لاہور(گوہر علی) مسلم لیگ ن نے پنجاب اسمبلی کی قائمہ کمیٹیوں کے عہدوں سے استعفے جمعہ کو سپیکر صوبائی اسمبلی کو پیش کر نیکا فیصلہ کرلیا جبکہ قائمہ کمیٹیاں کے 7 ن لیگی چیئر مینوں اور70ممبرز کو پارٹی کے فیصلے سے آگاہ کردیا گیا۔ذرائع کے مطابق ن لیگ نے حکومت پنجاب کی بنائی گئی کشمیر کمیٹی میں بھی شامل نہ ہونیکا فیصلہ کیا ہے ۔ ن لیگ کی پارلیمانی پارٹی کے آج ہونیوالے اجلاس میں آئندہ کی حکمت عملی مرتب کی جائیگی۔ ن لیگ نے حمزہ شہباز کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی(ون) کا چیئر مین نہ بنانے اور انکے پروڈکشن آڈر جاری نہ کرنے پر پنجاب اسمبلی کی تمام کمیٹیوں سے مستعفی ہونیکا فیصلہ کیا اور اس حوالے سے تمام اراکین کو بھی آگاہ کردیا ۔ کل ہونے والے پنجاب اسمبلی کے اجلاس کے موقع پر یہ استعفے سپیکر کو پیش کردیئے جائینگے جبکہ اس اجلاس کے حوالے سے جارحانہ حکمت عملی آج پارلیمانی کمیٹی کے اجلاس میں مرتب کی جائیگی۔ ن لیگ کے پنجاب اسمبلی کی کمیٹیوں سے مستعفی ہونے کے فیصلہ پر حکومت کی طرف سے رابطہ کرنے کے معاملہ پر آج غور کیا جائیگا۔ آج پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں اراکین سے رائے لی جائیگی کہ اگر اس فیصلہ سے دستبردار کرانے کیلئے حکومت نے کوئی رابط کیا تو کیا لائحہ عمل ہونا چاہئے ۔ذرائع نے مزید بتایا کہ پنجاب اسمبلی کی کمیٹیوں سے مستعفی ہونیکا فیصلہ ن لیگ کا ہے ، اسکا پیپلزپارٹی سے کوئی تعلق نہیں ، اس حوالے سے پیپلزپارٹی سے کوئی رابطہ نہیں کیاگیا ۔