Common frontend top

ڈاکٹر جام سجاد


بندہ ِ صحرائی!


رؤسو نے درست کہا تھاکہ ’ذاتی مفاد اور مفادِ عامہ کے ٹکراؤ کے درمیان ریاست مناسب کردار ادا کرنے میں ناکام رہے تو معاشرتی بگاڑ ناگزیر ہوجاتا ہے‘۔ ہمارے معاشرے کی بنیاد کلی طور پر ’ذاتی مفاد‘ کے گارے سے اٹھائی گئی ہے۔ جہاں صرف ذاتی مفاد عزیز ہو وہاں اِنسانی جان ارزاں ہوجاتی ہے۔ اِنسانی حقوق، آزادی، آزادیِ اظہار جیسے تصورات ناپید ہوجاتے ہیں۔ اِس نفسا نفسی کے عالم میں جہاں انسانوں سے محبت ناقابل ِ معافی جرم ہو وہاں اگر کوئی انسان ’پرندوں‘ کی محبت میں مبتلا ہو وہ یقینا محبت کے قابل ہوگا۔ پچھلے دِنوں لال
اتوار 16 جون 2024ء مزید پڑھیے

سیکولر بھارت کا نظریہ جیت گیا!

جمعرات 06 جون 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
بھارت کے حالیہ الیکشن میں بھارتی عوام نے نریندر دمودرداس مودی کی نفرت، انتہاپسندی اور ہندوراج کے نظریے کی سوچ کو کلی طور پر مسترد کردیا ہے۔اس بار مودی نے لوک سبھا میں 400 پار (400 سے زائد نشستیں لینے) کا نعرہ لگایا تھا۔ اِس نعرے کے پیچھے کئی مضمرات پنہاں تھے۔ مودی کی خواہش تھی کہ وہ چار سو نشستیں لے کر سکیولر بھارت کا تصور بھارتی آئین سے نکال باہر کرے گا۔ یوں ’ہندستان‘ مراٹھا سوچ کے مطابق ایک ’ہندوؤں‘ کا وطن کہلائے گاجس میں ہندوہی حکمران ہونگے۔ یہ سوچ بنیادی طور پر راشٹریہ سوائم سیوک سنگھ عرف
مزید پڑھیے


اچھا استاد ملک کا سرمایہ!

اتوار 26 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
ڈاکٹر شیخ سعید بلاشبہ ایک بہادر، صاف گو، سچے اور کھرے دِل کے مالکانسانہیں۔ منافقت، مصلحت، منفی سیاست اِن کے قریب سے بھی نہیں گزری۔ گزشتہ سال اِنہیں اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور کی ’نعت اور قرات سوسائٹی‘ کا ایڈوائزر مقرر کیا گیا تو اِن کی قیادت میں نعت اور قرات(بوائزو گرلز) کے پنجاب وپاکستان بھر کے مقابلہ جات میں نمایاں پوزیشن حاصل کیں۔ اِسی طرح ایک مرتبہ نیشنل ٹیکسٹائل یونیورسٹی کے بین الاقوامی مقابلہ جات میں اول اور دوسری جگہ دوم پوزیشن حاصل کی۔ ڈاکٹر سعید نرم لہجے کے مالک بہترین اْستاد ہیں اور اپنے مضمون پہ ملکہ حاصل ہے۔نرم اور
مزید پڑھیے


محکمہ ِ زراعت، گندم خریداری اور کسان کی مشکلات

بدھ 22 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
رواں سال کِسان نے گندم وافر مقدار میں اْگائی اور اپنے اندر اْمید کی جْوت جگائی کہ شاید وہ نہ صرف قرض پہ لی گئی کھاد اور زرعی ادویات کی قیمتیں چکائے گابلکہ اپنی زندگی کو بھی خوشحال بنا پائے گا۔ شومئی قسمت موجودہ صورتحال میں کسان کی حالت پہلے سے ابتر ہوگئی ہے۔ دستیاب معلومات سے حکومت کے علم میں یہ بات لائی گئی ہے کہ سابق نگران وزیراعظم پاکستان انوار الحق کاکڑ نے وافر مقدار میں گندم درآمد کروالی تھی جو سرکاری گوداموں میں موجود ہے۔ جب یہ بات سامنے آئی تو حکومت ِ وقت نے انکوائری کمیشن
مزید پڑھیے


پنجاب کا نیا ’سلطان‘

بدھ 15 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
پاکستان پیپلز پارٹی سے تعلق رکھنے والے سلطان سردار سلیم حیدر خان نے صوبہ کے سینتالیسویں گورنر پنجاب کے آئینی عہدے کا حلف اْٹھالیا ہے۔ پیپلز پارٹی کو یہ آئنی عہدہ پنجاب میں گیار ہ سال بعد نصیب ہوا ہے۔ اِس جماعت سے تعلق رکھنے والے آخری گورنر مخدوم احمد محمود تھے جو 2012سے 2013تک اِس عہدے پر تعینات رہے۔ اْن سے قبل سردار لطیف کھوسہ بھی دو سال کیلئے گورنر پنجاب رہے مگر حالیہ الیکشن میں انہوں نے پاکستان پیپلز پارٹی کو چھوڑ کر پاکستان تحریک ِ انصاف جوائن کرلی اور لاہور سے ممبر قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔ نئے
مزید پڑھیے



جامعات ایسے چلیں گی؟ ……(2)

جمعرات 09 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
ان کارناموں کے ذریعے وہ نہ صرف مختلف حکومتی اداروں اور بین الاقوامی اداروں کے لئے مفید ثابت ہورہی ہیں بلکہ قومی ترقی میں بھی حصہ ڈال رہی ہیں۔ سرچ کمیٹیوں کو چاہئے کہ وہ ایسے وائس چانسلرز کو تلاش کریں جو ادارے بنانے کا تجربہ رکھتے ہوں، جو ادارے چلانا جانتے ہیں اور جو اداروں کو خود کفیل بنانے کا تجربہ رکھتے ہوں۔ ایسے کئی افراد ہمیں اپنے ملک میں مل جائیں گے جو سرکاری جامعات کو خود کفیل بنانے کا عزم رکھتے ہیں، جو اپنے ذاتی انفرادی مفادات کی بجائے اداروں کے مفادات کو ترجیح دیتے ہیں، ایسے
مزید پڑھیے


جامعات ایسے چلیں گی؟

بدھ 08 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
گزشتہ ڈیڑھ سال سے پنجاب کی تقریباً ساری جامعات مستقل وائس چانسلرز کی تعیناتی کی منتظر ہیں۔ سابق نگراں وزیراعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی کے دورِ حکومت میں جامعات میں مستقل وائس چانسلرز تعینات کرنے کا عمل شروع ہوتے ہی رک گیا تھا کیونکہ ایکٹنگ وائس چانسلرز نے اپنے کچھ ہرکاروں کے کاندھوں پر بندوق رکھ کر چلوا دی اور عدالتِ عالیہ کے ذریعے مستقل وائس چانسلرز کی تعیناتی کا عمل رکوادیا۔ نگراں حکومت مدت ِ ملازمت پوری کرنے کے بعد چلی گئی۔ آٹھ فروری کے جنرل الیکشن کے بعد پنجاب میں تاریخ کی پہلی خاتون وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز
مزید پڑھیے


امریکہ احتجاج کی زَد میں!

منگل 07 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
مِشی گن سٹیڈیم جسے عرفِ عام میں ’دی بِگ ہاؤس‘ یا بڑا گھر کے نام سے موسوم کیا جاتا ہے۔ یہ آن آربر میں یونیورسٹی آف مِشی گن کا فٹ بال سٹیڈیم ہے۔ یہ امریکہ کا سب سے بڑا جبکہ دنیا کا تیسرا بڑا فٹ بال سٹیڈیم ہے۔ واشنگٹن پوسٹ کی ایک خبر کے مطابق گزشتہ روز اِسی سٹیڈیم میں امریکہ بھر کی جامعات اور کالجز کے طلبہ و طالبات نے فلسطین میںاسرائیلی مظالم کے خلاف بھرپور احتجاج کیا۔ اخبار کہتا ہے کہ اِس سٹیڈیم میں تِل دھرنے کی جگہ نہ تھی۔اخبار نے احتجاج کرنے والوں کی تصویر بھی
مزید پڑھیے


چاہ ِیوسف سے صدا

هفته 04 مئی 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
مخدوم سید یوسف رضا گیلانی کو قومی اسمبلی میں 600افراد کو بھرتی کرنے کے ’جْرم‘ پر سابق آمر ریٹائرڈ جنرل پرویز مشرف نے نیب کے ذریعے 2001میں گرفتار کیا اور پانچ سال سے زائد عرصہ ’قیدی‘ رکھنے کے باوجود الزام ثابت کرنے میں ناکام رہے۔ اکتوبر 2006میں اْنہیں اڈیالہ جیل سے رہا گیاتو کوئی نہیں جانتا تھا کہ وہ چوبیس مارچ 2008کو اْسی آمر کے سامنے وزیراعظم پاکستان کے طور پر حلف اْٹھائیں گے۔ دوران ِ قید اِنہوں نے اڈیالہ جیل میں ایک کتاب تحریر کی جس کا عنوان ’چاہ ِ یوسف سے صدا‘ رکھا۔ کتاب بنیادی طور پر جیل
مزید پڑھیے


چولستان کی پُکار

اتوار 28 اپریل 2024ء
ڈاکٹر جام سجاد
چولستان کو نخلستان میں بدلنے کا خواب حقیقت کا روپ دھارنے کیلئے کسی انقلابی قدم کا منتظر ہے۔ مگر کوئی بھی انقلابی قدم جدید سائنسی علوم و تحقیق کے بِنا اَدھورا ہے۔ دنیا کے بیشتر ممالک بشمول آسٹریلیا، سوئٹزرلینڈ، جرمنی، دبئی، چین، اْردن، آذربائجان، سوڈان، ایران اور امریکہ نے جدید سائنسی تحقیق کو برائے کار لاتے ہوئے اپنے ناقابل ِ کاشت علاقوں اور صحراؤں کو سرسبز بنایاہے۔ڈاکٹر محمد علی رضا چین کی گینسو اکیڈمی آف ایگریکلچر ل سائنسز میں بطور ایسوسی ایٹ ریسرچر کے طور پر کام کررہے ہیں۔پچھلے دِنوں انہوں نے راقم الحروف کی توجہ ملک میں خوراک
مزید پڑھیے








اہم خبریں