اسلام آباد،سیالکوٹ(خصوصی نیوز رپورٹر،ڈسٹرکٹ رپورٹر)وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ حضرت امام حسین کے نام لیواؤں پر بھارتی فوج کا حملہ انتہائی قابل مذمت ہے اور آج معرکہ کربلا کا ایک تسلسل ہے ، یہ حملہ بھارتی ریاستی دہشت گردی کی بدترین مثال ہے ۔گزشتہ روز سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے مزید کہا کہ یزید کے پیروکار فسطائی مودی نے مظلوم کشمیریوں کے بنیادی آئینی، جمہوری و انسانی حقوق غصب کرکے انکی مذہبی آزادی بھی سلب کر لی۔ نہتے کشمیری عزاداروں پر مظالم اور گرفتاریوں کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ قاتل مودی کی غاصب فوج کے بدترین محاصرے اور کرفیو کے باوجود باہر نکل کر کشمیریوں نے حضرت امام حسین کی سنت کو زندہ کیا، حسینیت کے علمبرداروں نے بھارتی جبر کو للکارا ور حق و سچ پر ڈٹے رہنے کے غیر متزلزل عزم کا اظہار کیا۔ وہ دن دور نہیں جب یزید کی طرح ظالم بھارتی وزیراعظم نریند مودی اوربھارت بھی عبرت کا نشان بنے گا اورمقبوضہ کشمیر آزاد ہوگا۔علاوہ ازیں فردوس عاشق اعوان نے سیالکوٹ میں عزا داروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسوہ شبیری پوری انسانیت کیلئے مشعل راہ ہے ۔واقعہ کربلا محض ایک حادثہ نہیں بلکہ دستور حیات ہے ۔کربلا کے میدان میں خاندان نبوت کے قیمتی لعل جواہر شجر واسلام کی حیات کیلئے قربان ہوئے اور اولاد علی ؓ نے اپنا پاک خون دے کر شجر اسلام کو نئی زندگی دی ۔ آج جہاں جہاں مسلمان قربانیاں دے رہے ہیں و ہ حضرت امام حسین ؓ کی حیات مبارک سے روشنی حاصل کریں ۔آخری فتح حق اور سچ کی ہوتی ہے ۔