اسلام آباد(خصوصی نیوز رپورٹر)سکیورٹیز اینڈ ایکس چینج کمیشن آف پاکستان نے مالیاتی شعبے میں جدت اور نئی نئی مصنوعات اور خدمات کے فروغ کے پیش نظر، ملک کے پہلے ریگولیٹری سینڈ بکس میں شمولیت کے لئے کمپنیوں سے درخواستیں وصول کرنے کا اعلان کر دیا۔ ریگولیٹری سینڈ بکس میں کاروباری ادارے کسی بھی پراڈکٹ، خدمت، طریقہ کار یا بزنس ماڈل کو محدود پیمانے پر ایک کنٹرولڈ ریگولیٹری ماحول میں تجرباتی طور پر متعارف کروا سکتے ہیں۔ ریگولیٹری سینڈ بکس کی سہولت ایس ای سی پی کے ریگولیٹری سیکٹر میں آنے والے تمام شعبوں جیسے کہ انشورنس، کپیٹل مارکیٹ، نان بینکنگ فنانشل سیکٹر اور تمام کارپوریٹ سیکٹر کے لئے دستیاب ہے ۔ ایس ای سی پی ، ریگولیٹری سینڈ باکس گائیڈ لائنز 2019 پہلے ہی جاری کر چکا ہے ۔ ریگولیٹری سینڈ بکس میں شمولیت کے لئے رجسٹرڈ کمپنیاں ، غیر رجسٹرڈ اسٹارٹ اپس اور دیگر اہل افراد و ادارے یکم فروری سے 15 مارچ تک درخواستیں جمع کروا سکیں گے ۔ تاہم ، ایسے افراد و ادارے جو کہ ایس ای سی پی کے ساتھ بطور کمپنی رجسٹرڈ نہیں ہیں ، سینڈ بکس میں اندارج میں کامیابی کی صورت میں انہیں ایس ای سی پی سے بطور کمپنی رجسٹریشن حاصل کرنا ہو گی۔ریگولیٹری سینڈ میں رجسٹریشن کے لئے درخواست فارم، اہلیت ، طریقہ کار اور دیگر متعلقہ دستاویزات سینڈباکس گائیڈ لائنز میں فراہم کی گئیں ہیں جو کہ ایس ای سی پی کی ویب سائٹ پر دستیاب ہے ۔