لاہور (نامہ نگارخصوصی) لاہور ہائیکورٹ میں تین ہیڈ مسٹریس کے تبادلے کے خلاف کیس کی سماعت ،عدالت نے سیکرٹری تعلیم اور پنجاب حکومت سے جواب طلب کرلیا لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شمس محمود مرزا نے ہیڈ مسٹریس فرخندہ ،فیصل سمیت دیگر کی درخواستوں پر سماعت کی درخواست گزار وں کے وکیل نے موقف اختیار کیاکہ سیاسی بنیادوں پر عہدہ سے ہٹاکر جونئیر ٹیچرز کو ہیڈ مسٹریس لگادیا گیا اس حوالے سے سیکرٹری تعلیم کو بھی درخواستیں دین لیکن کوئی شنوائی نہیں ہوسکی درخواست گزار کے وکیل نے نقطہ اٹھایا کہ قانون کے تحت جونئیر ٹیچرز کو ہیڈ مسٹریس کے عہدہ پر تعینات نہیں کیا جاسکتا لیکن رولز کی خلاف ورزی کی گئی لہذا عدالت اس اقدام کو کلعدم قرار دے عدالت نے آئندہ سماعت پر پنجاب حکومت اور سیکرٹری ایجوکیشن سے جواب طلب کرلیا