BN









کالم


آج کے کالم 


  


کالم آرکیو


پروفیسر رشید احمد انگوی کا ریفرنس

منگل 21  ستمبر 2021ء
سعد الله شاہ
اپنا مسکن مری آنکھوں میں بنانے والے خواب ہو جاتے ہیں اس شہر میں آنے والے ان کے ہوتے ہوئے کچھ بھی نہیں دیکھا جاتا کتنے روشن ہیں چراغوں کو جلانے والے آج میں جس شخصیت کے بارے میں لکھنے جا رہا ہوں میں وہ شخصیت نہیں ادارہ تھے‘وہ ایک نظریہ تھے اور خیر کا استعارا تھے۔وہ ایک محبوب ہستی تھے کہ جن کے اجلے چہرے پر مجھے روشنی کا ہالہ نظر آتا تھا۔ آج ہمارے پیارے بزرگ دوست مربی معلم اور مصلح جناب پروفیسر رشید احمد انگوی کا تعزیتی ریفرنس تھا جس میں قرآن سے جڑے ہوئے شفاف و معطر لوگ جمع تھے۔ سب سے
مزید پڑھیے


بھارت غزوہ ہند کیلئے خود راہ ہموارکر رہا ہے؟

منگل 21  ستمبر 2021ء
عبدالرفع رسول
غزوہ الہند کی خوشخبریاںآقا علیہ السلام کی احادیث میں وارد ہوئی ہیںاور صحابہ کرامؓ اس غزوہ میں شامل اورشریک ہونے کی خواہش اور تڑپ رکھتے تھے۔چنانچہ غزوہ ہند کے حوالے سے ایک حدیث یہ ہے۔ ترجمہ حضرت ابو ہریرہ ؓ سے مروی ہے کہ آقا علیہ السلام نے ہم سے غزوہ ہندکا وعدہ فرمایا اگر وہ جہاد میری موجودگی میں ہوا تو میں اپنی جان اور مال اس راہ میں قربان کروں گا۔ اگر میں شہید ہو جاؤں تو می افضل ترین شہداء میں سے ہوں گا اوراگر میں زندہ رہا تو میں وہ ابو ہریرہؓ ہوں گا جو عذاب
مزید پڑھیے


آپ نے یاد دلایا تو مجھے یاد آیا

منگل 21  ستمبر 2021ء
ظہور دھریجہ
گزشتہ روز سینئر صحافی اشرف شریف کا کالم ’’سفر ڈیرہ اسماعیل خان کا‘‘ پڑھا تو مجھے یاد آیا کہ میری زندگی کا بہت سا حصہ ڈیرہ اسماعیل خان کے سفر میں گزرا ہے۔ جناب اشرف شریف نے راستے کی جن مشکلات کا ذکر کیا ان مشکلات سے میں خود گزرتا آرہا ہوں اس لیے ان کی بات مجھے اپنی بات لگی اور میں نے اس کالم کو دو مرتبہ پڑھا۔ اپنے کالم کا آغاز انہوں نے اس طرح کیا کہ ’’سفر کیلئے ہمیشہ شوق سے آمادہ رہتا ہوں۔ اس بار ڈیرہ اسماعیل خان منزل تھی۔ نئے سفر معلومات اور تجربات
مزید پڑھیے


لنڈی کوتل کی لالٹین

منگل 21  ستمبر 2021ء
آصف محمود
سجاد اظہر کی ’’ لنڈی کوتل کی لالٹین ‘‘ دیکھی تو ہیمنگوے کا ناول ’’ اے فیئر ویل تو آرمز‘‘ یاد آگیا۔ہیمنگوے نے ناول لکھا تھا اور سجاد نے نثری نظمیں لیکن الجھن ایک جیسی ہے۔ اے فیئر ویل تو آرمز پڑھا تو یہ فیصلہ کرنا مشکل تھا کہ اس میں اسلحے اور جنگوں کو الوداع کہا جا رہا ہے یا اپنے بچھڑ جانے والے پیار کو ۔یعنی’ آرمز ‘ کا تعلق اسلحے سے ہے یا بانہوں سے۔ اور لنڈی کوتل کی لالٹین کو دیکھا اسلحے کے اوپر حجرے میں رکھی لالٹین کی جلی ہوئی چمنی دیکھ کر خیال آیا کیا
مزید پڑھیے


ٹیکس چو رو ں کااحتساب

منگل 21  ستمبر 2021ء
عبداللہ طارق سہیل
سی پیک پر وزیر اعظم کے معاون خصوصی خالد منصور نے سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے منصوبہ بندی میں کہا ہے کہ چینی کمپنیاں سی پیک پر کام کی رفتار سے مطمئن نہیں۔کمیٹی سے سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ چینی سفیر نے انہیں بتایا ہے کہ تین سال کے دوران سی پیک پر کچھ نہیں ہوا۔ تین سال سے سی پیک پر کچھ نہیں ہوا۔اس فقرے کے بعد سی پیک کے ساتھ کون سا لاحقہ استعمال کیا جائے؟مرحوم یا کالعدم؟اصحاب لغت رہنمائی فرمائیں۔ کچھ نہ ہونے یا کام کی رفتار سے مطمئن نہ ہونے کا شکوہ دراصل تجاھل عارفانہ ہے۔2014ء
مزید پڑھیے


افغانستان میں شنگھائی تعاون تنظیم کا ممکنہ کردار

منگل 21  ستمبر 2021ء
ڈاکٹر طاہر اشرف
گزشتہ ہفتے تاجکستان کے شہر دوشنبے میں منعقد ہو نے والے شنگھائی تعاون تنظیم کے 20 ویں سربراہی اجلاس میں افغان طالبان پر زور دیا گیا ہے کہ وہ امریکی پسپائی اور طالبان کے کابل پر قبضے کے بعد مزید جامع حکومت کو اقتدار سونپیں اور مغرب کو بالعموم اور امریکہ کو خاص طور پر یاد دہانی کرائی گئی ہے کہ یہ ان کی ذمہ داری ہے کہ وہ گزشتہ ماہ ملک میں اپنی 20 سالہ موجودگی کو ختم کرنے کے بعد افغانستان میں انسانی تباہی کی بحران سے بچنے میں مدد کریں۔ علاقائی تعاون ، افغانستان میں جاری
مزید پڑھیے


اورینٹل کا جو ذکر کیا…… (4)

منگل 21  ستمبر 2021ء
ڈاکٹر اشفاق احمد ورک
میاں نظامی! ایک وہ ہمارا تمھارا زمانہ تھا کہ اساتذہ کے سادہ سادہ کمروں کے پٹ کسی عاشق کے دل اور محبوبِ مغلوب کی باہوں کی طرح کھلے رہتے تھے۔ ٹھنڈی مشینیں اور مزاج ابھی اس قریۂ ادب و لطافت میں داخل نہیں ہوئے تھے۔ ہم پتلی گلی ہی میں سے جھانک کے ڈاکٹر خواجہ زکریا، ڈاکٹر ظہور احمد اظہر، حفیظ تائب، ڈاکٹر سہیل احمد خاں، ڈاکٹر عبیداللہ خاں، سجاد باقر رضوی، ڈاکٹر اکرم شاہ، ڈاکٹر ظہور الدین، ڈاکٹر مظہر معین، ڈاکٹر رفیع الدین ہاشمی، ڈاکٹر تحسین فراقی، ڈاکٹر آفتاب اصغر، ڈاکٹر شہباز ملک، ڈاکٹر اسلم رانا، ڈاکٹر یوسف
مزید پڑھیے


نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم اور تہاڑ جیل کا راشٹر پتی

منگل 21  ستمبر 2021ء
افتخار گیلانی
ابھی حال ہی میں جس طرح نیوزی لینڈ کرکٹ انتظامیہ نے پاکستان میں سکیورٹی خدشات کی آڑ میں اپنی ٹیم کا دورہ ایسے وقت منسوخ کردیا، جب ان کی کرکٹ ٹیم پاکستان میں پہلے سے ہی موجود تھی اور پریکٹس کر رہی تھی، مجھے یاد آتا ہے کہ اس سے بھی عجیب و غریب حالات میں 2002ء میں امریکی خواتین کی ہاکی ٹیم نے بھارت کے ساتھ پانچ ٹیسٹ میچوں کی سیریز رد کردی تھی۔ واقعہ کچھ یوں ہوا کہ انڈین ہاکی فیڈریشن کی دعوت پر امریکی ٹیم اپنے تمام لائو لشکر کے ساتھ آدھی رات گئے دہلی آئی
مزید پڑھیے


اہل کراچی کے لیے گرین لائن بسیں

منگل 21  ستمبر 2021ء
اداریہ
گرین لائن ریپڈ بس سروس کے لئے درآمد کی جانے والی 40بسوں کی پہلی کھیپ کراچی پہنچ گئی ہے۔بسوں کو آف لوڈ کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ گرین لائن منصوبے کے لئے مزید 40بسیں اگلے ماہ کراچی پہنچ جائیں گی۔کراچی میں گرین لائن بس منصوبہ 2016 میں شروع کیا گیا تھالیکن پھر یہ میگا پرا جیکٹ صوبائی حکومت کی عدم دلچسپی اور تبدیلیوں کا شکار ہوتا چلا گیا تاآنکہ وفاقی حکومت کو اس پر مکمل توجہ دینا پڑی۔ اب بھی اس کا بس ٹریک نامکمل ہے جسے آئندہ
مزید پڑھیے


روایتی سرنجوں کے استعمال پر پابندی کا فیصلہ

منگل 21  ستمبر 2021ء
اداریہ
وفاقی حکومت نے ایڈز اور ہیپاٹائٹس کے پھیلائو کو روکنے کے لئے 30نومبر سے ملک بھر میں روائتی سرنجوں کے استعمال پر پابندی کا فیصلہ کیا ہے۔جنرل آف پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے اعداد و شمار کے مطابق پاکستان سالانہ 450ملین سرنجیں درآمد اور 804ملین سالانہ مقامی طور پرتیار کرتا ہے۔ملک میں غیر معیاری سرنجوں کے استعمال کی شکایات آنے کے بعد 2014ء میں عالمی ادارہ صحت کی جانب سے کی جانے والی تحقیق میں 34فیصد سرنجیں بنانے والی کمپنیوں کو غیر معیاری قرار دیا گیا تھا۔پاکستان میڈیکل ریسرچ کونسل کی ایک رپورٹ کے مطابق ایک کروڑ 18لاکھ مریض
مزید پڑھیے


اصلاحات پر حکومت اور الیکشن کمیشن میں اختلاف

منگل 21  ستمبر 2021ء
اداریہ
آئینی اداروں کے درمیان کسی تنازع کو جلد طے نہ کر لیا جائے تو نئے تنازعات کا پیدا ہونا لازم ہو جاتا ہے۔کئی ہفتوں سے پاکستان الیکشن کمیشن اور حکومت کے مابین انتخابی اصلاحات اور الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے معاملے پر اختلاف ایک نوع کے جھگڑے میں تبدیل ہوتا نظر آرہا ہے۔حکومت نے اپوزیشن اور الیکشن کمیشن کو واضح انداز میں کہا کہ وہ انتخابی عمل کو دھاندلی کے الزامات سے بچانا چاہتی ہے۔الیکٹرانک ووٹنگ مشین کئی اعتبار سے انتخابی عمل کو شفاف رکھ سکتی ہے۔اگر اس پر اعتراضات ہیں تو وہ حکومت کے سامنے رکھے جائیں تاکہ انہیں دور
مزید پڑھیے


افغانستان میں وسیع البنیاد حکومت اور پاکستان کی کوششیں

پیر 20  ستمبر 2021ء
اداریہ
تاجکستان میں شنگھائی تعاون تنظیم کے دو روزہ اجلاس میں شرکت کے بعد وطن واپسی پر وزیر اعظم عمران خان نے افغانستان میں وسیع البنیاد حکومت کی تشکیل کے لئے طالبان سے بات چیت سے آگاہ کیا ہے۔وزیر اعظم نے طالبان سے کہا ہے کہ وہ حسب وعدہ افغانستان میں رہنے والے تمام قومیتی گروہوں کو اقتدار میں شامل کریں۔اس حکمت عملی کے نتیجے میں افغانستان میں امن اور استحکام پیدا ہو گا۔وزیر اعظم نے بتایا ہے کہ طالبان سے مذاکرات خطے کے تمام ممالک سے مشاورت کے بعد شروع کئے گئے ہیں۔شنگھائی تعاون تنظیم خطے کی ایک بڑی تنظیم
مزید پڑھیے


ریڈیو پاکستان میں لازمی سروسز ایکٹ کا نفاذ

پیر 20  ستمبر 2021ء
اداریہ
اسلام آباد سے روزنامہ 92نیوز کی رپورٹ کے مطابق وفاقی حکومت نے 3 7سال بعد ریڈیو سروس ملک بھر کے تمام شہروں تک بڑھانے اور ریڈیو میں پریشر گروپ اور یونین کو کنٹرول کرنے کے لئے پہلی مرتبہ لازمی سروسز ایکٹ نافذ کر دیا ہے۔وزارت اطلاعات نے 10ارب 59کروڑ روپے سے ڈیجیٹل ریڈیو مائیگریشن کا منصوبہ تیارکیاہے نیز ریڈیو پاکستان میںخدمات سرانجام دینے میں رکاوٹ ڈالنے اور انکار کرنیوالے ملازمین کو برطرف کر دیا جائے گا۔ریڈیو ہماری تاریخی، ثقافتی، سماجی ‘سیاسی اور مذہبی سرگرمیوں کا امین ادارہ ہے۔14اگست 1947ء کو قیام پاکستان کی خوش خبری کا سب سے پہلا
مزید پڑھیے


پیدائش اور اموات کے سرٹیفکیٹ کا طریقہ کار تبدیل

پیر 20  ستمبر 2021ء
اداریہ
محکمہ بلدیات نے پیدائش اور موت کے سرٹیفکیٹ سرکاری ہسپتالوں سے جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔اس سلسلے میں سرکاری ہسپتالوں میں لوکل گورنمنٹ کا نمائندہ سپیشل ڈیسک قائم کرے گا۔پیدائش اور موت کے سرٹیفکیٹ پہلے یونین کونسل سے جاری ہوتے تھے۔اب حکومت نے ہسپتالوں سے اجرا مشروط کر کے عام شہری کو مشکل میں ڈال دیا ہے۔دیہی علاقوں میں بہت سے ایسے بچے ہیں جن کی پیدائش ہسپتالوں کی بجائے گھروں میں ہی ہوتی ہے۔جبکہ کئی دیہی علاقوں میں ہسپتال بھی موجود نہیں ہیں۔اس لئے ان علاقوں کے شہریوں کو اس میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔محکمہ
مزید پڑھیے


بھٹو خاندان: ایک ادھوری داستان

پیر 20  ستمبر 2021ء
عمر قاضی
آج اس شخص کی 25 ویں برسی ہے جو شخص قائد اعظم کے بعد پاکستان کے سب سے بڑے عوامی لیڈر ذوالفقار علی بھٹو کا بڑا بیٹا تھا۔ ان کے والدایک نئی طرز کے لیڈر کے طور پر ابھر کر سامنے آئے۔ جنہوں نے سیاست کو عوامی رنگ اور ڈھنگ دیا۔ جنہوں نے سیاست کو ایک ایسا جنون بنایا جن سے جیالوں نے جنم لیا۔اس میں کوئی شک نہیں کہ ان کی سیاست اقتداری تھی مگر اس میں مکمل طور پر مکاری اور ایسی فنکاری نہ تھی جو آج کل سیاست کی پہچان بن چکی ہے۔ شیخ ایاز کے بارے میں
مزید پڑھیے