لاہور(نمائندہ خصوصی سے )ملی یکجہتی کونسل پاکستان کا مرکزی مشاورتی اجلاس لاہور میں منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت کونسل کے صدر صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیر نے کی۔ اجلاس میں کونسل کی 15 رکن جماعتوں اور تین اداروں کے علامہ عارف حسین واحدی ،علامہ سید ضیائاللہ شاہ بخاری ،پیر غلام رسول اویسی،مولانا ملک عبدالروف ،مرزا ایوب بیگ ت،سید ثاقب اکبر ،سید نثار علی ترمذی البصیرہ،علی رضا نقوی،مولانا جعفر ودیگر اہم رہنماؤں نے شرکت کی۔ اجلاس میں پاکستان کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ تمام قائدین نے اس امر پر زور دیا کہ اسلام ، مسلمانوں اور پاکستان کے خلاف دشمنوں کی حالیہ سازشوں کا بمقابلہ اتحاد و اتفاق سے کیا جا سکتا ہے ۔ اجلاس کی نظامت کونسل کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کی۔ اجلاس کے آخر میں متفقہ قرارداد منظور کی گئی۔جس میں قرار دیا گیا کہ31 اکابرعلمائکے 22نکات، قرارداد مقاصد، آئین کی اسلامی دفعات، ملی یکجہتی کونسل کے ضابطہ اخلاق، پیغام پاکستان پرمتحد ہیں۔ہم اسلام اور پاکستان کے دشمنوں کی سازشوں کے خلاف سیسہ پلائی ہوئی دیوار بنیں گے اور اس اسلامی ریاست کو کمزور نہیں ہونے دیں گے اور اس میں اسلامی تعلیمات کی بالادستی کے لیے مشترکہ جدوجہد جاری رکھیں گے ۔ ہم واضح کرتے ہیں کہ ہم کشمیر کی تحریک حریت کے ساتھ کھڑے ہیں ، اسرائیل کے خاتمے کے سوا خطے میں امن کے قیام کی کوئی سبیل نہیں۔اجلاس میں پیر حضرت حمیدالدین سیالویؒ کی رحلت پر تعزیت پیش کی گئی اور ان کی مغفرت کے لیے دعا کی گئی۔