BN

کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



آٹھ سے پانچ

جمعه 06 دسمبر 2019ء
سعد الله شاہ
جاگتی سی آنکھ سے کتنے خواب دیکھتے دشت پار کر گئے ہم سراب دیکھتے خوشبوئوں کے ساتھ ساتھ ہمسفر رہے تو پھر زخم زخم ہو گئے ہم گلاب دیکھتے یہ باغ و محراکا امتزاج بھی تو شاعرانہ ہے۔ کہیں زخمی ہاتھ اور کہیں آبلہ پائی، بس زندگی اسی کا نام ہے۔ وہ دور تھا جب ہم نے افق رنگ سنہرے دور میں قدم رکھا تھا، خواب ہماری آنکھوں پر دستک ہی نہیں دیتے تھے بلکہ آنکھوں کے راستے دل میں اتر آتے تھے۔ پھر وہ خواب سوچ بنے اور سوچ خیال بن کر شعروں میں ڈھلنے لگی۔ یہ وہ دور ہوتا ہے جب اشجار
مزید پڑھیے


افغانوں کے مسیحا کابے رحمانہ قتل

جمعه 06 دسمبر 2019ء
محمد حسین ہنز ل
در بدر افغانوں کی خدمت کے جذبے سے سَرشار جاپانی ڈاکٹرٹیٹسو ناکا مورا کے بہیمانہ قتل نے مجھ سمیت لاکھوں انسانوں کو دکھی کردیا-ڈاکٹرناکاموراکے سفاک قاتل یقینا اس خوش فہمی میں مبتلا ہونگے کہ انہوں نے ایک غیر ملکی اور غیر مذہب انسان کو قتل کرکے اپنے لیے جنت واجب کرلی لیکن حقیقت میں یہ ان کی بھول ہے- اول تو کسی بھی مذہب کے ماننے والے بے گناہ افراد کی جان ومال کو تحفظ فراہم کرناہمارے دین کی اولین ترجیح ہے،سو بغیر کسی شرعی جواز کے ایک مسلمان کیلئے کسی عیسائی ، یہودی یا دوسرے غیر مذہب کو مارناقطعاً ناجائز
مزید پڑھیے


سچائی ‘ شائستگی اور انسانیت سے پرہیز

جمعه 06 دسمبر 2019ء
سعدیہ قریشی
ہر صحافی کی طرح صبح سویرے اخبارات کا مطالعہ کرنا میری بھی عادت میں شامل ہے۔ ٹی وی چینلوں کی بے ہنگم بھیڑ میں بھی مجھے اخبار سے ہی خبر پڑھ کر تسلی ہوتی ہے۔ اگرچہ سارا دن چینلوں کی بریکنگ نیوز بھی کانوں میں پڑتی رہتی ہیں لیکن آخری تسلی اگلے روز کا اخبار پڑھ کر ہی ہوتی ہے اور اخبار بھی اصلی اخبار۔ انٹرنیٹ والا نہیں۔ یہ اور بات ہے انٹرنیٹ پر اردو اور انگریزی اخبارات کا مطالعہ بھی اب روز کے معمولات میں شامل ہے۔ آج کا دن ایسا ہوا کہ اخبار نہیں آئے۔ اس پر ستم یہ
مزید پڑھیے


آدھے ادھورے خواب ۔۔۔۔دیدہ پُر خوں ہمارا

جمعه 06 دسمبر 2019ء
آصف محمود
آپ سے کوئی پوچھ لے آپ کی فینٹسی کیا ہے تو آپ اسے فورا جواب دے پائیں گے یا آپ سوچنے بیٹھ جائیں گے ؟اس سوا ل کے جواب میں اگر آپ کو سوچنا پڑ جائے تو ، معاف کیجیے ، یہ بھی کوئی جینا ہے ۔ کاروبار حیات کے مسائل اور تلخیاں تو ایک حقیقت ہیں لیکن اب کیا یہی تلخیاں اور مسائل اوڑھ کر زندگی بتا دی جائے ؟سفر حیات کی کہانی کیا بس اتنی سی ہے کہ بی اے کیا ، نوکر ہوئے ، پنشن ملی اور مر گئے؟سفرِ عشق میں ضعف اور راحت طلبی کا تو
مزید پڑھیے


کراچی کے شہری نامعلوم افراد کے رحم وکرم پر

جمعه 06 دسمبر 2019ء
سعید خاور
کراچی میں نامعلوم افراد کی کارستانیوں کی تاریخ بہت پرانی ہے،72سال بعد بھی ان نامعلوم افرادنے قائد اعظم محمدعلی جناح کے شہر اور اس کے باشندوں کا جینا حرام کیا ہوا ہے۔کراچی میں قیام پاکستان کے تقریباً 6ماہ بعدپہلی بار یہ نامعلوم افراد حرکت میں آئے اور شہر کاامن اور بین المذاہب ہم آہنگی ٹھکانے لگا دی۔قائد اعظم نے قیام پاکستان کے بعد اقلیتوں کو امن کی ضمانت دی تھی اور برملا یہ کہا تھاکہ جوسکھ اور ہندو پاکستان چھوڑ کر نہیں جائے گا، اس کی جان ومال کی حفاظت ریاست کی ذمہ داری ہو گی لیکن ان نامعلوم
مزید پڑھیے


بندر کا انصاف

جمعه 06 دسمبر 2019ء
خاور نعیم ہاشمی
آپ نے بندر بانٹ کا محاورہ ہزاروں بار سنا ہوگا، ہزاروں بار خود بھی استعمال کیا ہوگا لیکن شاید آپ نے اس محاورے کے پیچھے کہانی کیا ہے وہ کبھی نہ سنی ہو،آج یہ کہانی ہم دوہرا دیتے ہیں تاکہ پاکستان کی ہمیشہ سے قائم سیاست کو سمجھنے میں آپ کو کوئی کوفت نہ ہو، کہانی سنانے سے پہلے ہم آپ کو یہ بھی بتاتے چلیں کہ دنیا میں جتنے بھی انسان، چرند پرند اور درندے ہیں بندر واحد جانور ہے جس کے دو دماغ ہوتے ہیں، ملائشیا ، سنگا پوراور انڈونیشیا میں بندروں کے دماغ کا سالن مقبول ترین
مزید پڑھیے


کیا ہم جمہوریت کے قابل ہیں!

جمعه 06 دسمبر 2019ء
شاہین صہبائی
پاکستان میں سیاست کا معیار اور تنزلی دیکھ کر اکثر یہ سوال ذہن میں آتے ہیں کہ کیا ہماری قوم اور ملک جمہوری سیاست کے قابل ہے؟ کیا یہاں آزادی اظہار ہونا چاہیے؟ کیا ہم کبھی اپنی ذاتی انا اور ذاتی فائدے کی تگ و دو سے باہر نکل سکیں گے؟ کیا ہم اس قابل ہیں کہ ہم ایک فرد ایک ووٹ کا اصول استعمال کرتے ہوئے اپنی حکومتیں اور اپنے لیڈر چنیں؟ کیا ہم واقعی ایک قوم ہیں یا کچھ قومیتوں اور افراد کا مجموعہ ہیں جو دنیا کا ہر اچھا اصول اور طریقہ تو اپنے لئے مانگتے ہیں
مزید پڑھیے


بنیادی انحراف ……(1)

جمعه 06 دسمبر 2019ء
ہارون الرشید
اس نے کہا : ایسی مخلوق اب میں بنائوں گا کہ میری عبادت کرے اور اپنے ارادہ و اختیار کے ساتھ ۔ چاہے تو انکار کر دے ، چاہے تو شکر کرے ۔ مدتوں سے مذہب کے باب میں ، اس کے مقاصد کے بارے میں ہم حیران و سرگرداں پھرتے ہیں ۔ ان تعلیمات پہ مطمئن بیشتر لوگ ساری زندگی گزار دیتے ہیں ، جو انہیں ورثے میں ملی ہوں ۔ مذہب کا مگر ایک طے شدہ مقصد تھا ، بنیادی مقصد ۔ غور کرنے والوں نے کبھی اس پر بھی غور کیا ؟ بہت پہلے سائنسدانوں نے تحقیق و
مزید پڑھیے


مہنگائی کی شرح میں تشویشناک حد تک اضافہ

جمعه 06 دسمبر 2019ء
اداریہ
عالمی مالیاتی اداروں نے ملک کے معاشی بحران کے سبب رواں برس مہنگائی کی شرح میں 12فیصد اضافہ ہونے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔ موجودہ حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد روپے کی قدر24فیصد تک کم ہو چکی ہے۔ حکومت نے ملک کو اقتصادی بحران سے نکالنے کے لئے دوست اسلامی ممالک سے ریلیف حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ آئی ایم ایف سے نہ صرف پیکیج لیا بلکہ اپنی معاشی ٹیم بھی تبدیل کی۔ وزیر خزانہ اسد عمر کی جگہ مشیر خزانہ حفیظ شیخ چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی کے علاوہ گورنر سٹیٹ بنک ایسے کلیدی عہدوں پر
مزید پڑھیے


پاک ‘سعودی عرب معاہدہ حج

جمعه 06 دسمبر 2019ء
اداریہ
پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان حج معاہدہ 2020ء طے پا گیا ہے جس کے تحت آئندہ حج کے موقع پر 2لاکھ پاکستانی عازمین فریضہ حج ادا کرینگے۔ علاوہ ازیں منیٰ‘ مزدلفہ اور عرفات میں عازمین حج کی شکایات کے ازالہ کے لئے سعودی عرب پاک جائنٹ ورکنگ کمیٹی کے قیام کا فیصلہ کیا گیا۔ یہ امر یقینا خوش آئندہ ہے کہ آئندہ حج پر 20ہزار اضافی پاکستانی عازمین کو فریضہ حج کی ادائیگی کا موقع ملے گا‘ وزیر مذہبی امورپیر نور الحق قادری کی سربراہی میں پاکستانی وفد کے سعودی حکام سے کامیاب مذاکرات کے بعد یہ امید بجا
مزید پڑھیے


الیکشن کمیشن کا تقرر، سپریم کورٹ سے رجوع

جمعه 06 دسمبر 2019ء
اداریہ
چیف الیکشن کمیشن اور ممبران کی تعیناتی کے لئے قائم پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس چیئرپرسن ڈاکٹر شیریں مزاری کی زیر صدارت پارلیمنٹ ہائوس میں ہوا۔ جس میں حکومتی نمائندوں اور اپوزیشن ارکان کے درمیان ڈیڈ لاک برقرار رہا۔ جس کے بعدمتحدہ اپوزیشن نے چیف الیکشن کمیشن اور ممبران کی تعیناتی نہ ہونے پر سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی ہے۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان ایک خود مختار آئینی ادارہ ہے، جو ملک میں آزادانہ اور غیر جانبدارانہ انتخاب کروانے کا ذمہ دار ہے۔ الیکشن میں حصہ لینے والی تمام جماعتوں کے اثاثوں کی چھان بین اور امیدواروں کی جانچ
مزید پڑھیے


طلبہ یونین کی بحث، چند وضاحتیں

جمعه 06 دسمبر 2019ء
محمد عامر خاکوانی
طلبہ یونین کی بحالی کے حوالے سے کالموں کا سلسلہ دراز ہوتا جا رہا ہے۔ اخبارات میں بحث کو طول دینا ذاتی طور پر پسند نہیں۔ہر جگہ مناظرہ سجانے کا موقعہ نہیں ہوتا، بہتر طریقہ یہی ہے کہ اپنا نقطہ نظر بیان کر کے آگے بڑھ جائیں۔جوابی طور پر کچھ سامنے آئے، تب ایک آدھ اور تحریر لکھ دی جائے۔ پچھلے کالم میں طلبہ تنظیموں کے حوالے سے چند ناخوشگوار مشاہدات لکھے تھے۔ اس پر آنے والا ردعمل خاصا وسیع اور توقعات سے زیادہ رہا۔ بہت سے لوگوں نے میرے فیس بک پیج پر اپنے مشاہدات اور تاثرات لکھے۔
مزید پڑھیے


آزاد صحافت کی اوقات

جمعه 06 دسمبر 2019ء
ارشاد احمد عارف
منگل کی سہ پہر امریکی نشریاتی ادارے کی طرف سے ایک پروگرام میں شرکت کی دعوت ملی جس کا موضوع’’پاکستانی میڈیا پر عائد پری سنسر شپ‘‘ تھا۔ذاتی مصروفیات کی بنا پر شرکت سے معذرت کی مگر سوچ میں پڑ گیا شرکت کی صورت میں کیاعرض کرتا؟۔ایک روز قبل برطانوی کرائم ایجنسی(این سی اے) کا پریس ریلیز جاری ہوا جس میں پاکستان کے بزنس ٹائیکون ملک ریاض حسین سے عدالت کے باہر سیٹلمنٹ کے تحت 190ملین پائونڈ سٹرلنگ کی وصولی کا ذکر تھا‘ پریس ریلیز میں یہ بھی بتایا گیا کہ نمبر ایک ہائیڈ پارک کی جائیداد اور آٹھ بنک اکائونٹس
مزید پڑھیے


بزدار سرکار کارکردگی اور تعریف

جمعرات 05 دسمبر 2019ء
یوسف سراج
مولانا فضل الرحمٰن سے منسوب ایک قولِ زریں یہ ہے کہ ہم سیاست میں مفادہی کمانے آتے ہیں ، نیکی کا ارادہ ہو تو رائے ونڈ جا کے چلہ لگا لیتے ہیں،اس قولِ زریں سے آشکار یہ ہوتا ہے کہ سیاست میں چلہ نہیں ،چکر دینا لازم ہوتاہے ۔ابوالکلام نے کہا تھا، سیاست کے سینے میں دل نہیں ہوتا ۔ کہا یہ بھی جاتا ہے کہ سیاست میں حلیف ہوتے ہیں یا حریف، دوست نہیں ہوتے ۔ ممکن ہے ،سیاست میں کبھی کچھ مروت بھی ہوتی ہو، آج مگر یہ عین عریاں ہو چکی۔محض بے معنی گفتگو۔ پیاز کی طرح
مزید پڑھیے


خواجہ فرید ؒکے حالاتِ زندگی

جمعرات 05 دسمبر 2019ء
ظہور دھریجہ
عظیم صوفی شاعر حضرت خواجہ غلام فرید ؒ کوریجہ کا تین روزہ سالانہ عرس مبارک کوٹ مٹھن میں جاری ہے ۔ اپنے محل و قوع کے اعتبار سے کوٹ مٹھن جاگیرداروں کے جھرمٹ میں ہے ۔ ایک طرف میر بلخ شیر مزاری ، نصر اللہ خان دریشک ، دوسری طرف مخدوم خسرو بختیار ، مخدوم احمد محمود و دیگرکے آبائی گھر ہیں ۔ یہ جاگیردار نسل در نسل بر سر اقتدار چلے آ رہے ہیں مگر اس خطے کی بہتری میں آج تک کوئی لمحہ نہیں آیا ۔ عرس کے موقع پر ہزاروں افراد کی بے بسی اور بے
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ









سجاد میر
شہر آشوب

مستنصر حسین تارڑ
ہزار داستان

مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں


مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ


بشریٰ رحمان
چادر چاردیواری اور چاندنی

نو شی گیلا نی
کا لم کہا نی


افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے


رضا رومی
رومی نامہ

انجم نیاز
یادداشت از امریکا



خاور گھمن
گھمن گھیریاں


سعید خا ور
حر ف درما ں


راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ

ایچ اقبال
ایچ اقبال


قدسیہ ممتاز
حرف تازہ




سعود عثمانی
دل سے دل تک

اثر چوہان
سیاست نامہ

عامر متین
عامر متین

ارشاد محمود
بات یہ ہے


ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے



سعید خاور
حرفِ درماں


رعایت اللہ فاروقی
گفتار و پندار

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
کہانی کی کہانی

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

رحمت علی رازی
درون پردہ

وسی بابا
باتاں


راحیل اظہر
غبارِخاطر

محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم