BN

شاہد رند


بجٹ ، دفاع ، قبائلی علاقے اور بلوچستان


مئی کا مہینہ شروع ہوتے ہی وفاق او ر صوبوں میں اگلے سال کے بجٹ کو حتمی شکل دی جاری ہوتی ہے۔ پاکستان کی پارلیمانی جمہوریت میں جون کے مہینے میں سالانہ مالی اخراجات کا تخمینہ طے کیا جاتا ہے۔ بجٹ پیش ہوتے ہی آج تک یہی سنتے آئے ہیں کہ یہ بجٹ عوام دوست بجٹ ہوگا ۔ لیکن یہ جملہ حکومت کا دعویٰ ہوتا ہے حقائق اسکے بر عکس ہوتے ہیں گزشتہ تین ادوار میں ہر حکومت عوام دوست بجٹ پیش کرنے کا دعوی کرتی رہی ہے تاہم ساتھ ساتھ ایک جملے کا اضافہ ضرور
بدھ 15 جون 2022ء مزید پڑھیے

بلوچستان کے روایت شکن آغا شکیل اور حق دو تحریک

پیر 06 جون 2022ء
شاہد رند
بلوچستان میں پچھلا ہفتہ سرپرائز سے بھر پور رہا ۔ قدوس بزنجو قسمت کے دھنی ٹھرے دو وزراء اعلٰی کو ایوان اقتدار سے نکالنے والے قدوس بزنجو کیخلاف جب تحریک عدم اعتماد پیش ہوئی تو کمال مہارت سے پی ڈی ایم اور تحریک انصاف یعنی آگ اور پانی کے ملاپ سے قدوس بزنجو نے اپنی حکومت بچا لی۔ ابھی ایک دن ہی نہیں گزرا تھا بلوچستان میں بلدیاتی انتخاب کا میدان سجا اور ماحول بہت پرجوش رہا۔ سرکاری زرائع دعویٰ کرتے ہیں کہ ٹرن آئوٹ ساٹھ فیصد سے زائد رہا غیر سرکاری تنظیم فافن کی رپورٹ میں اس چالیس
مزید پڑھیے


بڑاسوال ریاست یا سیاست

اتوار 29 مئی 2022ء
شاہد رند
ملکی سیاست میں ایک ہیجان کی سی کیفیت ہے۔ ہر سیاسی جماعت کو ریاست سے زیادہ اپنی سیاست او ر اقتدار سے غرض ہے۔ اس میں چاہے ن لیگ ہو یا پیپلزپارٹی جے یو آئی ف ہو یا تحریک انصاف ہو ہر جماعت اس ہیجان میں یہ نہیں دیکھ رہی کہ اسکے اقدامات صرف سیاست بچانے کے ہیں ریاست بچانے کے نہیں۔ اور اگر سیاسی قیادت کا یہی رویہ رہا تو اسکا نقصان سیاست کو ہو یا نہیں ریاست کو ضرور ہوگا۔ اس وقت وفاق ،پنجاب اور بلوچستان میں ایک بحرانی صورتحال ہے۔ وفاق میں حکومت بن گئی ہے لیکن
مزید پڑھیے


بلوچستان: بلدیاتی نظام اورامیدیں

پیر 16 مئی 2022ء
شاہد رند
ملک میں سیاسی ہیجان کی کیفیت طاری ہے، جمہور اور جمہوریت کی علمبردار جماعتیں سلیکٹڈ اور امپورٹد حکومت نامنظور کے نعروں سے ملک گونج رہا ہے ،ن لیگ پی ٹی آئی اور پی ٹی آئی ن لیگ کے نقش قدم پر چل رہی ہے جبکہ بلوچستان میں پاکستان تحریک انصاف اور بلوچستان عوامی پارٹی دھڑے در دھڑے میں تقسیم ہورہی ہیں، جسکے نتیجے میں ممکن ہے مئی کے آخر میں بلدیاتی انتخابات میں یہ دونوں جماعتیں بلوچستان کی سیاست میں کہیں بہت پیچھے نہ رہ جائیں بلکہ کہیں فارغ ہی نہ ہو جائیں۔ سابق وزیر اعظم عمران خان ملک کے
مزید پڑھیے


معیشت کو سمگلنگ سے ہونیوالے نقصانات

منگل 26 اپریل 2022ء
شاہد رند
بلوچستان کے ضلع چاغی میں چند روز قبل ایک افسوسناک واقعہ پاک افغان بارڈر کے قریب پیش آیا جہاں سکیورٹی فورسز کی مبینہ فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق ہوا اس واقعے کو بنیاد بنا کر ایک احتجاج کا سلسلہ شروع ہوا اس احتجاج کے نتیجے میں چاغی میں قانون نافذ کرنے والے ادارے اور مشتعل افراد آمنے سامنے آئے مشتعل افراد نے قانون نافذ کرنے والے ادارے کے کیمپ کو پہلے گھیرا اور پھر پتھرائو شروع کردیا جسکے بعد وہاں بھی فائرنگ ہوئی جسکے نتیجے میں تقریباً سات افراد زخمی ہوئے پہلے جو واقعہ سرحد کے قریب پیش آیا
مزید پڑھیے



شارٹ آف لینتھ بائولنگ ، نو بالز

منگل 19 اپریل 2022ء
شاہد رند
سابق وزیر اعظم عمران خان نے جس اندا ز میں کرکٹ کھیلی اسہی انداز میںاپنے نیچرل سٹائل میں پورے رن اپ کیساتھ سیاسی میدان میں بائونسر مار رہے ہیں ۔ اب سیاسی میدان میں وہ ویسا ہی جوش دکھانے کے خواہش مند ہیں۔ستر سال کی عمر ہونے کے باوجود انہوں نے اپنے فٹنس کا بڑا خیال رکھا ہے لیکن گزرتی عمرکیساتھ ان کے پیس بیٹری کمزور ہوچکی ہے۔ فٹنس کیساتھ ضرور چند اچھے اوور کروا سکتے ہونگے لیکن اب ٹیسٹ میچ میں لمبے سپیل کروانا آسان نہیں ہوگا اور شومئی قسمت ان کے ساتھ ان کی سیاسی ٹیم
مزید پڑھیے


بیڈ گورننس کرپشن اور بھل صفائی

هفته 16 اپریل 2022ء
شاہد رند
گزشتہ دو دھائیوں سے جب بھی بلوچستان سے باہر جانا ہو بالخصوص لاہور یا اسلام آباد دو بنیادی سوال سننے کو ملتے ہیں بلوچستان کے حالات کیسے ہیں۔ جب جواب دیا جائے اب بہتر ہیں تو دوسرا سوال ہوتا ہے کہ بلوچستان کا مسئلہ کیا ہے اوراس مسئلے کا حل کیا ہے ان دو سوالوں کے جواب دیتے بیس سال گزر گئے۔ راقم کی دانست میں یہ سوال ہر بلوچستانی سے لاہور یا اسلام آباد میں پوچھا جاتا ہوگا۔ ہر زی شعور شخص اپنی اپنی علم معلومات اور سوچ کے مطابق ان سوالوں کا جواب دیتا رہا ہو گا۔ میرے
مزید پڑھیے


بلوچستان: ترقی اور ای ٹینڈرنگ کا منصوبہ

جمعرات 07 اپریل 2022ء
شاہد رند
چند سال قبل اسلام آباد سے لاہور براستہ موٹر وے ایک سفر کے دوران بلوچستان کے ایک سابق سینیٹر کے ہمراہ موجود تھا ،گفتگو کا آغاز موٹر وے کے سفر اور لاہور میں داخل ہوتے ہی اس شہر کی ترقی کودیکھ کر میں نے اپنے صوبے کے اس رہنما سے یہ سوال کیا کہ ساتویں این ایف سی ایوارڈ سے قبل ہمارا اور آپکا وطیرہ رہا کہ ہم روتے رہتے تھے کہ پنجاب کھا گیا وفاق نے حصہ پورا نہیں دیا لیکن ساتویں این ایف سی ایوارڈکے بعد تو بلوچستان کے سارے شکوے شکایتیں دور ہوگئیں ہیں۔ اب پیسے کی
مزید پڑھیے


زرداری ڈاکٹرائن یا گرینڈ نیشنل ڈائیلاگ

هفته 02 اپریل 2022ء
شاہد رند
چند ماہ قبل بلوچستان میں حکومت کی تبدیلی کا کھیل چاغی ڈاکٹرائن کے تحت کھیلا گیا۔ انہی صفحات پر تحریر کرچکا ہوںکہ بلوچستان سے شروع ہونے والا کھیل لاہور سے براستہ جی ٹی روڈ سے اسلام آباد جائیگا۔ ایسا کیوں تھا اس دلیل کی بنیاد کیا تھی سب سے پہلے اس کی وضاحت ضروری ہے کیونکہ وزیر اعظم عمران خا ن چئیرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور پرویز خٹک کیساتھ بلوچستان میں جام کمال کی حکومت کو گھر بھیجنا چاہتے تھے۔ جس کے لئے انہیں بی اے پی کے قدوس بزنجو کے دھڑے کی حمایت حاصل تھی اور ساتھ میں
مزید پڑھیے


ریکوڈک اور سیاسی ذمہ داری

جمعرات 24 مارچ 2022ء
شاہد رند
انیس جنوری دو ہزار بائیس کو انہی صفحات پر لکھ چکا تھا کہ ریکوڈک کے حوالے سے اگر موجودہ وفاقی یا صوبائی حکومت نے ایک بہتر ڈیل کو بھی مس ہینڈل کیا تو پاکستان کی معیشت کے بیل آؤٹ پیکج ریکوڈک سے ایک اور مس ہینڈلنگ ایک نئی تباہی کا پیغام ہوگی اور دنیا میں سونے کی پانچویں بڑی کان ریکوڈک اپنے نام کے لفظی معنوں کی طرح ریت کا ٹیلا ہی رہیگی۔ اب انیس مارچ دو ہزار بائیس کی شام اچانک محکمہ تعلقات عامہ بلوچستان نے نوید سنائی کہ بلوچستان صوبائی کابینہ نے ایک خصوصی اجلاس بلاکر ریکوڈک کے
مزید پڑھیے








اہم خبریں