BN

یوسف عرفان


نسیم احمد آہیر… ایک عہد کی داستاں


نسیم احمد آہیر جوہر آباد کی جان ہیں۔ جوہر آباد ضلع خوشاب کا صدر مقام اور سرگودھا ڈویژن کا حصہ ہے۔ جوہر آباد ایک جدید طرز کا شہر ہے جس کی سڑکیں کشادہ اور دونوں جانب خوبصورت سبز راہداریاں ہیں۔ فی الحقیقت جوہر آباد اور شاہ پور صدر قدیم و جدید تہذیب کا آئینہ دار ہے۔ نسیم احمد آہیر کی شخصیت بھی جدید و قدیم کا حسین امتزاج ہے۔ ان کے ذکر کے بغیر پاکستان کی سیاسی و حکومتی تاریخ نامکمل ہے۔ انہوں نے 1970ء اور 1980 کے عشروں میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ ان کی عملی سیاست کا
بدھ 21  ستمبر 2022ء مزید پڑھیے

پاک افغان کشیدگی چہ معنی دارد!

جمعه 16  ستمبر 2022ء
یوسف عرفان
پاک افغان تعلقات میں کشیدگی‘ تلخی اور لڑائی بھارت اور اس کے سٹریٹجک عالمی اتحادی ممالک امریکہ‘ اسرائیل ‘ برطانیہ‘ روس وغیرہ کے حق میں ہے۔یہ پاک افغان تلخی اور دوری عالمی طاقتوں اور اداروں کے حق میں چند وجوہات اور اہداف کے حصول کے لئے ہے ان میں سے بعض اہداف کا ذکر درج ذیل میں ہے پہلا ہدف اہم ترین ہے جس کو سمجھے بغیر دوسرے اہداف کی تفہیم مشکل ہے۔نیا دور جنم لے رہا ہے جس کے خدوخال نئے عالمی سیاسی و معاشی رویوں کو متعین کر رہے ہیں۔برطانوی و فرانسیسی استعماری دور ختم ہو چکا۔آہنی روسی
مزید پڑھیے


سیاسی منظر نامہ

جمعرات 01  ستمبر 2022ء
یوسف عرفان
زرداری سب پہ بھاری ایک حقیقت ہے، جس نے تقریباً 40,35 برس پاکستانی سیاست میں بالواسطہ اور بلاواسطہ کردار ادا کیا ہے۔ یہ کردار منفی ہے یا مثبت‘ فی الحال اس سے سروکار نہیں۔ زرداری صاحب کا حقیقت نامہ ایک ایسی سچائی ہے جس کو جھٹلایا نہیں جا سکتا۔ زرداری صاحب کی سیاسی زندگی کا آغاز بینظیر بھٹو کے ساتھ شادی 18 دسمبر 1987ء سے ہوا۔ زرداری کی بالواسطہ سیاست کا دور 27 دسمبر 2007ء کو ختم ہوا اور بلاواسطہ دور تاحال ہے۔ زرداری صاحب ہر دو صورت میں سب پر بھاری رہے۔ بینظیر بھٹو کے بدترین سیاسی حریف
مزید پڑھیے


پاکستان اور تاریخی روایت

منگل 23  اگست 2022ء
یوسف عرفان
جنگ آزادی 1857ء تحریک پاکستان کی خشت اول ہے۔ پاکستان کے حصول کی بنیاد 1857ء تا 1900ء کے حالات‘ واقعات اور معاملات نے رکھ دی تھی۔ اس بنیاد کا بیج سرسید احمد خان کی علی گڑھ تحریک نے رکھاجو بعدازاں آل انڈیا مسلم لیگ کے قیام 1906ء اور قیام پاکستان 14 اگست 1947ء کی صورت میں تکمیلی منازل تک پہنچی۔ قائداعظم نے قیام پاکستان کے وقت بجا فرمایا تھا کہ پاکستان علی گڑھ یونیورسٹی کے میدان میں بنا ہے۔ یعنی علی گڑھ کے فارغ التحصیل طلباء اور اساتذہ نے تحریک پاکستان میں کلیدی کردار ادا کیا ۔یہ حقیقت ہے کہ
مزید پڑھیے


جنرل ضیاء الحق اور امریکہ

جمعرات 18  اگست 2022ء
یوسف عرفان
جنرل ضیاء الحق کا دور انتہائی پرآشوب اور پرفتن تھا۔ پاکستان کے تقریباً تمام ہمسایہ ممالک جنگ و جدل اور معاشی تباہ حالی کا شکار تھے۔ ایران خمینی انقلاب کی راہ پر گامزن تھا۔ ایرانی انقلاب نے پاکستان کے اندر انقلابی ہلچل پیدا کر رکھی تھی۔ حتیٰ کہ پاکستان کا مرکزی سیکرٹریٹ تقریباً تین دن معطل رہا۔ ایران عراق جنگ شروع ہوگئی۔ سارا مشرق وسطیٰ مذکورہ جنگ کی لپیٹ میں آ گیا۔ عربوں کے ذرائع آمدنی کم اور جنگی اخراجات بڑھ گئے۔ اجناس مہنگی ہو گئیں اور کرنسی کی قدر کم ترین سطح پر آگئی۔ مہنگائی اور غربت بڑھ گئی۔
مزید پڑھیے



پاکستان :ایک حقیقت، ایک سچائی

هفته 13  اگست 2022ء
یوسف عرفان
پاکستان ایک دن میں نہیںبنا۔یہ صدیوں کی کہانی ہے۔یہ ایک روایت ہے جس کی لاکھوں مسلمانوں نے اپنی جان‘ مال اور آل کی قربانی دے کر قائم رکھا ہے یہ روایت حقیقت اور سچائی کی آئینہ دار ہے۔ سابق مشرقی پاکستان خطے کی ہندو مسلم کشمکش کی روایت کا مظہر تھا ،بنگالی مسلمان خطے کی عظیم س مسلم روایت کے امین ہیں، انہوں نے ہندو بھارت کا حصہ بننے سے نہ صرف انکار کیا بلکہ مزاحمت کی نئی روایت اور جہت کی بنیاد رکھی۔ ریاست کا جنم دوچار برس میں نہیں ہوتا۔یہ کئی مراحل سے گزر کر بنتی ہے۔ان مراحل
مزید پڑھیے


آزادی انمول ہے

جمعرات 04  اگست 2022ء
یوسف عرفان
آزادی انمول ہے۔ریاست کا قیام انمول آزادی سے بھی بڑا ہے عظیم پاکستان ایک دن میں نہیں بنا۔اس کو بننے اور بنانے میں صدیاں بیت گئیں۔ آزادی کی قیمت پوچھنا ہو تو ہندوستان موجودہ بھارت میں موجود کروڑوں دلت اور اچھوت قوموں اور نسلوں سے پوچھیے جو تقریباً چار سے پانچ ہزار سال سے ہندو برہمن کا غلام ہے جبکہ یہ نسلیں قدیم یعنی پراچین ہند کی حکمران تھیں مگر جب سے برہمن کے ذات پات آہنی شکنجے میں جکڑے گئے ہیں‘اس وقت سے بنیادی انسانی حقوق Fundmental human rightsسے محروم ہیں۔غلامی کے مذکورہ طویل دور میں مذکورہ نسلیں اور
مزید پڑھیے


سیاسی مفاد یا فساد

جمعرات 28 جولائی 2022ء
یوسف عرفان
پاکستانی جمہوریت کی حالت اس ضعیف بڑھیا کی سی ہے جو دن بھر چرخہ کاتتی ہے اور شام پڑے‘ ادھیڑ دیتی ہے۔ گو پاکستانی جمہوریت مغربی نظام ریاست کی آئینہ دار ہے اور مغربی جمہوریت کی بنیاد عوامی حکومت‘ عوام کے ذریعے اور عوام کے لئے ہے جبکہ پاکستانی جمہوریت عوام سے دور‘ خواص کے ذریعے اور خواص کے ذریعے اور خواص کے لئے ہے عوام روز بروز ابتری اور بدحالی کا شکار ہو رہے ہیں فی الحال ان کے درج کا کوئی درماں نہیں۔پاکستانی جمہوریت مغربی نظام جمہوریت کی خامی اور بدصورتی کا مظہر بن کر رہ گئی ہیِِ
مزید پڑھیے


مسئلہ کشمیر چہ معنی دارد!

جمعرات 21 جولائی 2022ء
یوسف عرفان
پاکستان اور کشمیر دو جسم ایک جان ہیں۔اگر جسم کے کسی حصے کو نقصان پہنچا تو وہ پاکستان کو نقصان پہنچے گا۔کشمیر پاکستان کا دل ہے اگر دل پر دشمن کا ہاتھ اور گھات رہی تو پاکستان کا وجود اپنوں کے لئے دلدل بن جائے گا۔ برطانوی تقسیم ہند(3جون پلان 1947ئ) کے مطابق ریاست کشمیر کا الحاق پاکستان کے ساتھ ہونا تھا کشمیر پاکستان سے ملحق بلکہ متصل مسلم اکثریتی سرزمین ہے جہاں کے مسلمانوں کی برطانوی انگریز اور ہندو ڈوگرہ راجہ ہری سنگھ سے آزادی کے لئے عوامی تحریک جاری تھی کشمیر میں ہندو انگریز گٹھ جوڑ اتنا منہ زور
مزید پڑھیے


بھارتی مسلمانوں کی حالت زار

جمعرات 14 جولائی 2022ء
یوسف عرفان
’’بھارتی مسلمانوں کی آہ‘‘ کے مصنف محمد شریف خان اوکزئی لکھتے ہیں: بھارت میں مسلمانوں کا وجود شدید خطرات میں گھرا ہوا ہے۔غیر مسلم متحد اور متحرک ہیں جبکہ مسلمان منتشر اورافتراق کا شکار ہیں۔مصنف نے مذکورہ کتاب 2005ء میں لکھی۔انہوں نے علیگڑھ مسلم یونیورسٹی سے انجینئرنگ کی اعلیٰ تعلیم حاصل کی اور بھارت سول سروس سے وابستہ رہے۔یہ رام پور کے علمی‘ ادبی اور مزاحمتی گھرانے سے تعلق رکھتے ہیں۔ان کی بڑی بہن نگہت افلاک اردو ادب کی معروف شاعر‘ ادیب ‘ افسانہ نگار اور ناول نگار ہیں جبکہ نانا جان معروف شاعر حکیم عبدالھادی وفا ہیں۔مصنف بھارتی مسلمانوں
مزید پڑھیے








اہم خبریں