BN

کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



پنجاب: بغیر کپتان کے ٹیم

منگل 03 دسمبر 2019ء
ڈاکٹر حسین پراچہ
جناب عمران خان کا طرزِ سیاست بڑا دلچسپ ہے۔ بعض لوگ اسے پیچیدہ سمجھتے ہیں مگر دراصل یہ اندازِ حکمرانی بڑا سادہ ہے۔ اپنے اعتراض کریں یا نہ کریں اپنی کابینہ کے لوگ دبی زبان میں فریاد پیش کریں یا اپوزیشن نالائقی کے علی الاعلان طعنے دے، خان صاحب ایک تابڑ توڑ جواب دے کر مخالفین کی زبانیں گنگ کروا دیتے ہیں۔ اپنے ہوں یا ’’پرائے‘‘ سب یک زبان ہیں کہ پنجاب میں گورننس نام کی کوئی شے نہیں، ترقیاتی کام نہیں ہو رہے، کئی ماہ سے لاہور اور دوسرے شہروں میں ڈینگی نے اودھم مچا رکھا ہے۔ لاہور شہر
مزید پڑھیے


پرانے شکاری، نیا جال لائے

منگل 03 دسمبر 2019ء
اوریا مقبول جان
کیمونسٹ طلبہ تحریک کی شروع دن سے ہی تین علامتیں تھیں، اور آج تیس سال کے وقفے کے بعد جب اس تحریک کا دوبارہ آغاز کرنل (ریٹائرڈ) فیض احمد فیض کی یاد میں منعقد لاہور میں امن میلے پر '' لال لال لہرائے گا'' گا کر کیا گیا تو وہی تین علامتیں ویسے ہی نظر آتی تھیں۔ امریکی اور یورپی امداد سے چلنے والی این جی اوز میں تیس سال پناہ لینے والے افراد اب سیکولرزم کے بوسیدہ لباس سے برآمد ہوئے ہیں۔ یہ تین علامتیں تھیں (۱) الحاد:یعنی اللہ تعالیٰ، اس کے رسولوں اور اس کے عطا کردہ نظام
مزید پڑھیے


ٹیکس کیس ہارنے پرمتعلقہ افسر ذمہ دار قرار

منگل 03 دسمبر 2019ء
اداریہ
ایف بی آر افسروں کی عدم پیروی کے باعث اعلیٰ عدالتوں میں مقدمات ہارنے کا رجحان بڑھنے کے بعد محکمے نے ایک سرکل کے ذریعے ٹیکس کیس ہارنے پر چیف کمشنر ریجنل آفس اور متعلقہ کمشنر کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔ موجودہ حکومت نے ٹیکس کا دائرہ کار بڑھانے کے لئے بڑے مثبت اقدام کئے ہیں، جس کے دھیرے دھیرے دوررس نتائج سامنے آ رہے ہیں لیکن ان نتائج سے فائدہ کیسے اٹھانا ہے محکمہ اس بارے میں یکسر غافل ہے کیونکہ بڑی بڑی مچھلیوں کے کیسز جب اعلیٰ عدالتوں میں آتے ہیں تو ایف بی آر کے متعلقہ افسران
مزید پڑھیے


طلبہ تنظیموں کی بحالی کا مسئلہ

منگل 03 دسمبر 2019ء
اداریہ
وزیر اعظم عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ طلبہ تنظیموں کی بحالی کے لئے جامع ضابطہ اخلاق مرتب کریں گے جس کے لئے بین الاقوامی شہرت یافتہ جامعات کے بہترین تجربات سے فائدہ اٹھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے پاکستانی جامعات میں طلبہ تنظیمیں پرتشدد ہو چکی ہیں جس کی وجہ سے تعلیمی ماحول تباہ ہوتا ہے۔ وزیراعظم کا یہ کہنا بالکل درست ہے کہ یونیورسٹیاں مستقبل کے رہنما اور طلبہ تنظیمیں مستقبل کی قیادت تیار کرتی ہیں۔ جامعات کی سطح پر طلبہ تنظیموں کی قیادت سے بجا
مزید پڑھیے


نیب آرڈیننس میں ترامیم کا مسودہ

منگل 03 دسمبر 2019ء
اداریہ
وفاقی حکومت نے نیب آرڈیننس میں ترامیم کا مسودہ تیار کر لیا ہے۔ اخباری اطلاعات کے مطابق نئی ترامیم میں چیئرمین نیب کے اختیارات محدود کرنے، وزرائ، اراکین پارلیمنٹ اور بیوروکریسی کو نیب کی کارروائیوں سے محفوظ رکھنا شامل ہے۔ مجوزہ ترامیم کے تحت نیب 90 دن کے بجائے ملزموں کو 14 روز تک تحویل میں رکھ سکے گا۔ نیب انکوائری کو چھ ماہ کے عرصہ میں مکمل کرنا لازم ہو گا۔ سرکاری افسروں کے خلاف انکوائری سکروٹنی کمیٹی کی منظوری سے مشروط ہو گی۔ اس کمیٹی میں بیوروکریٹ شامل ہوں گے۔ یہ تجویز بھی دی گئی ہے کہ نیب
مزید پڑھیے


کلچر کی جنگ

پیر 02 دسمبر 2019ء
سجاد میر
گزشتہ دنوں ایک کالم لکھا تھا کہ این جی او کی سواری آ رہی ہے۔ آغاز اس فقرے سے کیا تھا کہ فیض احمد فیض ایک این جی او کا نام ہے۔ وجہ اس کی عاصمہ جہانگیر پر ایک تین روزہ عالمی کانفرنس بنی تھی جس میں دنیا بھر سے لوگوں کے پَرّے کے پَرّے شریک ہوئے تھے۔ اس کا تازہ ترین مظاہرہ طلبہ یونین کی بحالی کے نام پر ایک کلچر کی ریلی ہے۔ اس ریلی کی ریہرسیل درمیان میں ایک فیض میلے میں نمودار ہوئی تھی۔ یہ سب ایک ہی سلسلے کی کڑیاں ہیں جن پر ایک لمبے
مزید پڑھیے


کشمیر:برصغیرکافلسطین !

پیر 02 دسمبر 2019ء
عبدالرفع رسول
مسلسل120ویں روز بھی مقبوضہ وادی کشمیر میںبھارتی فوجی محاصرہ جاری ہے۔محاصرے کے اس طویل دورانیے میں ظلم وجورکی وہ کونسی قسم ہے کہ جوقابض فوج کی طرف سے اسلامیان کشمیرپرآزمائی نہ گئی ہو۔ظلم وستم کے ساتھ ساتھ بھارت کشمیرکی(Demography)تبدیل کرنے کے لئے واضح طورپر کئی طرح کے ناپاک اقدام بھی اٹھارہاہے جن میں اسرائیلی طرزکاشرمناک منصوبہ بھی شامل ہے جس پروہ عمل درآمدکرچکاہے اوربدھ27نومبر2019کوکشمیری پنڈتوں’’کشمیری ہندوئوں‘‘ اور بھارتی ہندوئوںکی ایک مشترکہ تقریب سے تقریرکرتے ہوئے امریکی شہر نیویارک میں تعینات بھارتی قونصلیٹ جنرل سندیپ چکرورتی نے اسی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ نریندر مودی حکومت مقبوضہ کشمیر میں
مزید پڑھیے


درویش منیر سیفی کی برسی

پیر 02 دسمبر 2019ء
سعد الله شاہ
یہ بات تو عام مشاہدے کی ہے کہ ثمر بار پیٹر اپنی ٹہنیوں کو جھکا دیتا ہے اور سایہ دار درخت اپنی بانہیں پھیلاتا ہے اور تناور درخت پرندوں کو بلاتے ہیں۔ ایک برگد کا درخت بھی ہوتا ہے جس کی بزرگی چھپائے نہیں چھپتی، وہ صدیوں کی کہانی کہتا ہے۔ پتہ نہیں مجھے تو اس پر صوفی اور درویش کا گمان ہوتا ہے۔ کچھ ایسا ہی خیال میرا منیر سیفی کے حوالے سے ہے۔ انہیں پہلی مرتبہ ایک مشاعرے میں دیکھا تو وہ ایک بابو تھے۔ کاٹ دار شعر سنا رہے تھے۔ پتہ چلا کہ وہ کراچی کے بینک
مزید پڑھیے


چیف جسٹس کی سرائیکی میں تقریر

پیر 02 دسمبر 2019ء
ظہور دھریجہ
چیف جسٹس آف سپریم کورٹ سردار آصف سعید کھوسہ نے ملتان ‘ دیرہ غازی خان اور بہاولپور بار سے خطاب کیا ۔ ڈی جی خان میں چیف جسٹس نے سرائیکی میں خطاب کیا، جس پر میں نے سوشل میڈیا پر پوسٹ لگائی ’’ زندہ باد چیف جسٹس سردار آصف سعید خان کھوسہ ! آپ نے سرائیکی میں خطاب کر کے وسیب کے کروڑوں لوگوں کا دل خوش کر دیا ۔‘‘ چیف جسٹس نے اپنے خطاب میں کہا ہے کہ عدلیہ کا آن لائن نظام لا رہے ہیں ، اب ہر جگہ ہائی کورٹ بینچ بنانے کی ضرورت نہیں ۔ ڈی
مزید پڑھیے


’’رخصتی ‘‘۔۔۔ عرب ماں کی بیٹی کو نصیحتیں

پیر 02 دسمبر 2019ء
ڈا کٹر طا ہر رضا بخاری

موسمِ سرما کے یہ ایام شادی بیاہ کے اہتمام وانعقاد کے لیے ’’ہر اعتبار‘‘ سے بڑے موزوں جانے جاتے ہیں ، ہمارے ہاں کی شادی ،بیاہ کے تقریباتی پھیلائو میں ایک اچھا اضافہ مساجد بلکہ بادشاہی مسجد میں "رسمِ نکاح"کے انعقاد کا ہے ،ایسی ہی ایک تقریب میں محترم مجیب الرحمن شامی صاحب، چوہدری خادم حسین صاحب کے عزیز کی "رسمِ نکاح"میں شرکت کے لیے بادشاہی مسجد میں تشریف فرما ہوئے ،تو’’ نکاحیہ تقریب ‘‘کی گہما گہمی اور رونق سے محظوظ ہوئے اور مساجد میں نکاح کی اس روایت کی تحسین اس "مشاہدہ"کے ساتھ فرمائی کہ’’ مزا تو تب ہے
مزید پڑھیے


آگ لگی ہمری جھونپڑیا میں

پیر 02 دسمبر 2019ء
اشرف شریف
کبھی سوچا؟ ہم ،پوری قوم سنسنی خیزی کے نشے کی لت میں پڑ چکے ہیں۔ ہم میں سے کچھ لوگ اس بات پر خوشی سے پرجوش ہو جاتے ہیں کہ ہمارے گھر میں آگ لگی ہے۔ آگ لگی ہمری جھونپڑیا میں ہم گائے رے ملہار چلیں کچھ تاریخی معلومات کو دیکھتے ہیں،جس طرح برصغیر میں قدیم عمارتیں ماش کی دال، پتھر اور گارے سے تیار مرکب سے تعمیر ہوئیں اس طرح سیمنٹ کو سب سے پہلے اہل یونان نے استعمال کیا۔ یہ تین صدی قبل از مسیح کی بات ہے۔ یونانیوں نے پتہ چلایا کہ ریت، گول پتھروں اور کئی طرح کے دوسرے
مزید پڑھیے


لہو گرم رکھنے کا ہے اک بہانہ

پیر 02 دسمبر 2019ء
ارشاد محمود
ہفتہ رفتہ میں چیف آف آرمی اسٹاف کی مدت ملازمت میں توسیع پر جو ہنگامہ برپا ہواس سے ملک کی جگ ہنسائی خوب ہوئی۔ شکرہے کہ عدالت عظمیٰ نے اسے خوش اسلوبی سے حل کردیا ورنہ ناجانے آج کیا منظرنامہ ہوتا ۔ پاکستان کے شہری اس طرح کے ہنگاموں کے عادی ہیں لیکن دنیا یہ تماشا دیکھ کرگھبراجاتی ہے۔ وزیراعظم لیاقت علی خان چار برس دوماہ تک وزیراعظم رہے۔ ان کی شہادت کے بعد سات برسوں میں چھ وزراعظم تبدیل ہوئے۔جنر ل محمد ایواب خان نے اقتدارپر شب خون مارا اور دس برس تک بلا شرکت غیرے حکمرانی کا ڈنکا
مزید پڑھیے


مافیا ساتھ دے گا

پیر 02 دسمبر 2019ء
عبداللہ طارق سہیل
ہیں کواکب کچھ نظر آتے ہیں کچھ کا معاملہ تو ہمارے ہاں اکثر رہا۔ آرمی چیف کی توسیع کے معاملے نے جو متوقع یا غیر متوقع شکل اختیار کی۔ اس پر بھی بعض لوگ اسی قسم کی کوڑی لائے۔ پتہ نہیں یہ دور کی تھی یا نزدیک کی۔ معاملہ اتنا خاص نہیں تھا لیکن خاص بن گیا۔ حکومت نے توسیع دی تو پتہ چلا کہ اس کے پاس تو اب کوئی اختیار یا قانون ہے ہی نہیں؛چنانچہ معجزہ ظہور میں آیا۔ عدالت نے توسیع دے دی اور کہہ دیا کہ چھ مہینے میں قانون بنا لو۔ چھ مہینے تو بہت
مزید پڑھیے


رائیگاں

پیر 02 دسمبر 2019ء
ہارون الرشید
سچے متلاشی پا لیتے ہیں۔ گوہر انہی کو نصیب ہوتا ہے، جستجو جن کی کھری ہو وگرنہ رائیگاں ، ساری زندگی رائیگاں۔ اس عظیم شاعر، اس یاد رہ جانے والے آدمی فیض احمد فیض سے ایک بار اس ناچیز کو بھی واسطہ پڑا۔ اس کا ذکر بعد میں۔ فی الحال تو اس غلغلے کا ذکر، جو ان کے نام پہ برپا ہے۔ فیض بہت شائستہ اور صابر تھے۔ حیات ہوتے تو ان بچوں کو سمجھاتے کہ ہماری عمر تو رائیگاں رہی، تم کیوں رائیگاں کرتے ہو۔  درد تُو جو کرے ہے جی کا زیاں فائدہ اِس زیان میں کچھ ہے؟ فیض دنیا
مزید پڑھیے


پرانے شکاری، نیا جال لائے (قسط 1)

پیر 02 دسمبر 2019ء
اوریا مقبول جان
لاہور کی سڑکوں پر سرخ سویرے کا پرچم اٹھانے والے یہ وہی لوگ ہیں گذشتہ پچیس سال سے امریکہ، یورپ اور سرمایہ دارانہ جمہوریت کے بڑے بڑے بتوں کے سامنے سجدہ ریز تھے۔اپنا قبلہ بدلنے میں کمال رکھتے ہیں۔ جس دن سوویت یونین کے شہر لینن گراڈ میں غصے میں بپھرے ہوئے ہجوم نے سویت یونین کے بانی ولادی میر لینن کا مجسمہ گرایا، پچھتر سال سے روس پر مسلط جبر و استبداد کے نظام کا بوسیدہ لباس اتارا، لینن گراڈ کا نام بدل کر واپس مذہبی شخصیت کے نام پر سینٹ پیٹرزبرگ رکھا، تو عین اسی
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ









سجاد میر
شہر آشوب

مستنصر حسین تارڑ
ہزار داستان

مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں


مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ


بشریٰ رحمان
چادر چاردیواری اور چاندنی

نو شی گیلا نی
کا لم کہا نی


افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے


رضا رومی
رومی نامہ

انجم نیاز
یادداشت از امریکا



خاور گھمن
گھمن گھیریاں


سعید خا ور
حر ف درما ں


راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ

ایچ اقبال
ایچ اقبال


قدسیہ ممتاز
حرف تازہ





سعود عثمانی
دل سے دل تک

اثر چوہان
سیاست نامہ

عامر متین
عامر متین

ارشاد محمود
بات یہ ہے


ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے



سعید خاور
حرفِ درماں


رعایت اللہ فاروقی
گفتار و پندار

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
کہانی کی کہانی

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

رحمت علی رازی
درون پردہ

وسی بابا
باتاں


راحیل اظہر
غبارِخاطر

محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم