BN

بیان واپس لینے کابھارتی مطالبہ مسترد ،ہر فورم پر کشمیریوں کی آواز بنونگا:مہاتیر محمد مقبوضہ کشمیر میں مزید 2 نوجوان شہید

بدھ 09 اکتوبر 2019ء





کوالا لمپور، سرینگر (مانیٹرنگ ڈیسک ،نیٹ نیوز، این این آئی ،آن لائن) ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں اپنی تقریر میں قابض بھارتی فوجیوں کے کشمیریوں پر مظالم اور قبضے سے متعلق بیان کو واپس لینے کے بھارتی دباؤ کو مسترد کرتے ہوئے کہاہے کہ جہاں جہاں موقع ملاکشمیریوں کی آواز بنوں گا جبکہ مقبوضہ وادی میں بھارتی فوج نے دہشتگردی کی تازہ کارروائی میں مزید2 نوجوانوں کو شہید کردیا۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد نے بھارتی حکومت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر سے متعلق اپنے ریمارکس کو واپس لینے کے مطالبے پر کہا کہ میں اپنی بات پر قائم ہوں اور حال ہی میں وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات میں بھی وہی بات دوہرائی تھی اور جہاں جہاں موقع ملا، کشمیریوں کی آواز بنوں گا۔ منگل کے روز صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ملائشین وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیر محمد نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں میری تقریر ملائشیا کے موقف کا فالواپ تھی۔ انہوں نے کہا کہ ممالک کے درمیان تنازعات تشدد سے نہیں خوش اسلوبی سے حل ہونے چاہئیں۔ ہمیں معلوم ہونا چاہئے کہ کشمیر کا تنازعہ کیسے حل کرنا ہے ۔ مہاتیر محمد نے کہا کہ جب ہم کوئی بیان دیتے ہیں تو اس کا مقصد کسی کو نشانہ بنانا نہیں ہوتا بلکہ ہمارا مقصد یہ ہے کہ دونوں فریق تشدد سے اجتناب کر کے مسئلہ گفتگو سے حل کریں۔ مہاتیر محمد نے کہا کہ پاکستان اور بھارت مذاکرات کا آغاز کریں یا پھر ثالثی کے لئے رضامند ہوں۔ مہاتیر محمد کے عالمی فورم پر مسئلہ کشمیر اُٹھانے پر مودی سرکار بلبلا اُٹھی اور وزارت خارجہ کے ترجمان نے ملائیشیا سے بیان واپس لینے کا مطالبہ کیاتھا۔ ادھر مقبوضہ کشمیر میں مسلسل 65ویں روز بھی وادی کشمیر اور جموں کے مسلم اکثریتی علاقوں میں بدترین فوجی محاصرے اور مواصلاتی ذرائع کی معطلی کی وجہ سے معمولات زندگی مفلوج رہے ۔کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق علاقے میں 5اگست سے تمام بازار بنداور ٹریفک معطل ہے جبکہ لوگوں کو خوراک اور ادویات سمیت اشیائے ضروریہ کی شدید قلت کا سامنا ہے ۔ اگرچہ قابض انتظامیہ نے تعلیمی ادارے اور سرکاری دفاتر کھول دیے ہیں تاہم طلباء اور عملہ سکولوں اور دفاتر سے غائب ہیں۔ دریں اثنا مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے ریاستی دہشتگردی کی تازہ کارروائی میں مزید 2 نوجوانوں کو شہید کر دیا ۔ضلع پلوامہ کے اونتی پورہ میں بھارتی فوج اور جے اینڈ کے پولیس کی مشترکہ ٹیم نے علاقے میں سرچ آپریشن شروع کیا۔ جس دوران سیکورٹی فورسز کی فائرنگ سے دو نوجوان شہید ہو گئے ۔ پولیس کے مطابق ایک شہید نوجوان کی شناخت عفید فاروق لون کے نام سے ہوئی ہے ۔ گاندربال ، بانڈی پونہ ، سرینگر ، اسلام آباد ، کلگام اور شوپیاں کے علاوہ دیگر علاقوں میں بھارتی فوجیوں کا تلاشی اور سرچ آپریشن جاری ہے ۔

 

 



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں