BN

کالم



آج کے کالم 


  


کالم آرکیو



سندھ پولیس کی بغاوت خطرے کی گھنٹی

پیر 20 جنوری 2020ء
سعید خا ور
یہ ورلڈ ریسلنگ اینٹرٹینمنٹ کی کسی نورا کشتی کامنظر نہیں بلکہ یہ پاکستان کے حق میں پہلی قرارداد منظور کرنے والے صوبہ سندھ کی حکومت اورسندھ پولیس کی باہمی لڑائی اور اٹھا پٹخ کے حقیقی مناظر ہیں جو ان دنوں آپ کو ٹی وی کی اسکرینوں اور اخبارات کی شہ سرخیوں میں دکھائی دے رہے ہیں۔ آئی جی سندھ اور سندھ حکومت کی اس کھلم کھلا لڑائی میں شکار پور کے ایس ایس پی ڈاکٹر رضوان احمد نے اپنی خفیہ رپورٹوں میں سندھ کابینہ کے دو اہم وزیروں امتیازاحمد شیخ اور سعید غنی کی نیک نامی پرسوالیہ نشان اٹھا
مزید پڑھیے


کپتان کے گُن نادان کیا جانیں

پیر 20 جنوری 2020ء
عبداللہ طارق سہیل
حکومت نے کہا ہے کہ آٹے کا بحران جلد ختم ہو جائے گا۔ آپریشن کا حکم دے دیا گیاہے۔ ٹھیک ہے۔ بحران پیدا کرنے کا مقصد تو حاصل ہو گیا جیسا کہ بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ وزیر اعظم نے ’’دوستوں‘‘ کو نوازنے کے لئے بحران خود پیدا کیا۔ سنا ہے‘ بعض مقدس ’’اے ٹی ایم‘‘ کے ذخائر وفور زر سے چھلک اٹھے ہیں اور کیوں نہ چھلک اٹھتے ۔گندم کی حالیہ فصل پر خریداری کا سرکاری ریٹ 11سو روپے من تھا۔ یہی گندم حکومت نے 28سو روپے من بیچی۔1700روپے فی من کا جائز منافع آخر کہیں تو پہنچا
مزید پڑھیے


خبطِ عظمت اور اس کا انجام

پیر 20 جنوری 2020ء
اوریا مقبول جان
اللہ نے یہ کائنات ایسی بنائی ہی نہیں کہ جس میں کوئی فرد ناگزیر ہو، اسکے بغیر یہ کارخانہ قدرت رک جائے، وہ نہ ہو تو ترقی کی رفتار تھم جائے۔ اس فنا کی طرف مسلسل بڑھتی ہوئی دنیا میں ایک کامیاب فانی انسان چند لمحوں کے لیے یہ تصور کر لیتا ہے کہ شاید اس کا کوئی نعم البدل موجود نہیں ہے۔ خود کو ناگزیر سمجھنے والے فرد کا اگر نفسیاتی تجزیہ کیا جائے تو اس میں دو طرح کے رجحان بدرجہ اتم موجود ہوں گے ایک عالی مرتبی کا فریب (Delusion of Grandeur) اور دوسرا یہ کہ اسے
مزید پڑھیے


بھکاری مافیاز کی نئی چالیں

پیر 20 جنوری 2020ء
اداریہ
بھکاری مافیا اپنے مذموم دھندے کو جاری رکھنے کے لیے نت نئے حربے اختیار کرتا ہے۔ حال ہی میں انکشاف ہوا ہے کہ بھکاری بچوں کو حکومتی اداروں کی کارروائی سے بچانے کے لئے بھکاری مافیا نے بچوں کو مائوں کی حفاظتی ڈھال فراہم کر دی ہے۔ ہمارے معاشرے میں گدا گری ایک کاروبار بن چکا ہے۔ رمضان المبارک کے مقدس ایام میں خصوصاً اور عام دنوں میں عموماً دیہاتوں سے معذور افراد اور اپاہج بچوں اور بوڑھوں کو باقاعدہ کرائے پر بڑے بڑے شہروں میں لایا جاتا ہے، جہاں پر ٹھیکیدار مختلف ٹریفک اشاروں پر انہیں بٹھا کر بھیک
مزید پڑھیے


ڈیوٹی کی مدمیں قومی خزانے کو اربوں کا نقصان

پیر 20 جنوری 2020ء
اداریہ
پاکستان کے کسٹم انٹیلی جنس حکام نے دو ماہ کے دوران طورخم کے راستے افغانستان سے آنے والے ڈرائی فروٹ سے بھرے ہوئے ایسے 384ٹرالرز کا پتہ چلایا ہے جو بغیر ڈیوٹی ادا کئے پاکستان میں داخل ہوئے اور ملکی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان پہنچایا۔ یہ بات اب ڈھکی چھپی نہیں کہ افغانستان اور ایران کے راستے بعض غیر قانونی طریقوں سے کئی خوردنی وغیر خوردنی اشیاء ٹیکس اور ڈیوٹی ادا کئے بغیر سمگل کر کے پاکستان لائی جاتی ہیں۔ حکام کی کئی کوششوں کے باجوداس دھندے پر مکمل طور پر قابو نہیں پایا جا سکا۔ اس کی
مزید پڑھیے


آٹا بحران کے سیاسی پہلو

پیر 20 جنوری 2020ء
اداریہ
ملک بھر میں آٹے کی عدم دستیابی بحران کی صورت اختیار کر گئی ہے‘ حکومت نے اس بحران کو ختم کرنے کے لئے چارہ جوئی شروع کی ہے تاہم اس کے لئے زیادہ باعث تشویش امر یہ ہے کہ اس معاملے کو حزب اختلاف موثر سیاسی حملے کی صورت استعمال کرنے کے قابل ہو گئی ہے۔ حکومت پر ذمہ داری اس حد تک ضرور بنتی ہے کہ وہ فوڈ کنٹرولروں ‘ ضلعی انتظامیہ اور پرائس کنٹرول میکنزم کے باوجود صورت حال کو بدترین سطح پر پہنچنے کا اندازہ قبل از وقت نہ کر سکی۔ اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے حکومت
مزید پڑھیے


قوم کا درد رکھنے والے دو نوجوان

پیر 20 جنوری 2020ء
محمد حسین ہنز ل
قدرتی آفات صرف پاکستان کا مقدر نہیں ہیں بلکہ اس نوعیت کے بے شمار آفات پوری دنیا میں ہمیشہ ایک مسئلہ رہا ہے۔زلزلوں سے لیکر شدید طوفانی بارشوں تک اور آندھیوں سے برف باری تک یہ سب آسمانی آفات کے مظاہر ہیں۔غور طلب امر یہ ہے کہ اس سے نمٹنے کیلئے دنیا کی ریاستیں کیا کرتی ہیں جبکہ مصیبت کی اس گھڑی میں ہم کہاں کھڑے ہوتے ہیں؟ آٹھ اکتوبر2005 ء کو مظفرآباد، بالاکوٹ ، راولاکوٹ اور خیبرپختونخوا کے بٹگرام، ایبٹ آباد، ناران ، کاغان اور دارالحکومت اسلام آباد میں ایک ہولناک زلزلہ آیا جس کی شدت
مزید پڑھیے


کشمیری بچوں کے تعذیب خانوں کاروح فرساانکشاف

پیر 20 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
انڈیا کے چیف آف ڈیفنس سٹاف بپن راوت کا کشمیری کمسن بچوں کے لیے قائم’’ ڈی ریڈکلائزیشن ‘‘کیمپوں روح فرسا اوررونگٹے کھڑے کرنے والے انکشاف سے کئی سوالات پیداہوئے ہیں۔ بپن راوت نے دلی میں منعقدہ ’’رائے سینا ڈائیلاگ‘‘میں جمعرات16جنوری 2020 ء کو ایک مذاکرے میں یہ انکشاف کیاکہ دس سے بارہ برس کے کشمیری بچوں کو آزادی پسند نظریات سے نکالنے کے لیے حکومت کے ذریعے ’’ڈی ریڈیکلائزیشن کیمپس‘‘چلائے جا رہے ہیںجن میں ان کے بقول شدت پسند کشمیری بچوں اور نوجوانوں کو تنہائی میں رکھا جارہا ہے تاکہ نظریات بدلنے کے لئے ان کی ذہن سازی کی جا
مزید پڑھیے


جناح کا گمشدہ پاکستان (1)

پیر 20 جنوری 2020ء
عا بد قر یشی

جس طرح اس بات پر سبھی حلقوں کا اتفاق ہے کہ قیام پاکستان سے آج تک اس قوم کو قائداعظم محمد علی جناح جیسا سچا، صاف ستھرا، ایماندار، بااصول نڈر اور بے باک صاحب بصیرت لیڈر میسر نہیں آیا۔ اسطرح اس بات پر اختلاف کی گنجائش کم نظر آتی ہے کہ آج کا پاکستان وہ پاکستان نہیں ہے جس کا خواب علامہ اقبال نے دیکھا اور جسکے لئے لاکھوں لوگوں نے بے پناہ قربانیاں دیں۔ ایسی قربانیاں کہ صرف انکا تصور کرنے سے ہی رونگٹے کھٹرے ہو جاتے ہیں۔ اور پھر یہ تمام قربانیاں ایک عظیم ،جدوجہد، پختہ عزم اور
مزید پڑھیے


خان صا حب اتحادیوں کی خود سنیں!

پیر 20 جنوری 2020ء
عا رف نظا می
روزے معاف کرانے گئے نمازیں گلے پڑگئیں، عمران خان کی حکومت تو لٹھ لے کر اپوزیشن کے پیچھے پڑی ہوئی تھی خیال تھا کہ نیب کی کارروائیوں، ایف آئی اے حتیٰ کہ اے این ایف کو سیاسی مخالفین کے خلاف استعمال کرنے کے بعد گلیاں سنجیاں ہو جائیںگی اور مرزا یار پھرے گا لیکن قدرت کا اپنانظام ہے مکا فات عمل سے بچنا مشکل ہوتا ہے۔ گزشتہ چند ہفتوں میںہونے والے واقعات انتہائی حیران کن بلکہ چونکا دینے والے تھے۔ آرمی چیف کی مدت ملازمت میںتوسیع کے حوالے سے پارلیمنٹ کی طرف سے سروسزایکٹ بل اپوزیشن کے عمومی اتفاق رائے
مزید پڑھیے


جینوسائڈ واچ کی تحقیق اورآج کاہندوستان (آخری قسط)

اتوار 19 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
کل کے شمارے میں ہم نے جینوسائڈ واچ کی تحقیقی اورآج کاہندوستان پربات کرتے ہوئے اس امرکاجائزہ لینے کی کوشش کی تھی کہ کیسے ظالم حکمران اپنے ہی ملک کی اقلیتوں کے خلاف پہلے سازشیں رچاکران کاقتل عام کرتے ہیں اورکسی طرح زندہ بچ جانے والوں کو بالآخرملک بدرکرتے ہیں۔آج کے ہندوستان کی صورت حال جینوسائڈ واچ کی تحقیق کے پس منظرمیں ایک بہت بڑے خوفناک انسانی المیے کی طرف بڑھ رہی ہے۔جس دس ادوارکاجینوسائڈ واچ کی تحقیق میں تذکرہ کیاجاچکاہے اسے سامنے رکھتے ہوئے یہ اندازہ لگانا مشکل نہیں جس طرح فاشسٹ طاقتوں کے لیے یہ صورت حال’’
مزید پڑھیے


’’میجر جنرل آصف غفور ۔۔۔ماننا ہوگا‘‘

اتوار 19 جنوری 2020ء
احسان الرحمٰن
پاکستان کے کسی بھی نیوز چینل کا اسائمنٹ ایڈیٹر دفتر میں کام کا آغاز کرتے ہی سب سے پہلے افواج پاکستان کی ویب سائٹ پر جاتا ہے یا پھر آئی ایس پی آر کے رپورٹرسے اسکا پہلا سوال یہی ہوتا ہے…’’ہاں بھئی !کچھ ہے تو نہیں ؟‘‘ اس مختصر سوال کا مطلب افواج پاکستان کے ترجمان ادارے کی کسی ممکنہ نیوز کانفرنس پریس بریفنگ یااس ادارے کی جاری ہونے والی کسی خبر کے بارے میں جاننا ہوتا ہے کہ اگر ایسی کوئی سرگرمی ہو تو وہ کیمرا مین، فوٹو گرافر اور رپورٹر کو وہاں جانے کے لئے ابھی سے پابند کر
مزید پڑھیے


خوش فہمی کی دھوپ میں روشن جھوٹی آس

اتوار 19 جنوری 2020ء
ذوالفقار چودھری
عوام نے تحریک انصاف کو اعتزاز احسن کے ’’ماں کے جیسی ریاست‘‘ کے خواب کو سچ کرنے کے لئے ووٹ دیئے تھے ایسی ریاست جہاں سب کو تعلیم‘ صحت روزگار اور انصاف کے یکساں مواقع ملنا تھے عمران خاں کو سوئس بنکوں سے پاکستان سے لوٹے 200ارب ڈالر وطن واپس لا کر ملکی قرضے اتارنا اور دودھ اور شہد کی نہریں بہانا تھیں مگر سلیم انصاری نے کہا ہے نا کہ: خوش فہمی کی دھوپ میں روشن جھوٹی آس اندھیارے میں رینگتا ہر سچ کا وشواس حکومت کے ابھی دو سال مکمل نہیں ہوئے عمران کا بے رحم احتساب کا خواب عذاب بن
مزید پڑھیے


صحت کی صورت حال اور ابّا

اتوار 19 جنوری 2020ء
سعد الله شاہ
سخت مشکل تھی مگر نام خدا سے پہلے رکھ دیے ایک طرف میں نے سہارے سارے آج میرا دل چاہا کہ میں آپ کے ساتھ نہایت ہی دلچسپ معلومات شیئر کروں تجربہ بتاتا ہے کہ ایک اچھا ڈاکٹر آپ کو کئی برے ڈاکٹروں سے بچا دیتا ہے مگر اس ڈاکٹر کو آپ اپنا دوست رکھتے ہوں ۔تو جب علی الصبح میں سیر کو نکلا تو معروف عالم دین اور دانشور ڈاکٹر خضر یاسین مل گئے وہ برہان احمد فاروقی کے شاگرد خاص تھے۔ مجھ سے والد گرامی کی علالت کے بارے میں پوچھنے لگے تو میں نے کہا کہ چھوٹا بھائی احسان
مزید پڑھیے


بات آگے نکل چکی ہے

اتوار 19 جنوری 2020ء
احمد اعجاز
یہ سیاست دانوں کی خوش بختی ہے کہ عوام کی جانب سے،اُنہیں کبھی اور کسی بڑے امتحان میں نہیں ڈالا گیا۔البتہ ہر دَور میں حکمران خود اور عوام کوامتحانات میں ڈالتے چلے آئے ہیں ۔سیاسی حکمرانوں نے اپنے عمل سے بارہا عوام کے حوصلے کا امتحان بھی لیاہے اورنئے تنازعہ میں اُلجھایا بھی ہے۔ا س ملک یا عوام پر جس قدر بحران نازل کیے گئے وہ سارے کے سارے حکمرانوں کی کج فہم عمل کا نتیجہ ہی تو تھے۔عوام نے اگر کسی حکمران کی غلطی کا ردِ عمل دیا بھی تو محض علامتی نوعیت کے احتجاج کی صورت ۔ا س
مزید پڑھیے






کالم نگار

اداریہ
اداریہ









سجاد میر
شہر آشوب

مستنصر حسین تارڑ
ہزار داستان

مجاہد بریلوی
شہر ناپرساں


مبشر لقمان
کھرا سچ

عبداللہ طارق سہیل
وغیرہ وغیرہ


بشریٰ رحمان
چادر چاردیواری اور چاندنی

نو شی گیلا نی
کا لم کہا نی


افتخار گیلانی
مکتوب دہلی

خاور نعیم ہاشمی
پردہ اٹھتا ہے


رضا رومی
رومی نامہ

انجم نیاز
یادداشت از امریکا



خاور گھمن
گھمن گھیریاں


سعید خا ور
حر ف درما ں


راوٗ خالد
رولا رپہ



اشرف شریف
شہر نامہ

ایچ اقبال
ایچ اقبال


قدسیہ ممتاز
حرف تازہ





سعود عثمانی
دل سے دل تک

اثر چوہان
سیاست نامہ

عامر متین
عامر متین

ارشاد محمود
بات یہ ہے

عا بد قر یشی
تجا ہل عا دلا نہ


ناصرخان
فرنٹ لائن

عدنان عادل
امروزوفردا

ذوالفقار چودھری
تیسری آنکھ

شاہین صہبائی
چلتے چلتے



سعید خاور
حرفِ درماں


مظفر بخاری
گستاخی معاف

رعایت اللہ فاروقی
گفتار و پندار

یوسف سراج
نقش قدم


عمر قاضی
لالہ صحرائ

عبدالرفع رسول
مکتوب سری نگر

احمد اعجاز
دروا‍‌زہ

خالد ایچ لودھی
دل کی باتیں

رحمت علی رازی
درون پردہ

وسی بابا
باتاں


راحیل اظہر
غبارِخاطر

محمد عامر رانا
اقلیم در اقلیم