BN

اداریہ



لوٹی دولت کی واپسی : قانون سازی کی ضرورت


وزیر اعظم عمران نے نیو یارک میں ایک مکالمے میں اظہار خیال کرتے ہوئے ان اقدامات کا ذکر کیا جو پاکستان منی لانڈرنگ کے خاتمہ کے لئے کر رہاہے۔ انہوں نے بتایا کہ عالمی برادری کو منی لانڈرنگ کے خاتمہ کے لئے مل کر کام کرنا ہو گا۔ پاکستان لوٹی گئی رقوم کی واپسی کے لئے اقدامات کر رہاہے۔ ان کا یہ کہنا درست ہے کہ اگر منی لانڈرنگ نہ ہو تو رقوم کی منتقلی سے اتنے ٹیکس اکٹھے کئے جا سکتے ہیں کہ غربت کے خاتمہ اور ترقی پر پیسہ خرچ کیا جا سکے۔ وزیر اعظم کا اس امر
هفته 28  ستمبر 2019ء

بھارت کو انسداد دہشت گردی فورم میں شامل نہ کرنے کا فیصلہ

جمعه 27  ستمبر 2019ء
اداریہ
پاکستان اور روس نے بھارت کو انسداد دہشت گردی اور علاقائی رابطوں کو فروغ دینے کے پارلیمانی فورم میں شامل نہ کرنے پر اتفاق کیا ہے۔ بھارت کی 8لاکھ سے زائد فوج اور پیراملٹری فورسز مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین ترین پامالیوں کی مرتکب ہو رہی ہیں۔ ذرائع ابلاغ کے معطل ہونے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے بھارتی فورسز وادی میں ریاستی دہشت گردی مسلط کئے ہوئے ہیں اس کا ثبوت غیر جانبدار ذرائع یہاں تک کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کا کشمیر میں انسانی المیہ جنم لینے کا خدشہ ظاہرکرنا ہے۔ معصوم بچوں کو
مزید پڑھیے


گرین پاکستان کیلئے پلاسٹک بیگز کا خاتمہ ضروری

جمعه 27  ستمبر 2019ء
اداریہ
لاہور سے روزنامہ 92 نیوز کی رپورٹ کے مطابق پنجاب حکومت نے پولی تھین بیگز کی تیاری، فروخت، استعمال، اس کے ڈسپلے اور درآمد پر پابندی لگانے کیلئے قانون سازی کا فیصلہ کیا ہے۔ پاکستان میں ایک اندازے کے مطابق سالانہ 55ارب پلاسٹک تھیلے استعمال ہوتے ہیں پولی تھین بیگز کے اتنے بڑے پیمانے پر استعمال سے ماحولیاتی آلودگی کے ساتھ ساتھ نکاسی آب کے مسائل بھی پیدا ہوتے ہیں جس کا نظارہ ہم کراچی میں ہونے والی حالیہ بارشوں کے بعد دیکھ چکے ہیں۔ اس وقت کراچی میں شاپروں کے ان گنت ڈھیر لگ چکے ہیں رواں سال 14
مزید پڑھیے


نفرت انگیز بیانیہ سے نمٹنے کی ضرورت

جمعه 27  ستمبر 2019ء
اداریہ
وزیر اعظم عمران خان نے اقوام متحدہ میں اعلیٰ سطحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ نفرت انگیز تقاریراور اسلامو فوبیا کے خلاف موثر اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔ عمران خان نے بڑی جرأت کے ساتھ اقوام متحدہ کو آئینہ دکھاتے ہوئے نفرتوں کے سوداگروں کو باورکرایا ہے کہ اسلام ایک پرامن مذہب ہے ،جس کا دہشت گردی کے ساتھ کوئی تعلق نہیں۔ دنیا کی تاریخ میں رسول اللہ ؐ کا اسلامی انقلاب اس لحاظ سے بھی بے مثل ہے کہ اس عالمگیر انقلاب کی ابتدا کے وقت بھی خون کا ایک قطرہ نہیں بہا۔ بلکہ رسول اللہ
مزید پڑھیے


ینگ ڈاکٹر ز احتجاج کی کال پر نظر ثانی کریں

جمعرات 26  ستمبر 2019ء
اداریہ
حکومت کی طرف سے ایم ٹی آئی آرڈ یننس کے تحت پنجاب کے ٹیچنگ ہسپتالوں کو بورڈ آف گورنرز بنا کر خودمختاری دینے کے خلاف ینگ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف کا گرینڈ ہیلتھ الائنس پنجاب اسمبلی سے گورنر ہائوس تک لانگ مارچ کرنے پر مجبور ہے۔ پنجاب حکومت کے شعبہ صحت میں عاقبت نااندیشانہ تجربات کے باعث شعبہ صحت سے وابستہ سٹاف کی طرف سے آئے روز کی ہڑتالیں اور احتجاج معمول بن چکا ہے۔ حکومت کی طرف سے پہلے لیبارٹری ٹیسٹوں میں کئی گنا عوام دشمن اضافے کا فیصلہ کیا گیاتو اب ایم آئی ٹی ایکٹ کو
مزید پڑھیے




وفاقی کابینہ کے تمام فیصلوں پر عملدرآمد کی ضرورت

جمعرات 26  ستمبر 2019ء
اداریہ
اسلام آباد سے روزنامہ 92 نیوز کی رپورٹ کے مطابق ایک ماہ کے دوران کابینہ کے اجلاسوں میں کئے گئے۔ 46 فیصلوں میں سے 30 پر عملدرآمد نہیں کیا گیا اور اس سلسلے میں بیورو کریسی کی طرف سے رکاوٹوں کا سامنا ہے۔ اس میں کوئی شبہ نہیں کہ وفاقی کابینہ کے اجلاس باقاعدگی سے ہو رہے ہیں جن میں وزیر اعظم خود شریک ہوتے ہیں۔ یہ پہلی ایسی حکومت ہے جس میں کابینہ کے تواتر کے ساتھ اتنے اجلاس ہو چکے ہیں جس کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔ ظاہر ہے کابینہ کے اجلاس ترجیحی امور و معاملات کے
مزید پڑھیے


کشمیر میں زلزلہ کی تباہ کاریاں

جمعرات 26  ستمبر 2019ء
اداریہ
منگل کے روز پنجاب‘ کے پی کے اور آزاد کشمیر میں آنے والے زلزلہ نے کئی علاقوں میں تباہی مچا دی ہے۔اس موقع پر ہنگامی امداد والے اداروں کی کارکردگی‘ حفاظتی تدابیر اور قوانین پر عملدرآمد کے معاملات ایک بار پھر زیر بحث آ رہے ہیں۔ زلزلے سے زیادہ نقصان آزاد کشمیر کے میر پور‘ جاتلاں‘ بھمبر اور اس کے نواحی علاقوں میں ہوا۔ ڈزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے مطابق جاں بحق افراد کی تعداد 26‘ شدید زخمیوں کی 150جبکہ معمولی زخمیوں کی تعداد ساڑھے چھ سو کے قریب ہے۔ شدید زخمیوں کی حالت دیکھتے ہوئے ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ
مزید پڑھیے


فرانزک ایجنسی میں ماہرین کی کمی!

بدھ 25  ستمبر 2019ء
اداریہ
پنجاب فرانزک سائنس ایجنسی میں کام کرنے والے 32 سائنسدانوں میں سے 16 کے نوکری چھوڑنے کی وجہ سے ایجنسی کی کارکردگی بری طرح متاثر ہوئی ہے۔ گزشتہ حکومت نے 2009ء میں ایجنسی کو فعال کرنے کے لئے ایم فل اور پی ایچ ڈی سکالر بھرتی کئے اور ان کو جدید تربیت دلوانے کے لئے 8 کروڑ 70 لاکھ روپے خرچ کرکے امریکہ بھجوایا تاکہ عالمی معیار کی فرانزک رپورٹس فراہم کر کے مجرموں کے عدالتوں سے قانونی سقم کو جواز بنا کر بچ نکلنے کو روکا جا سکے۔پنجاب حکومت ایک پاکستانی نژاد ڈی این اے اینڈ سیرالوجی
مزید پڑھیے


وزیراعظم ایسے کرداروں پر نظررکھیں!

بدھ 25  ستمبر 2019ء
اداریہ
اسلام آباد سے روزنامہ 92 نیوز کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم عمران خان 208 ارب روپے گیس انفراسٹرکچر ڈیویلپمنٹ سرچارج تنازع کے بعد کابینہ کمیٹیوں میں وزراء کے فیصلوں کے بعد چوکنا ہو گئے ہیں۔ خبر کے مندرجات سے معلوم ہوتا ہے کہ کابینہ اور کابینہ کمیٹیوں میں موجود بعض مفاد پرست عناصر 208 ارب کی معافی کے متنازع معاملے کے بعد ابھی بھی نچلے نہیں بیٹھے اور وزیراعظم اور حکومت کی مزید سبکی کرانے کیلئے سرگرم عمل ہیں۔ 17 ستمبر کو وفاقی کابینہ کے اجلاس میں کابینہ کمیٹی برائے توانائی اور ای سی سی کے فیصلے، توثیق کیلئے
مزید پڑھیے


تنازع کشمیر کے پرامن حل کی کوشش

بدھ 25  ستمبر 2019ء
اداریہ
وزیر اعظم عمران خان اور صدر ٹرمپ کے مابین ملاقات اس حوالے سے اہم رہی کہ امریکی صدر نے تنازع کشمیر پر اپنی ثالثی کی پیشکش برقرار رکھی۔ صدر ٹرمپ جو ایک روز قبل ہیوسٹن میں بھارتی وزیر اعظم کے جلسہ میں شریک تھے، انہوں نے تسلیم کیا کہ نریندر مودی کا لہجہ جارحانہ تھا۔ صدر ٹرمپ سے ملاقات کے بعد جب پوچھا گیا کہ کشمیر کی صورت حال پر ان کا تبصرہ کیا ہے؟ اسی طرح ان سے مودی حکومت کے جابرانہ رویے پر امریکہ کی پالیسی دریافت کی گئی تو ایسے سوالات کو وہ ثالثی کی پیشکش اور
مزید پڑھیے