BN

اوریا مقبول جان

جوعِ سلطاں ملک و ملت را فنا ست

بدھ 04 جولائی 2018ء

’’سلطان کی بھوک تو ملک و ملت کو کھا جاتی ہے۔‘‘ مثنوی اسرار خودی کے فارسی شعر کے دوسرے مصرعے کا یہ ترجمہ انسانی عروج و زوال کی کہانی کا مرکزی نکتہ خیال ہے۔ پورا شعر یوں ہے

آتش جان گدا جوع گدا است

جوع سطاں ملک و ملت را فنا ست

ایک فقیر کی بھوک کی آگ صرف اس کی جان کھا لیتی ہے لیکن حکمران کی بھوک پوری ملک و ملت کو کھا جاتی ہے۔ اس شعر کی تفسیر بھی اگر دنیا بھر میں کہیں نظر آتی ہے تو اس ملک میں جس کا خواب علامہ اقبال نے دیکھا تھا۔ یوں
مزید پڑھیے


خضر سوچتا ہے ولر کے کنارے

پیر 02 جولائی 2018ء
پاکستانی سیاست کی گہما گہمی میں گم عمران، نواز شریف، زرداری اور فضل الرحمن کو دیوتا یا شیطان ثابت کرنے میں منہمک میڈیا، سوشل میڈیا اور متحرک سیاسی کارکنان کو اندازہ تک نہیں کہ ان کے آس پاس کیا کچھ بدل رہا ہے اور دور دراز سے کون کون ہے جو اس تبدیلی سے خوفزدہ و پریشان ہوکر اپنے مفادات کے تحفظ کے لیے میدان میں اتر آیا ہے۔ گزشتہ پندرہ سالوں سے بنگلہ دیش کے کاکس بازار سے لے کر افغانستان کے دریائے ایموں کے کنارے آباد شہروں تک ایک بہت بڑا میدان جنگ منتخب کیا گیا تھا۔ اس
مزید پڑھیے


گاربیج ان۔گاربیج آئوٹ

جمعه 29 جون 2018ء

انگریز کی تربیت یافتہ سول بیورو کریسی اور اسی کی نرسری میں پل کر جوان ہونے والی سیاسی اشرافیہ کا یہ اتحاد قیامِ پاکستان سے پہلے ہی اس قدر مقدس اور محترم بنا دیا گیا تھا کہ ان کے زیر اثر علاقوں کی حدود کو چھیڑنا، تبدیل کرنا یا وہاں کسی اور نسل اور رنگ و زبان کے لوگوں کو آباد کرنا انتظامی طور پر جرم تصور ہوتا تھا۔ ان دونوں نے مل کر ضلع، تحصیل اور پٹوار سرکل تک لوگوں میں تقسیم کی لکیریں کھینچی تھیں۔ ہر لکیر کے اندر موجود علاقے میں ایک شخص کو با اثر اور
مزید پڑھیے


گاربیج ان۔ گاربیج آؤٹ

بدھ 27 جون 2018ء
آج سے تقریبا تیس سال قبل پاکستان سمیت دنیا کے تمام پسماندہ، نیم پسماندہ اور ترقی پذیر ممالک میں ایک جنون پیدا ہوا کہ جدید دنیا میں داخلے کے لئے کمپیوٹر سیکھا جائے۔ اگلی صدیاں کمپیوٹر کی صدیاں ہیں اور جو اس سے بے بہرہ اور نا بلد رہ گیا، اس کی پسماندگی پر مہر لگ جائے گی۔ اس رجحان نے پاکستان میں ایک وبائی صورت اختیار کر لی۔ ہر گلی کی نکڑ اور ہر نو تعمیر عمارت کی کسی منزل پر ایک کمپیوٹر کی تعلیم کا ادارہ کھل گیا۔ برسات کے مینڈکوں اور حبس کے عالم میں اچانک پھوٹ
مزید پڑھیے


کیا ہم حالت عذاب میں ہیں؟

پیر 25 جون 2018ء
سخت پریشانی و مایوسی میں ایک فقرہ عموما لوگوں کی زبان پر ہوتا ہے ، ’’سب بلاؤں نے ہمارا ہی گھر دیکھ لیا ہے‘‘۔ پاکستان میں بسنے والے وہ لوگ جو اسے اپنی آخری پناہ گاہ اور جائے امان سمجھتے ہیں، ان میں اہل نظر ہوں یا اہل تدبیر، اللہ کی ذات پر بھروسہ اور توکل کرنے والے ہوں یا قوت بازو کو سرمایہ حیات سمجھنے والے سب کے سب پریشان و مضطرب ہیں۔ دس سالہ ’’عظیم‘‘اور ’’بابرکت‘‘ جمہوری دور اور جمہوری تسلسل کے بوئے گئے کانٹے چننے کا مرحلہ ہے اور آٹھ سالہ جنرل پرویز مشرف کی بوئی گئی
مزید پڑھیے


’’را روان دی‘‘ وہ آ رہے ہیں

جمعه 22 جون 2018ء

کابل کی سڑکوں پر اگر کوئی عید کے دنوں میں موجود ہوتا تو اس کی آنکھوں کے سامنے جو منظر تھا وہ ناقابل یقین حد تک حیرت انگیز تھا۔1995ء میں اپنے ظہور کے بعد سے لے کر اب تک جن کو دنیا بھر کے میڈیا نے ایک خوفناک عفریت بنا کر پیش کیا تھا جن کے بارے میں علاقائی اور عالمی سطح پر جھوٹی کہانیاں تراشی گئیں آج وہی طالبان کابل کی سڑکوں پر ایسے گھوم رہے تھے جیسے لوگ انہیں صدیوں سے دوبارہ دیکھنے کو ترس رہے ہوں۔ دنیا تو انہیں دقیانوسی اور کیمرے کے دشمن کے طور پر
مزید پڑھیے


بھارت کے شام بننے کا خوف

بدھ 20 جون 2018ء
یہ زبان تو اقوام متحدہ کی لگتی ہی نہیں، یہ اچانک کیا ہو گیا، محوِ حیرت ہوں کہ جس ایوان میں کشمیر کا ذکر زبان پر لانا ناممکن سا ہو گیا تھا اس عالمی ادارے کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر کے دفتر سے 14جون 2018ء کو پچاس صفحات پر مشتمل ایک رپورٹ جاری ہوئی ہے۔ جس کا عنوان ہے "Report on the situation of human Rights in Kashmir"یہ رپورٹ جون 2016ء سے لے کر اپریل 2018ء تک کی ہے۔ 8جولائی 2016ء کو برہان الدین وانی کی شہادت سے لے کر تازہ ترین پرتشدد واقعات تک یوں تو یہ رپورٹ
مزید پڑھیے


قومی ریاستوں کے بت اور چاند کا اختلاف

جمعه 15 جون 2018ء
عید یا رمضان آنے سے چند دن قبل ماہرین فلکیات کی جانب سے ایک نقشہ گردش کرنے لگتا ہے کہ چاند کی عمر کس ملک کی سرحد پر کتنی ہو گی اور وہ کس ملک میں واضح نظر آئے گا اور کس ملک میں اس کے آسمان پر دکھائی دینے کے آثار بہت کم ہیں۔ مسجدوں میں بیٹھے ہوئے وہ علماء امام اور پوری دنیا میں پھیلے ہوئے فقیہہ جو اس امت کو ایک جسد واحد کہتے ہیں‘ جن کی تقریروں کی شعلہ بیانیاں مراکش سے لے کر برونائی تک ملکوں ملکوں بسنے والے کلمہ گو مسلمانوں کو ایک امت
مزید پڑھیے


چشم مسلم دیکھ لے تفسیر حرف ’’یَنسلْون‘‘

بدھ 13 جون 2018ء
ڈیڑھ ارب مسلمانوں کے اس جم غفیر کو اس بات کا اندازہ تک نہیں کہ 1920 سے جو یہودی یورپ اور امریکہ سے اپنی پرآسائش زندگی چھوڑ کر بحر طبریہ کے کنارے وسیع و عریض صحرا میں آباد ہونا شروع ہوئے تھے۔ وہ اس وقت آسمان کی فضاؤں میں موجود دنیا کی سب سے بڑی جاسوسی کرنے والی قوت "Espionage Power"بن چکے ہیں۔ پوری دنیا میں بسنے والے سات ارب سے بھی زیادہ انسان ان کی براہ راست نگرانی میں ہیں۔ پہلی جنگ عظیم میں جنم لینے والی جاسوسی یا خفیہ ایجنسیاں جو دوسری جنگ عظیم کے بعد بہت زیادہ
مزید پڑھیے


اجنبی ہونے کے دن قریب ہیں

پیر 11 جون 2018ء
ایک وسیع و عریض ہال میں جمع ہونے والے اٹھارہ ہزار پرجوش مردوزن سے وہ انتہائی جوشیلے اور پرعزم لہجے میں گفتگو کر رہا تھا۔ ایک بڑے سٹیج کے پیچھے ایک دیوقامت سکرین تھی جس پر کبھی کبھی اس کے اشارہ ابرو پر سلائیڈ چلنا شروع ہو جاتیں۔ ایسی ہی ایک سلائیڈ پر دنیا کا نقشہ بنا ہوا تھا۔ اس میں اکثر ممالک میں نیلا رنگ بھرا ہوا تھا جبکہ باقی ممالک سرمئی رنگ کے تھے۔ اس نے نقشے کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا، کہ اب ہم دنیا کی ترقی و خوشحالی کیلئے ایک ضرورت بن چکے ہیں۔ آج
مزید پڑھیے