اسلام آباد(سپیشل رپورٹر) چیئر مین تحریک انصاف عمران خان نے کہا کہ کراچی ملک کی معاشی ترقی کا حب ہے ،کراچی کی ترقی کے بغیر ملک کی ترقی ممکن نہیں، نو منتخب ارکان سندھ کی اصل صورتحال سب کے سامنے لائیں ۔ان خیالات کااظہارانہوں نے پی ٹی آئی پارلیمانی پارٹی سندھ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں کپتان نے اتحادی جماعت ایم کیو ایم پر تنقید کا سخت نوٹس لیا ۔جمعرات کو بنی گالہ میں پارلیمانی پارٹی سند ھ کے اجلاس سے خطاب میں عمران خان نے کہا کہ سندھ میں بھی تبدیلی آ رہی ہے ،الیکشن میں کامیاب ہونیوالوں کو مبارکباد دیتا ہوں ،سندھ کی عوام کیساتھ کئے گئے وعدے پورے کرنے ہیں ،کراچی کی عوام نے مینڈیٹ دیا ہے ،عوام کے مسائل حل کرنے کیلئے ابھی سے تیاری شروع کریں ،کرپٹ عناصر کو بے نقاب کیا جائے ،پارلیمانی پارٹی اجلاس میں عمران خان نے پی ٹی آئی کراچی کے رہنمافردوس شمیم نقوی کے بیانات پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم ہماری اتحادی ہے ،پارٹی کے لوگ بیان بازی کرنے سے قبل یہ دیکھیں کہ کس پر تنقید کی جا رہی ہے اور اس کا ہماری سیاست پر کیا اثر پڑیگا ،ذرائع کے مطابق پارلیمانی پارٹی اجلاس میں اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی اور گورنر سندھ کے حوالے سے کوئی بات نہ ہو سکی۔قبل ازیں روس کے سفیرالیکسی دیدوونے عمران خان سے ملاقات کی اور انتخابات میں کامیابی پر چیئرمین تحریک انصاف کو مبارکباددیتے ہوئے کہاکہ ماسکو پاکستان کے ساتھ تعلقات میں مزید بہتری کا خواہاں ہے ۔ عمران خان نے روسی سفیر کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاکہ میں اور میری حکومت روس کے ساتھ تعاون میں بہتری لانا چاہتے ہیں،نروسی ڈرلنگ کمپنیوں کو پاکستان آمد کی دعوت دینا چاہیں گے ۔ادھر عمران خان سے ان کے وکیل بابراعوان کی بنی گالہ میں ملاقات ہوئی جس میں بابر اعوان نے ووٹ رازداری کیس پرعمران خان کو بریفنگ دی۔جس میں عمران خان کا کہنا تھا کہ انہوں نے ووٹ کی رازداری سوچ سمجھ کر پامال نہیں کی وہاں اتنا رش اور کیمرے تھے کہ اس بات کا اندازہ ہی نہیں رہا۔ نامزد کردہ وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے بھی بنی گالہ میں چیئر مین تحریک انصاف سے ملاقات کی ،جس میں حکومت سازی اور دیگر امور پر بات چیت کی گئی۔بعد ازاں میڈیا سے گفتگو میں محمود خان نے کہا کہ میں اﷲ کے بعد عمران خان کا شکر گزار ہوں انہوں نے مجھے اس عہدے کے لیے نامزد کیا۔