افتخار گیلانی



جنرل سلیمانی : طلسماتی شخصیت یا جنگی مجرم


امریکی ڈرون حملوں میں ایرانی ملٹری کمانڈر میجر جنرل قاسم سلیمانی اور عراق میں برسرپیکار شیعہ عسکری گروپ الحشد الشعبی کے نائب سربراہ ابو مہدی المہندس کی ہلاکت اور اسکے جواب میں عراق میں موجود دو امریکی اڈوں پر ایرانی میزائلوں کی بارش نے مشرق وسطیٰ کو ایک بڑی جنگ کے دہانے پر کھڑا کرکے رکھ دیا تھا۔ اب لگتا ہے کہ فی الحال جنگ کے باد ل چھٹ گئے ہیں، مگر دونوں فریق ایک طویل خفیہ اور اعصابی جنگ لڑنے کیلئے پر تول رہے ہیں۔ یوکرائن کے مسافر بردار طیارہ کو نشانہ بنانے اور اسکے مسافروں کی ہلاکت نے
منگل 14 جنوری 2020ء

بھارت : پہلے کمانڈر انچیف کی تقرری اور خدشات

بدھ 08 جنوری 2020ء
افتخار گیلانی
شاید جنرل سنگھ کے حکومت کے ساتھ اختلافات چیف آف ڈیفنس کے عہدے کی تقرری پر اثر انداز نہیں ہوتے، مگر جنوری 2012ء کی ایک دھند بھری رات کو خفیہ اداروں نے وزیرا عظم کو جگا کر بتایا کہ فوج کی اسٹرائک کور کی چند یونٹیںمتھرا، آگرہ، حصار اور بھرت پور سے کوچ کرکے دہلی کی طرف رواں ہیں۔ وزیرا عظم نے جب وزیر دفاع کو فون کیا تو معلوم ہوا کہ فوج کی اس حرکت کے بارے میں ان کو کوئی علم نہیں ہے۔ دہلی یا اسکے اطراف میں فوجی نقل و حرکت کیلئے وزارت دفاع سے منظوری لینی
مزید پڑھیے


بھارت : پہلے کمانڈر انچیف کی تقرری اور خدشات

منگل 07 جنوری 2020ء
افتخار گیلانی
بھارت میں جہاں اسوقت متنازعہ شہریت قانون کے خلاف جاری احتجاج نے وزیر اعظم مودی اور اسکے حواریوں کی چولیں ہلا کر رکھ دی ہیں، وہیں دوسری طرف حکومت نے فوج کے حوالے سے دورس عوامل کے ایک فیصلہ کو عملی جامہ پہنا کر ، ملک میں ایک نئے طاقت کے مرکز کی داغ بیل ڈالی دی ہے۔ جو بھارت کی تاریخ اور اسکے اقدار کیلئے ایک سنگ میل ثابت ہوسکتا ہے۔ فوج سے حال ہی میں ریٹائرڈ ہونے والے سربراہ جنرل بیپن راوت ، ملک کی دفاعی سروسز کے پہلے کمانڈر انچیف ہونگے۔ 1947ء تک برطانوی دور اقتدار میں
مزید پڑھیے


پولیس کی ہرزہ سرائی: مسلمانوں کے لئے پاکستان یا قبرستان

منگل 31 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
بھارت کی مشرقی ریاست بہار میں 2015کے اسمبلی انتخابات کی کوریج کے دوران، میں دربھنگہ ضلع سے نیپال کی سرحد سے ملحق علاقہ مدھوبنی کی طرف رواں تھا کہ راستے میں ایک پولیس ناکہ پر گاڑی کو رکنے کا اشارہ کیا گیا۔ انتخابات کی مہم کے دوران الیکشن کمیشن کی ہدایت پر باہر کی گاڑیوں کی خاص طور پر چیکنگ ہوتی ہے تاکہ ووٹروں کو لبھانے یا انکو رشوت دینے کیلئے کیش اور شراب کی ترسیل کو روکا جاسکے۔ پولیس والے جب تک گاڑی کی تلاشی لے رہے تھے، میں سڑک کنارے ایک ڈابھا کی طرف چل پڑا اور چائے
مزید پڑھیے


بھارت اور پاکستان کا نظام: احتساب، استحکام و انتقام(2)

بدھ 25 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
چیف جسٹس کے عہدے کے وقار کا بھی بھارت کے نظا م میں کس قدر خیال رکھا جاتا ہے کہ جب 2000میں اسوقت کے وزیر قانون رام جیٹھ ملانی نے بنگلور میں ایک تقریب کے دورن چیف جسٹس آدرش سین آنند کے رویہ کی بغیر ان کا نام لئے بالواسطہ شکایت کی تو وزیراعظم اٹل بہاری واجپائی نے بذریعہ فیکس فوراً ان سے استعفیٰ مانگا۔ جب تک و ہ واپس دہلی آجاتے، واجپائی نے ان کو وزارت سے الگ کرکے نیا وزیر قانون مقرر کر دیا تھا۔ گو کہ واپسی پر جیٹھ ملانی ، جو خود بھی معروف قانون دان
مزید پڑھیے




بھارت اور پاکستان کا نظام: احتساب، استحکام و انتقام

منگل 24 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی

بھارت کی آئین ساز اسمبلی میں آئین کا مسودہ پیش کرتے ہوئے معروف دلت لیڈر اور دستورساز کمیٹی کے سربراہ ڈاکٹر بھیم راو ٗ امبیڈکر نے کہا تھا کہ دنیا کا کوئی بھی آئین کامل نہیں ہوسکتا ہے۔ اسکو موثر اور قابل استعداد بنانا، روبہ عمل لانے والے افراد اور اداروں کی نیت اور ہیئت پر منحصر ہے۔ اسی تقریر میں انہوں نے مزید کہا کہ ایک اچھے سے اچھا آئین بھی اگر نااہل اور بے ایمان افراد کے ہتھے چڑ ھ جائے تو بد سے بد تر ثابت ہوسکتا ہے۔اسکو چلانے والے اداروں کے ذمہ داران اگر ذہین، فراخ
مزید پڑھیے


بھارت: مسلمانوں کیلئے اور امتحان (2)

بدھ 18 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
مردم شماری کے اعداد و شمار ہی ان کے جھوٹ کی پول کھول دیتے ہیں۔ 1951 میں جب پہلی بار متحدہ پاکستان میں مردم شماری ہوئی تو غیر مسلم آباد کا تناسب 14.20فیصد تھا۔ مغربی پاکستان میں اقلیتی آبادی کا تناسب 3.44فیصد ، جبکہ مشرقی پاکستان حال بنگلہ دیش میں 23.20فیصد اقلیتیں آباد تھیں۔ پاکستان میں 1971کی مردم شماری کے مطابق غیر مسلم آبادی 3.25فیصد ریکارڈ کی گئی۔ اسی طرح 1981ء میں 3.30فیصداورپھر 1998ء میں اقلیتی آبادی 3.70فیصد پائی گئی۔ پاکستان میں 2017ء میں ہوئی مردم شماری کے نتائج ابھی شائع نہیں کئے گئے ہیں۔ ان اعداد و شمار کے
مزید پڑھیے


بھارت: مسلمانوں کیلئے اور امتحان

منگل 17 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
حال ہی میں جبب بھارت کے شمال مشرقی صوبہ آسام میں غیر ملکیوں کو ملک بدر کرنے سے قبل انکی شناخت کا مرحلہ سات سال بعد اختتام پذیر ہوگیا، تو اس کے نتائج حکمران بھارتیہ جنتا پارٹی یعنی بی جے پی کیلئے ایک طرح سے سانپ کے منہ میں چھچھوندر والا معاملہ ہوگیا تھا ۔ سپریم کورٹ کی مانیٹرنگ میں سات سال کی عرق ریزی کے بعد صوبہ کی 39.9ملین آبادی میں ایک تو محض 19لاکھ چھ ہزار افراد ہی ایسے پائے گئے جو شہریت ثابت نہیں کر پائے۔ دوسرا بتایا گیا کہ ان میں سے11 لاکھ افراد ہندو اور
مزید پڑھیے


افغانستان کی امن مساعی کے پیچ و خم اور کشمیر

بدھ 11 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
’’افغانستان میں ہر کوئی آپ کو بتائے گا کہ انتخابی مہم کے دوران ، افغانستان کے طول و عرض میں سب سے بڑے اور پر ہجوم جلسے اور جلوس ، اسی پارٹی کے تھے ۔ہم نے ثابت کر دیا کہ ہماری پارٹی کسی خاص نسل اور علاقہ کی نمائندگی نہیں کرتی ہے، بلکہ پورے ملک کی نمائندہ تنظیم ہے۔‘‘ انتخابی نتائج کا ابھی اعلان تو نہیں ہوا ہے۔ مگر پروفیسر صاحب کا کہنا ہے کہ ان کے اعلان کے بعد کسی بحران سے نمٹنے کیلئے ان کی پارٹی کے ذمہ داران دیگر سیاسی جماعتوں کے ساتھ روابط
مزید پڑھیے


افغانستان کی امن مساعی کے پیچ و خم و کشمیر

منگل 10 دسمبر 2019ء
افتخار گیلانی
دوحہ میں امریکہ اور طالبان کے درمیان، مذاکرات کے از سر نو آغاز کے ساتھ اب یہ یقینی لگ رہا ہے کہ فریقین سنجیدگی کے ساتھ کسی معاہدے کو حتمی شکل دینے میں مصروف ہیں۔ حال ہی میں اسلام آباد اور آزاد کشمیر کے دارالحکومت مظفر آباد میں انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز کی طرف سے منعقد ایک سمینار میں افغانستان میں حزب اسلامی کے ایک اہم راہنما اور ملکی انتخابات میں نائب صدر کیلئے امیدوار پروفیسر فضل ہادی وزین سے ملاقات ہوئی۔ مظفر آباد سے گڑھی حبیب اللہ ، مانسرہ اور ایبٹ آباد کے راستے اسلام آباد واپسی کے
مزید پڑھیے