لاہور(خصوصی نمائندہ)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت وزیراعلیٰ آفس میں اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا،جس میں شعبہ زراعت کی ترقی اور کاشتکاروں کو سہولتیں فراہم کرنے کیلئے اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں ٹڈی دل کے حملے سے فصلو ں کو بچانے کے حوالے سے اقدامات پر بھی غور کیا گیا،اجلاس میں زرعی گریجویٹس کیلئے انٹرن شپ پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ کیاگیا،وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ 20کروڑروپے کی لاگت سے 130 زرعی گریجویٹس کو تربیت دی جائے گی ، فلوری کلچر کے فروغ کیلئے نیا پروگرام شروع کیاجائے گااوراس پروگرام پر تقریباً 40کروڑ روپے خرچ کیے جائیں گے ،کاشتکاروں کو سہولیات دیں گے ، وزیراعلیٰ نے بہاولپور، رحیم یار خان اور بہاولنگر کے علاقوں کی 24 گھنٹے مانیٹرنگ کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ فصلوں کو ٹڈی دل سے بچانے کیلئے تمام ضروری اقدامات اور وسائل بروئے کار لائے جائیں، ٹڈی دل کے مکمل خاتمے تک سپرے جاری رکھا جائے ۔دریں اثنا ایک اور اجلاس سے خطاب میں انہوں نے کہا گاڑیوں کی نمبر پلیٹس کے اجراء میں مزیدتاخیرقطعاً برداشت نہیں کی جائے گی افسروں کو باتیں نہیں، اب کام کرنا ہوگا،محکمہ ایکسائزاینڈ ٹیکسیشن کو عوام کی مشکلات کو مدنظررکھتے ہوئے زیادہ مستعدی سے کام کرنا ہوگا، میں کسی بھی روزفریدکورٹ ہاؤس سمیت ایکسائز دفاتر کے اچانک دورے کروں گا ، عوام کی سہولت کیلئے ڈی وی آر ایس سسٹم کو جلد از جلد فعال کیا جائے اورپراپرٹی ٹیکس کے نفاذ اوروصولی کا بہتر میکانزم وضع کیا جائے ۔انہوں نے شاعر مشرق ڈاکٹر علامہ محمد اقبا لؒ کے یوم پیدائش پر اپنے پیغام میں کہا علامہ اقبال ؒاتحاد کے داعی تھے ان کی مسلمانوں کیلئے علیحدہ مملکت کے قیام کی تجویز ان کی سیاسی بصیرت کی عکاس تھی ، وزیراعظم عمران خان اور ان کی ٹیم علامہ اقبال کے افکار کے مطابق نیا پاکستان بنانے کیلئے پرعزم ہے ۔ وزیراعلیٰ سے امرتسر سے آنے والے سکھ رہنماؤں کے وفد نے ملاقات کی ،بکرم جیت سنگھ لاٹی،چرن جیت سنگھ اور ہرپریت سنگھ نے باباگرونانک یونیورسٹی پراجیکٹ پر انہیں خراج تحسین پیش کیا۔ عثمان بزدارنے ایم ایس تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میاں چنوں پر فائرنگ اور ایم ایس اشعر محمود کے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے رپورٹ طلب کرلی ، انہوں نے خانیوال کے قریب ٹریفک حادثے میں قیمتی انسانی جانو ں کے ضیاع پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ۔