اوگادوگو(این این آئی، نیٹ نیوز ) مغربی افر یقہ کے ملک برکینا فاسو میں چرچ پر شدت پسندوں کے حملے میں 14 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ۔واقعے کے فوری بعد سکیو رٹی رٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے ۔ برکینافاسوکے مشرقی قصبے ہنتوکوراکے چرچ میں سنڈے سروس کے دوران حملہ کیاگیا۔ چرچ میں دعائیہ تقریب جاری تھی کہ اس دوران متعدد مسلح افراد نے اندر داخل ہوکر فائرنگ کردی۔واقعے کے بعد حملہ آورفرار ہونے میں کامیاب ہوگئے ۔ زخمیوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں بعض زخمیوں کی حالت نازک بتا ئی جا تی ہے جس کے باعث ہلا کتوں میں اضا فے کا خدشہ ہے ۔کسی تنظیم نے اس واقعے کی ذمہ داری قبول نہیں کی اور حملے کی وجوہات غیر واضح ہیں۔ واقعہ کی تحقیقات شر وع کر دی گئیں ہیں ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق حکام نے بتایاکہ شدت پسندوں نے نائیجیریا کی سرحد کے قریب برکینا فاسو کے قصبے ہنتو کورا کے ایک پروٹیسٹینٹ چرچ میں سنڈے سروس کے دوران داخل ہو کر اندھا دھند گو لیاں چلا دیں ۔اس موقع پر شدت پسندوں کی فائرنگ سے 14 افراد ہلاک اورمتعدد زخمی ہوگئے ۔ گزشتہ چند سال کے دوران برکینا فاسو میں شدت پسندوں کے حملوں میں سینکڑوں افراد ہلاک اور زخمی ہوچکے ہیں۔ برکینا فاسو کی سرحد مالی سے بھی ملتی ہے جہاں القاعدہ اور داعش سمیت دیگر مسلح تنظیموں کے خلاف بین الاقوامی فوجی آپریشن جاری ہے جس میں برکینا فاسو کی فوج بھی شریک ہے ۔