لاہور (نامہ نگارخصوصی) لاہو رہائیکورٹ نے ضلعی عدلیہ کے پانچ ماہ کے اعداد و شمار جاری کردیئے ،دس لاکھ 77 ہزار سے زائد مقدمات کا فیصلہ کیا گیا۔ اعدادوشمار کے مطابق رواں سال یکم جنوری سے 31 مئی تک دس لاکھ 77 ہزار 310 مقدمات کے فیصلے کئے گئے جبکہ اسی عرصہ میں 10 لاکھ 27 ہزار 52 نئے مقدمات دائر ہوئے ۔پانچ ماہ کے مختصر عرصہ میں پنجاب کی ڈسٹرکٹ جوڈیشری میں زیرالتوائمقدمات کی تعداددس لاکھ 84 ہزار سے کم ہوکر 10 لاکھ 44 ہزار رہ گئی۔قائم مقام چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مامون رشید شیخ نے ضلعی عدلیہ کے ججز کی بہترین کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا پانچ ماہ کے عرصہ میں نمٹائے گئے مقدمات اور نئے دائر ہونے والے مقدمات میں تقریبا 50 ہزار کا فرق اہم سنگ میل ہے ۔عوام کو جلد اور معیاری انصاف کی فراہمی عدلیہ کا اولین فریضہ ہے ، فوری اور معیاری انصاف کی فراہمی بنچ اور بار کے مشترکہ لائحہ عمل اور بہترین معاونت کا نتیجہ ہے ۔صوبے کے عوام عدلیہ پر بھروسہ کرتے ہیں، مقدمات کی شیلف لائف کم ہونے سے عدلیہ پر سائلین کا اعتماد مزید بڑھے گا۔