BN

اداریہ

صدرمملکت کا پارلیمنٹ سے پہلا خطاب


صدر مملکت عارف علوی نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب میں کہا ہے کہ کرپشن کو قابو کرنے کے لیے جہاں صاف شفاف نظام ضروری ہے وہیں احتسابی اداروں کو مضبوط کرنا بھی ضروری ہے۔ صدر مملکت کا عہدہ سیاسی وابستگیوں سے پاک وفاق کی علامت سمجھا جاتا ہے۔ سربراہ مملکت کی حیثیت سے ان کے پارلیمنٹ سے خطاب کی جہاں اہمیت ہے وہاںاس کو حکومت کے لیے گائیڈ لائن بھی تصور کیا جاتا ہے مگر بدقسمتی سے ہمارے ہاں یہ غلط روایات چل نکلی تھیں کہ ماضی میں صدر مملکت کا پارلیمان سے خطاب ہلڑ بازی اور ہنگامہ
بدھ 19  ستمبر 2018ء

لوٹی دولت واپس لانے کا پاک برطانیہ معاہدہ

بدھ 19  ستمبر 2018ء
اداریہ
پاکستان اور برطانیہ کے مابین جرائم کے خاتمے اور لوٹی دولت واپس لانے کا معاہد طے پا گیا ہے اس سے احتسابی عمل کو تیز کرنے اور مستقبل میں پاکستان سے دولت لوٹ کے باہر لیجانے جیسے جرائم کی روک تھام کرنے میں مدد ملے گی۔ یقینا یہ ایک اہم تاریخی معاہدہ ہے اور اسے نئی حکومت کی خارجہ پالیسی کی کامیابی قرار دیا جا سکتا ہے۔ اس حقیقت سے کون واقف نہیں کہ پاکستان سے اربوں روپے لوٹ کر برطانیہ‘ سوئٹزر لینڈ سمیت مغرب اور خلیجی ممالک کے بنکوں میں رکھے گئے ہیں۔ اس خطیر قومی خزانے کو ملک
مزید پڑھیے


ضمنی بجٹ کے خدوخال

بدھ 19  ستمبر 2018ء
اداریہ
وزیر خزانہ اسد عمر نے قومی اسمبلی میں سپلیمنٹری بجٹ پیش کر دیا ہے۔ انہوں نے بجٹ تقریر میں جو اعداد و شمار پیش کئے ان سے معلوم ہوتا ہے کہ ملکی معیشت زبوں حالی کا شکار ہے۔ کرنٹ اکائونٹ خسارہ 18سے 21ارب ڈالر ہے۔ وزیر خزانہ کا کہنا ہے کہ سٹیٹ بنک کے ذخائر تیزی سے کم ہو رہے ہیں‘ اس صورت حال میں بہتری کے لیے برآمداتی شعبہ کو اپنے پائوں پر کھڑا ہونا پڑے گا۔ ٹن پیک درآمدی اشیائے خورو نوش پر ڈیوٹی کی شرح بڑھانے کی تجویز دی گئی ہے ‘اس کے علاوہ 300پرتعیش اشیا پر
مزید پڑھیے


ریل سفر کو محفوظ بنانے کی ضرورت

منگل 18  ستمبر 2018ء
اداریہ
مسان اور سوہان ریلوے سٹیشن کے درمیان خوشحال خان ایکسپریس کا انجمن اور 7 بوگیاں پٹڑی سے اتر گئیں،جس سے 20 مسافر زخمی ہو گئے۔ مسافر ریلوے پر سستا، محفوظ اور بروقت منزل پر پہنچنے کے لیے سفر کرتے ہیں لیکن ریلوے کا سفر سستا ہونے کے ساتھ غیر محفوظ ہوتا جارہا ہے۔ گزشتہ پانچ سال میں ٹرینوں کے 520 حادثات جبکہ 14 بڑے سانحات ہوئے ہیں، اس کے باوجود محکمہ ریلوے ٹرین کے سفر کو محفوظ بنانے میں ناکام ہے۔ ریلوے کا نظام قدیم ضرور ہے لیکن فرسودہ نہیں، اس وقت بھی 85 فیصد حادثات پھاٹک یا پھر
مزید پڑھیے


قبائلی علاقوں میں تدریسی سرگرمیوں کی بحالی

منگل 18  ستمبر 2018ء
اداریہ
قبائلی علاقوں میں قائم تین کالجوں سمیت 600سے زائد تعلیمی اداروں میں تدریسی سرگرمیاں گزشتہ دس برس سے معطل ہیں۔ جنوبی وزیرستان کے علاقے اورکزئی اور محسود میں صورتحال زیادہ گھمبیر ہے جہاں سینکڑوں سرکاری سکول اور کالجوں میں تالے لگے ہوئے ہیں۔ ان علاقوں میں لڑکیوں کے 190سکول غیر فعال ہیں۔ تعلیمی اداروں کے غیر فعال ہونے کی وجہ سے ہزاروں اساتذہ جنوبی وزیرستان سے کراچی منتقل ہو گئے یا پھر حصول روزگار کے لیے خلیجی ممالک چلے گئے ہیں‘ بلا شبہ امن و امان کے قیام کے دوران پاکستان کے قبائلی علاقوں میں مجموعی طور پر قریباً6ہزار سے
مزید پڑھیے


ٹیکس اصلاحات کا فیصلہ

منگل 18  ستمبر 2018ء
اداریہ
اطلاعات ہیں کہ وفاقی حکومت نے ٹیکس اصلاحات کے لیے لائحہ عمل تیار کر لیا ہے۔ اصلاحاتی لائحہ عمل کے تحت فیڈرل بورڈ آف ریونیو کو ختم کر کے اس کی جگہ نیشنل ٹیکس اتھارٹی قائم کی جائے گی۔ اصلاحاتی عمل میں ٹیکسز کو سادہ اور شفاف بنانے کے لیے بعض تبدیلیوں کو بروئے کار لایا جائے گا۔ کارپوریٹ ٹیکس 20فیصد اور سیلز ٹیکس میں کمی کر کے اسے 8فیصد کیا جائے گا۔ کمپنیوں کے علاوہ آمدن کے تمام ذرائع پر 10فیصد فلیٹ ٹیکس عائد کیا جائے گا۔ اسی طرح ہر قسم کی آئٹمز پر دو فیصد کسٹم ڈیوٹی عائد
مزید پڑھیے


ٹیکس وصولی کا دائرہ کار بڑھانے کی ضرورت

پیر 17  ستمبر 2018ء
اداریہ
فیڈرل بورڈ آف ریونیوکے مطابق ڈیڑھ کروڑ افراد شاہانہ زندگی گزارنے کے باوجود ٹیکس ادا نہیں کرتے۔ ملک کی بائیس کروڑآبای میں سے صرف پندرہ لاکھ افراد ٹیکس گوشوارے جمع کراتے ہیں جن میں اکثریت کا تعلق تنخواہ دار طبقے سے ہے۔ کسی بھی ملک کو ترقی کے راستے پر گامزن کرنے کے لیے ٹیکس کا دائرہ کار بڑھانا ضروری ہوتا ہے مگر بدقسمتی سے پاکستان میں ٹیکس چوری کی اس قدر حوصلہ افزائی کی جاتی ہے کہ ملکی نظام چلانے کے لیے ہمیں غیروں کے سامنے جھولی پھیلانا پڑتی ہے۔ ترقی یافتہ ممالک میں امراء سے ٹیکس وصول کر
مزید پڑھیے


بھارتی بربریت سے مزید 6 کشمیری شہید

پیر 17  ستمبر 2018ء
اداریہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے مظالم دن بدن بڑھتے جا رہے ہیں اور اس نے مسلسل کئی دنوں سے نہتے کشمیریوں کے خلاف ظلم و جبر کا بازار گرم کر رکھا ہے۔ ہفتے کے روز بھی بھارتی فوج نے جارحیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے ضلع کالگام میں مزید چھ کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا جن میں حزب المجاہدین کے ایک کمانڈر گلزار بھی شامل تھے۔ قبل ازیں 13 ستمبر کو بھی بھارتی فوج نے ضلع بارہ مولہ، کپواڑہ اور یاسی کے علاقوں میں سات کشمیریوں کو شہید کردیا تھا۔ بھارتی فورسز کا طویل عرصہ سے اب یہ وطیرہ بن
مزید پڑھیے


ڈیم مخالفین کے خلاف عدالتی کارروائی کا عندیہ

پیر 17  ستمبر 2018ء
اداریہ
سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں پینے کے پانی سے متعلق معاملے کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ ’’جن لوگوں نے اب ڈیم کو روکنے کی کوشش کی ان کے خلاف آئین کے آرٹیکل 6کے تحت کارروائی کروں گا‘‘ اگرچہ اکثر ماہرین آرٹیکل چھ کو صرف آئین کی تنسیخ سے متعلق اہمیت دیتے ہیں تاہم چیف جسٹس کی جانب سے اس کے مطالعہ کی بات سے کچھ نئی تشریح یا ممکنہ قانون سازی کی طرف اشارہ ملتا ہے۔پانی کی کمی ایک سنگین مسئلہ بنتی جا رہی ہے جسے حل کرنے کے لیے نئے آبی
مزید پڑھیے


حج آپریشن میں خامیوں کی بھرمار

اتوار 16  ستمبر 2018ء
اداریہ
وزارت مذہبی امور کی بیوروکریسی نے پوسٹ حج آپریشن کے دوران پاکستانی حاجیوں کو بے یارومددگار چھوڑ دیا جس کے باعث بیس ہزار سے زائد حاجی وطن واپسی کے لیے سعودی عرب اور کراچی ایئرپورٹ پر ذلیل و خوار ہوتے رہے۔ حج ایک مذہبی فریضہ ہے لیکن ٹورز آپریٹرز وزارت مذہبی امور میں تعینات بیوروکریسی سے سازباز کر کے اسے کاروبار اور کمانے کا ذریعہ بنا لیتے ہیں اس بار بھی وزارت مذہبی امور میں تعینات افسران پرائیویٹ حج سکیم کے تحت من پسند ٹورز آپریٹرز میں حج کوٹہ تقسیم کرتے رہے جبکہ حجاج کو سعودی عرب بھجوانے اور ان
مزید پڑھیے