لاہور(اپنے سٹاف رپورٹر سے ،کامرس رپورٹر) صوبائی وزیراطلاعات وثقافت میاں اسلم اقبال نے گزشتہ روز لاہورمیوزیم میں بابا گورونانک کے 550ویں جنم دن کے حوالے سے سکھ عہد کی نوادرات کی نمائش کا افتتاح کیا۔صوبائی وزیر نے میوزیم میں رکھے گئے سکھ عہد کے نوادرات بھی دیکھے اور تقریب میں میں بھی شرکت کی۔اس موقع پر لاہور میوزیم میں ایک گیلری کو سکھ گیلری سے منسوب کیا گیا اور پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ سکھوں کی مقدس کتاب گرنتھ صاحب کا پرکاش کیا گیا۔سیکرٹری اطلاعات وثقافت راجہ جہانگیر انور،چیف ایگزیکٹو اطہر علی خان،ڈائریکٹر میوزیم اور سکھ کمیونٹی سے وابستہ نامور شخصیات نے تقریب میں شرکت کی۔صوبائی وزیر اطلاعات وثقافت میاں اسلم اقبال نے کہا کہ سکھ برادری نے مظلوم کشمیریوں کے حق میں بھی آواز اٹھاکر مثبت پیغام دیا ہے ۔سموگ کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں صوبائی وزیر نے کہا کہ فصلوں کی باقیات کو جلانا بھی ایک قسم کی دہشت گردی ہے ،بھارت میں فصلوں کی باقیات کو جلا کر بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی کی جارہی ہے ۔علاوہ ازیں صوبائی وزیرصنعت وتجارت میاں اسلم اقبال سے ایوان وزیر اعلیٰ میں کسانوں کے وفدنے ملاقات کی۔صوبائی وزیر زراعت نعمان اختر لنگڑیال،صوبائی وزیر خوراک سمیع اﷲ چودھری،سیکرٹری زراعت اور متعلقہ حکام بھی ملاقات میں موجود تھے ۔چیئرمین پاکستان کسان اتحاد چودھری انور وفدکی قیادت کررہے تھے ۔کسانوں کے وفد نے کاشتکاروں کو درپیش مسائل سے آگاہ کیا۔صوبائی وزرا نے کسانوں کو ان کے تمام جائز مسائل کے حل کی یقین دہانی کرائی۔