لاہور(اشرف مجید)میاں محمد نواز شریف اور مریم نواز شریف کی لاہور آمد کے موقع پر لیگی امیدواروں کی جانب سے کارکنوں کو ائر پورٹ پر لیجانے کے لئے ٹرانسپورٹروں نے گاڑیاں دینے سے انکار کردیا جبکہ لیگی رہنماؤں کی تمام تر کوششوں کے باوجود گزشتہ رات تک صرف 300گاڑیاں بک ہو سکیں ،متعدد لیگی عہدیداران نے محکمہ ٹرانسپورٹ سے بھی رابطہ کیا لیکن انہوں نے سیاسی جماعت کے لئے گاڑیاں بک کرنے سے معذرت کر لی۔چند ٹرانسپورٹرز نے اپنی گاڑیاں استقبال کے لئے دینے کے لئے فی ویگن 5ہزار روپے بھی وصول کر لئے ،ان ٹرانسپورٹروں کی جانب سے 300ویگنوں کو بک کیا گیا ہے جسکی مکمل ایڈوانس رقم وصول کی گئی ،ذرائع کے مطابق مسلم لیگی رہنماؤں کی جانب سے لاہور سے 2ہزار ویگنوں کو بک کرنے کا ٹارگٹ تھا جس کے لئے مسلم لیگی رہنماؤں سمیت ٹکٹ ہولڈرز نے جب ٹرانسپورٹروں سے رابطے کئے اور انکار کا سامنا کرنا پڑا تو ایک اہم لیگی رہنما نے محکمہ ٹرانسپورٹ کے اہم افسر سے رابطہ کیا اور کہا کہ انہیں ویگنوں کو اپنے طور پر بک کروا کر دے جس کے لئے رقم پہلے ادا کی جائے گی لیکن محکمہ ٹرانسپورٹ کے افسر نے بھی صاف انکار کر دیا ،ذرائع کے مطابق گزشتہ رات گئے تک مسلم لیگی ٹکٹ ہولڈرز کی جانب سے متعدد ٹرانسپورٹروں کو عام کرائے سے ڈبل کرائے پر ویگنیں مانگی گئی ہیں ۔ان ٹرانسپورٹروں نے کہا کہ ن لیگ کے دورمیں زبر دستی ویگنیں لی جاتی تھیں ۔باقی رقم لینے کے لئے چکر لگا لگا کر تھک جاتے تھے لیکن رقم نہیں دی جاتی تھی ۔اب تو تحریک انصاف کے امیدواروں یا الیکشن کمیشن کو ہی گاڑیاں دی جائیں گی ۔