ظہور دھریجہ


وسیب کی محرومیوں کا ذمہ دار جاگیرداری نظام


سرائیکی وسیب کاعام آدمی سخت مایوسی کا شکار ہے ۔اقتدار وسیب کے جاگیرداروں اور تمنداروں کے پاس ہونے کے باوجود مسئلے حل نہیں ہورہے۔اس لئے اس بات کی ضرورت ہے کہ جاگیرداری اور تمنداری کا خاتمہ کیا جائے۔خصوصاً جاگیردارانہ سوچ جب تک ختم نہیں ہوگی اس وقت تک وسیب کے مسئلے حل نہیں ہونگے۔نواب مشتاق خان گورمانی ، ملک خضر حیات ٹوانہ ، ممتاز خان دولتانہ ، نواب آف کالا باغ ملک امیر محمد خان ، ملک غلام مصطفی کھر ، نواب صادق حسین قریشی ، نواب عباس خان عباسی ، مخدوم سجاد قریشی ، فاروق خان لغاری ، سید
بدھ 26 فروری 2020ء

’’ بات مشکل سے بات ہوتی ہے ‘‘

منگل 25 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
سرائیکی وسیب کے جاگیردار ہمیشہ اسمبلیوں میں رہے مگر وہ اسمبلی میں بات نہیں کرتے اس کی ایک وجہ موروثی سیاست بھی ہے ،نسل درنسل سیاست میں آنیوالے جاگیرداوں کی اولادوں نے کبھی سیاسی تربیت کی ضرورت محسوس نہیں کی اور نہ ہی انہیں بات کرنے کا سلیقہ آتا ہے ۔ایک شاعر نے کیا خوب کہا بات ہیرا ہے ، بات موتی ہے بات لاکھوں کی لاج ہوتی ہے بات ہر بات کو نہیں کہتے بات مشکل سے بات ہوتی ہے ’’ رہنماؤں ‘‘ کے جم غفیر میں ایک شخص ایسا بھی ہے جو بات کرنے کا سلیقہ جانتا ہے ، اس شخص کا
مزید پڑھیے


پاکستانی زبانوں پر توجہ کی ضرورت

پیر 24 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
21۔فروری،ماں بولی کا عالمی دن پوری دنیاکی طرح پاکستان میں بھی منایا گیا ۔مختلف شہروں میں تقریبات ہوئیں ،جیسا کہ سرائیکی وسیب کے مرکزی شہر ملتان ،ڈی آئی خان ،بہاولپور،ڈی جی خان کے ساتھ ساتھ خان پور اور دھریجہ نگر میں بھی ماں بولی کا عالمی دن منایا گیا ۔اس موقع پر سیمینار ،ورکشاپ ،کانفرنسیں منعقد ہوئیں بعدمقامات پر امن ریلیاں بھی برآمدہوئیں ۔آج سے کچھ عرصہ پہلے پاکستانی زبانوں کو علاقائی زبانیں کہا جاتا تھا مگر حکومت پاکستان کے ادارے اکادمی ادبیات نے فیلصہ کیا کہ پاکستانی زبانوں کو علاقائی زبانیں کہنے کی بجائے پاکستانی زبانیں کہا جائے۔یہ ایک
مزید پڑھیے


انسانیت پہچان کی دہلیز پر

اتوار 23 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
میرے ماموں حضر ت مولانا احسان اللہ دھریجہ گزشتہ روز اللہ کو پیارے ہوگئے ، ممبر قومی اسمبلی شیخ فیاض الدین نے دھریجہ نگر میں تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے بجا اور درست کہا کہ مرحوم معروف عالم دین ہونے کے ساتھ ساتھ انسانیت سے پیار کرنے والے بہت اچھے دوست تھے ، ان کی وفات سے جو خلا ء پیدا ہوا ہے وہ مدتوں تک پُر نہ ہوسکے گا ، مولانا احسان اللہ دھریجہ 1947ء میں معروف عالم دین حضرت مولانا یار محمد دھریجہ کے گھر پیدا ہوئے ،دین کی تعلیم اپنے والد محترم سے حاصل کی اور عرصہ
مزید پڑھیے


بھٹو اور بھاشانی کے ساتھی افضل مسعود خان

هفته 22 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
گزشتہ روز پوری دنیا میں ماں بولی کا عالمی دن منایا گیا ، اس موقع پر مجھے پاکستان سرائیکی پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری مرحوم افضل مسعود خان ایڈووکیٹ یاد آ رہے ہیں ، جو کہ قانون دان ہونے کے ساتھ ساتھ صاحب بصیرت سیاستدان اور دیدہ ور دانشور بھی تھے ۔ ماں بولی کے عالمی دن کے حوالے سے جھوک سرائیکی ملتان میں ان کا خطاب تاریخ کا حصہ ہے اور میں اس کا ذکر آخر میں کروں گا ، پہلے خان صاحب کے بارے میں عرض کرنا چاہتا ہوں کہ انہوں نے زمانہ طالب علمی سے اپنی سیاست
مزید پڑھیے



21 فروری ماں بولیوں کا عالمی دن

جمعه 21 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
21 فروری ماں بولی کا عالمی دن ہے۔ پوری دنیا میں یہ دن نہایت ہی جوش و خروش سے منایا جاتا ہے۔ماں بولی کے عالمی دن کے پس منظر کے حوالے سے عرض کرنا چاہتا ہوں کہ21 فروری 1952 ء کو ڈھاکہ یونیورسٹی کے طلبہ نے اپنی بنگالی زبان کے حق میں جلوس نکالا ،سکیورٹی فورسز کی فائرنگ سے بہت سے طلبہ شہید ہوئے ، یہی بات مغربی اور مشرقی پاکستان میں تفریق کا باعث بنی اور علیحدگی پر منتج ہوئی۔ 1999ء میں بنگلہ دیش نے قرارداد پیش کی اور اقوام متحدہ نے 1952ء میں شہید ہونے والے بنگالیوں کی
مزید پڑھیے


قرآن مجید کے سرائیکی مترجم پروفیسر دلشاد کلانچوی

جمعرات 20 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
گزشتہ روز جھوک سرائیکی ملتان کی طرف سے معروف ادیب ، دانشورو متعلم پروفیسر دلشاد کلانچوی کی 23 ویں برسی منائی گئی اور مرحوم کی علمی و ادبی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا گیا ۔ پروفیسر دلشاد کلانچوی کو قریباً 70 کتابوں کے مصنف ہونے کے ساتھ ساتھ یہ اعزاز اور شرف بھی حاصل ہے کہ انہوںنے قرآن مجید کا سرائیکی میں ترجمہ کیا ۔ اس کے ساتھ وہ پہلے آدمی ہیں جو سرائیکی شعبہ اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور کے پہلے استاد ہیں اور یہ بھی ان کا کریڈٹ ہے کہ 1989ء میں شروع ہونے والے سرائیکی شعبہ میں پہلے
مزید پڑھیے


مخالفت کیوں؟

بدھ 19 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
ترجمان پنجاب حکومت محترمہ سمیرا ملک ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ 92 نیوز کی 5 ویں سالگرہ کی تقریب جھوک سرائیکی ملتان میں کرانے پر مبارکباد دیتی ہوں کہ 92 نیوز اخبار اور چینل کی بہت خدمات ہیں ، اس ادارے نے سابقہ حکمرانوں کی کرپشن کو بے نقاب کرنے میں اہم کردار ادا کیا ۔ انہوں نے کہا کہ 92 نیوز میں آپ کا کالم ’’ وسیب ‘‘ توجہ سے پڑھتی ہوں ، اس سے وسیب کی تاریخ اور جغرافیہ کو سمجھنے کے ساتھ ساتھ مسائل کا ادراک بھی ہوتا ہے ۔ میڈیا کی مثبت تنقید کا ہم خیر
مزید پڑھیے


کشمیر کا مسئلہ کب حل ہوگا؟

منگل 18 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
کشمیر کے مسئلے پر اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوترس ، ترکی کے صدر رجب طیب اردگان کے بیانات اور یورپی یونین کی قرارداد اہمیت کی حامل ہے ۔ لیکن سوال یہ ہے کہ کشمیر کا مسئلہ کب حل ہوگا؟ کشمیر کا مسئلہ بہتربر سوں سے حل طلب ہے ۔کشمیریوں کی تین نسلیں آزادی کیلئے قربان ہو چکی ہیں ، کشمیر کی آزادی کیلئے لاکھوں کشمیری مسلمانوں نے جام شہادت نوش کیا ، جو کہ عالمی برادری کیلئے سوالیہ نشان ہے ۔ کشمیری مسلمان اپنے وطن اور اپنی سرزمین کیلئے مسلسل قربانیاں دیتے آ رہے ہیں ، بھارت کی
مزید پڑھیے


شکار پر پابندی ۔ عملدرآمد ضروری ہے

پیر 17 فروری 2020ء
ظہور دھریجہ
قانون کوئی بھی ہو اصل بات عمل درآمد کی ہے ۔ ہمارے ہاں قوانین تو موجود ہیں اور آئین بھی موجود ہے مگر دیکھنا یہ ہے کہ اس پر کتنا عمل ہوتا ہے ۔ پاکستان میں دوسرے قوانین کی طرح شکار پر پابندی کا قانون بھی موجود ہے مگر اس پر کبھی عمل درآمد نہیں ہوا اور اس قانون کی سب سے زیادہ خلاف ورزی دوسروں کے ساتھ ساتھ آئین ساز ادارے سے وابستہ لوگ بھی کرتے ہیں ۔ ویسے تو پورے ملک میں شکار پر پابندی کے قانون کو توڑا جاتا ہے مگر پاکستان کے وسیع صحرا چولستان
مزید پڑھیے