BN

عدنان عادل



سی پیک کی رفتار تیز کریں!


چند ہفتے پہلے چینی کمپنیوں نے پاکستان میں دو بڑے ترقیاتی منصوبے مکمل کیے۔ بلوچستان کے علاقہ حب میں کوئلہ سے بجلی بنانے کا پلانٹ اور دوسرے ملتان سے سکھر تک موٹروے۔ دونوں منصوبے چینی سرمائے سے تعمیر کیے گئے۔ یہ کامیاب منصوبے اُس منفی پراپیگنڈے کی قلعی کھولنے کے لیے کافی ہیں جو پاکستان میں چینی سرمایہ کاری کے خلاف ایک مخصوص لابی پھیلاتی رہتی ہے کہ یہ پاکستان پر ایک بوجھ ہے۔ مخالفین کو اصل خطرہ یہ نہیں ہے کہ ہم چین کے دست نگر ہوجائیں گے بلکہ امریکہ اور اسکے زیر اثر مالیاتی اداروں کے چُنگل سے
اتوار 25  اگست 2019ء

معاشی ترقی کا چیلنج

اتوار 18  اگست 2019ء
عدنان عادل
بلاشبہ‘ اس وقت ملک کے معاشی حالات خراب ہیں۔ عوام کو افراط زر‘ کاروباری مندی اور بیروزگاری ایسی بلاوں نے ایک ساتھ گھیر لیا ہے۔ حکومت تسلی دے رہی ہے کہ یہ معاشی استحکام کا مرحلہ ہے جو ایک سال تک گزر جائے گا‘ اسکے بعد ترقی کا سفر شروع ہوجائے گا لیکن عوام کا اضطراب بڑھتا جارہا ہے۔ اسٹاک مارکیٹ دو سال کی مدت میں چوبیس ہزار درجے نیچے آچکی ہے۔ یہ گراوٹ اس بات کی نشان دہی کرتی ہے کہ سرمایہ کار مال لگانے کو تیار نہیں اور معیشت کی نمو بہت کم رہ گئی ہے۔ عالمی مالیاتی
مزید پڑھیے


کشمیرمزاحمت سے آزاد ہوگا

اتوار 11  اگست 2019ء
عدنان عادل
کشمیر پر پاکستانیوں کے دل اُداس ہیں۔ بھارت کے تازہ اقدام کے بعد لوگوں میں ایک بے بسی کا احساس ہے۔ قوم چاہتی ہے کہ کشمیری بھائیوں کی مدد کیلیے ہماری ریاست اور حکومت نتیجہ خیز اقدامات کریں۔ انہیں ظالم بھارتی سامراج سے آزادی دلائیں۔ پانچ اگست کے بعد پاکستان نے بعض اہم اقدامات کیے۔ پارلیمان کے مشترکہ اجلاس نے بھارتی اقدام کے خلاف متفقہ قرار داد منظور کی‘ حکومت نے بھارت سے دو طرفہ سفارتی تعلقات کی سطح کم کی‘ دونوں ملکوں کے درمیان بس‘ ریل سروس اور تجارت بند کی۔ ان فیصلوں کے ذریعے بھارت سے پاکستانی عوام
مزید پڑھیے


تمباکو‘ سگریٹ لابی کا زور

اتوار 04  اگست 2019ء
عدنان عادل
ہمارے ملک میں اڑھائی کروڑ افراد تمباکو نوشی کرتے ہیں‘ زیادہ تر سگریٹ نوشی۔ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ہمارے بیس فیصد بالغ افراد تمباکو کے نشہ میں مبتلا ہیں۔ گزشتہ سال تقریبا پونے دو لاکھ افراد اس نشہ سے پیدا ہونے والی موذی بیماریوں کے باعث موت کے منہ میں چلے گئے۔ جو شخص ایک آدمی کو قتل کرے تو اسے قاتل کہا جاتا ہے‘ اور جو چیز لاکھوں لوگوں کی موت کا باعث بنے اسے کیا کہیں گے؟ تمباکو‘ سگریٹ کا کاروبار کرنے والے اتنے طاقتور ہیں کہ ہر حکومت اس کی روک تھام کرنے میں
مزید پڑھیے


پٹڑی سے اُتری ریلوے

اتوار 28 جولائی 2019ء
عدنان عادل
دنیا بھر میں ریل گاڑی کا سفر محفوظ ترین سمجھا جاتا ہے لیکن پاکستان میں ٹرینوں کے حادثے آئے دن کا معمول ہیں۔کبھی دو ریل گاڑیوں کی ٹکر ہوجاتی ہے‘ کبھی چلتی ٹرین کے ڈبے پٹڑی سے اُتر جاتے ہیں‘ کبھی ر یلوے پھاٹک پر موٹر گاڑی اور ٹرین میں ٹکر ہوجاتی ہے۔ ان حادثات میں درجنوں لوگ لُقمہ اجل بن جاتے ہیں۔ ایک واقعہ کے بعد چند دن میڈیا پر شور بپا رہتا ہے‘ پھر اگلے ایکسیڈنٹ تک سب کچھ بھُلا دیا جاتا ہے۔ چند ہفتے پہلے صادق آباد کے قریب ایک مسافر ٹرین اسٹیشن پر پہلے سے کھڑی
مزید پڑھیے




ٹیکس چوری کا کلچر

اتوار 21 جولائی 2019ء
عدنان عادل
لاہور میں میرے ہئیر ڈریسر عثمان صاحب ایک چھوٹی سی دکان کے مالک ہیں۔ بال سنوارنے کے ساتھ ساتھ پراپرٹی کا کام بھی کرتے ہیں۔ بال بناتے ہوئے مجھ سے سماجی و سیاسی مسائل پرگفتگو کرتے رہتے ہیں۔ چند ماہ پہلے اچانک پوچھنے لگے ’میرے پاس دس لاکھ روپے ہیں۔ میں ان کے ڈالر خرید لوں؟ آجکل ڈالر بہت اوپر جارہا ہے۔‘ میں ذرا چونکا کہ انکے پاس سرمایہ کاری کے لئے اتنی رقم موجود ہے جو میرے پاس بھی نہیں حالانکہ وہ سال میں ایک روپیہ بھی انکم ٹیکس نہیں دیتے جبکہ میں گزشتہ بیس برسوں سے باقاعدہ
مزید پڑھیے


اکیس سے بیالیس کروڑ

اتوار 14 جولائی 2019ء
عدنان عادل
ہم بحیثیت قوم سیاست کی لفظی جنگوں‘ مناظرہ بازیوں میں اس قدر الجھے ہوئے ہیں کہ معاشرہ کے ٹھوس مسائل کے بارے میں سوچنے‘ بات کرنے کیلیے وقت نہیں نکال پاتے۔ جو اجتماعی معاملات ہماری بقا اور خوشحالی سے متعلق ہیں ہم اُن پر بہت کم توجہ دیتے ہیں۔ ملک کی تیزی سے بڑھتی ہوئی آبادی ایسے مسائل میں سے ایک ہے۔ پاکستان بننے سے ابتک ہماری آبادی میں سترہ کروڑ افراد کا اضافہ ہوچکا۔72 برس پہلے اس خطہ میں تقریبا پونے چار کروڑ انسان آباد تھے۔ اب پونے اکیس کروڑ ہیں۔ نتیجہ یہ کہ دستیاب پانی میں
مزید پڑھیے


ہمارا اخلاقی بحران

اتوار 07 جولائی 2019ء
عدنان عادل
ریلوے سے ریٹائرڈ فورمین محمد طاہر کا خاندان موہنی روڈ لاہور میں رہتا ہے۔ ان کی اکلوتی اولاد اطہر طاہر شادی کے سترہ سال بعد منتوں مرادوں سے پیدا ہوا۔ سولہ سالہ نوجوان نے گیارہویں جماعت کا امتحان دیا تو ماں باپ نہال تھے۔ اطہر کی پیشاب کی نالی میں پیدائشی طور پر کچھ رکاوٹ تھی۔ ڈاکٹروں نے وقفہ وقفہ سے دو آپریشن کرکے اسے دُور کردیا۔ دس دن پہلے اسے پیشاب میں تکلیف محسوس ہوئی‘پھر خون آنے لگا۔ ماں باپ اسے گورنمنٹ ہسپتال سید مٹھا اور گورنمنٹ ہسپتال میاں منشی لے گئے۔ دونوں جگہ ڈاکٹروں نے کہا کہ اسے
مزید پڑھیے


گیس کی مہنگائی

اتوار 30 جون 2019ء
عدنان عادل
بجلی اور گیس کی بڑھتی ہوئی قیمتوں نے عوام کے کڑاکے نکال دیے ہیں۔ چند روز پہلے قومی اقتصادی رابطہ کمیٹی نے ملک میں قدرتی گیس کی قیمتیں اوسطا پچیس فیصد بڑھانے کی منظوری دی۔ لیکن جو صارفین بہت زیادہ مقدار میں گیس استعمال کرتے ہیں انکے لیے یہ اضافہ 180 فیصد تک ہوگا۔ تاہم وفاقی کابینہ نے ابھی اس تجویز کو قبول یا مسترد کرنا ہے۔ تحریک انصاف کی حکومت آنے کے بعد گیس کی قیمتوں میں یہ دوسرا اضافہ ہوگا۔ اپوزیشن کے سیاستدان بھی گیس کی مہنگائی پر چیخ و پکار رہے ہیں لیکن اصل میں وہ خود
مزید پڑھیے


العطش‘ العطش

اتوار 23 جون 2019ء
عدنان عادل
لوگ بوند بوند پانی کو ترستے ہیں۔کہیں تین تین ماہ سے نلکے میں پانی نہیں آرہا۔ کہیں تین چار سال سے کہیں دس سال سے نہیں آرہا۔ پائپ لائن میں پانی نہیں لیکن ٹینکرز کیلیے دستیاب ہے، غریب لوگ اپنا پیٹ کاٹ کر کھارا پانی بھی ٹینکروں سے خریدتے ہیں۔ پینے کے پانی کا ڈبہ تیس، چالیس روپے میں بک رہا ہے۔ بہت سے علاقوں میں جو پانی نلکوں میں آتا ہے وہ گندگی ملا ہے جس سے تعفن اٹھتا ہے ۔ اسی سے لوگ نہاتے ہیں‘ وضو کرتے ہیں‘ مردے نہلاتے ہیں۔ کئی غریب علاقوں میں عورتیں دو
مزید پڑھیے