میں سکیورٹی اہلکار معمول کی گشت پرتھے جوسڑک کنارے نصب بارودی مواد کے دھماکے سے تین سپاہی قاسم ، امجد اور ظہیر زخمی ہوگئے ۔آئی ایس پی آر کے سربراہ میجر جنرل آصف غفور نے اپنے ٹویٹ میں بتایا کہ مہمند میں بارودی سرنگ ناکارہ بناتے ہوئے پھٹ گئی جس کے نتیجے میں کیپٹن ضرغام فرید شہید اوربم ڈسپوزل ٹیم کے رکن سپاہی ریحان شدید زخمی ہوگئے ۔شہید کیپٹن کی نماز جنازہ مہمند رائفلز مامد گٹ کیمپ تحصیل صافی میں ادا کی گئی جس میں کمانڈنٹ مہمند رائفلز کرنل عرفان علی، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر عرفان اﷲ، اسسٹنٹ کمشنر اپر مہمند نائب دین ، ونگ کمانڈرز اور دیگر سرکاری حکام نے شرکت کی۔ قومی پرچم میں لپیٹی میت کو سکیورٹی فورسز کے چاق و چوبند دستے نے سلامی دی بعد ازاں کور ہیڈ کوارٹر پشاور میں شہید کیپٹن کی نماز جنازہ ادا کی گئی جس میں گورنر خیبرپختونخوا، کورکمانڈر پشاور سمیت صوبائی وزراء نے شرکت کی ۔ادھر شمالی وزیرستان میں سکیورٹی فورسز کی گاڑی کے قریب بارودی مواد کے دھماکے میں تین سکیورٹی اہلکار زخمی ہو گئے ذرائع کے مطابق سکیورٹی فورسز کی گاڑی گڑیوم کے علاقہ روغہ بدر میں معمول کے گشت پر تھی کہ سڑک کنارے پہلے سے نصب بارودی موادکی زد میں آگئی ، روزدار دھماکہ کے نتیجے میں تین سکیورٹی اہلکار سپاہی قاسم ، امجد اور ظہیر زخمی ہو گئے ۔ادھر ڈی جی خان میں پکڑے گئے 5دستی بم ناکارہ بنادیئے گئے ۔بعدازاں پاک فوج کے شہیدجوان کیپٹن ضرغام فرید کو ہزاروں سوگواروں کی موجودگی میں انکی آبائی گاؤں ٹبہ قائم دین ضلع خوشاب میں سپرد خاک کر دیا گیا۔علاوہ ازیں صدر،وزیراعظم ،آرمی چیف ،وزرااور دیگر نے کیپٹن کی شہادت پر غم کا اظہار کیا اور کیپٹن ضرغام شہید کے ایصال ثواب کی دعاکی اور زخمی اہلکار کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی۔مہمند ایجنسی میں شہید ہونے والے کیپٹن ضرغام کے والد نے کہا ہے کہ شہید کو شروع سے ہی پاک فوج میں ملازمت کا شوق تھا۔ماموں سرور قریشی نے کہا ہے کہ کیپٹن ضرغام کا شہادت کا رتبہ خاندان کیلئے فخر کی بات ہے ۔