BN

ظہور دھریجہ


ڈیجیٹل دور اور کتاب دوستی


اس بارکتابوں کا عالمی دن 23 اپریل خاموشی سے گزر گیا۔ اس دن کے منانے کا مقصد ’’کتاب دوستی‘‘ ہے۔ سرائیکی کہاوت ’’لکھیا لوہا، الایا گوہا‘‘ یعنی زبانی بات جو تحریر میں نہ آسکے راکھ ہے جبکہ تحریر لوہے کی مانند ہے دوسری ملکوں کی طرح پاکستان کتاب کا عالمی دن منایا تو جاتا ہے مگر حکومت کی توجہ کتاب کی طرف بہت کم ہے۔ ہر سال کتابوں کا عالمی دن خاموشی سے گزر جاتاہے۔ سرکاری سطح پر کوئی تقریب منعقد نہیں کی جاتی 23 اپریل کو کتاب کے عالمی دن کو شیکسپیئر سے کیوں منسوب کیا گیا؟ اس کی
جمعرات 30 اپریل 2020ء

شبلی فراز، عاصم باجوہ اور دیوانہ

بدھ 29 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
شبلی فراز ، عاصم باجوہ اور بشیر دیوانہ صادق آبادی کے عنوان کا مطلب مذکورہ شخصیات کا تقابلی جائزہ نہیں بلکہ یہ عرض کرنا ہے کہ گزشتہ روز جو واقعات ہوئے ان کے مطابق وزیر اعظم کی معاون خصوصی محترمہ فردوس عاشق اعوان کی چھٹی ہو گئی اور معروف شاعر احمد فراز کے صاحبزادے شبلی فراز وفاقی وزیر اطلاعات بنا دیئے گئے اور صادق آباد سے تعلق رکھنے والے جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کو وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے اطلاعات کا منصب ملا۔ جہاں خوشی وہاں غم، کے مصداق تیسری بات یہ ہوئی کہ صادق آباد سے تعلق
مزید پڑھیے


دہشت گردی کب ختم ہوگی؟

منگل 28 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
دہشت گردی کب ختم ہوگی؟ یہ بہت بڑا سوال ہے بلا شبہ دہشت گردی کی ماں انتہا پسندی ہے ، یہ بھی حقیقت ہے کہ دہشت گردی کا باعث انتہا پسندانہ سوچ اور انتہا پسندانہ رویے ہیں ۔ آج میں مولانا طارق جمیل کے حوالے سے بات کرنا چاہتا ہوں لیکن سخت الفاظ میں مذمت کرتا ہوں ان دہشت گردوں کی جو وزیرستان میں سکیورٹی فورسز کے ساتھ بر سر پیکار ہیں، آئے روز دہشت گرد کاروائیوں کی خبریں آتی ہیں ، گزشتہ روز بھی دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کے دوران سپاہی سکم داد اور لانس نائیک عبدالوحید شہید
مزید پڑھیے


سید یوسف رضا گیلانی سے شکوہ

پیر 27 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی کا اخبارات میں بیان شائع ہوا ہے کہ میں نے اپنے پردادا سید صدرالدین گیلانی کی کتاب مرتب کر لی ہے اور اسے اردو، عربی، فارسی میں شائع کرا رہا ہوں ، خبر پڑھ کر میں نے گیلانی صاحب کو ایس ایم ایس کیا کہ آپ اردو ،عربی اور فارسی میں کتاب شائع کرا رہے ہیں ، کیا ہی اچھا ہو کہ اردو عربی فارسی کے ساتھ سرائیکی میں بھی اس کی اشاعت ہوکہ سرائیکی آپ کی مادری زبان ہونے کے ساتھ ساتھ ملک کے وسیع خطے کی زبان ہے اور چاروں صوبوں
مزید پڑھیے


علم دوست دیال سنگھ

اتوار 26 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
مزاحیہ کتابوں میں سکھوں کے لطیفے مشہور ہیں جس کا مقصد یہ ہے کہ سکھ عقلمند نہیں ہوتے، مگر کچھ ایسے بھی ہیں جو کہ صرف علم دوست ہی نہیں انسان دوست بھی تھے۔ ان میں ایک نام دیال سنگھ کا ہے۔ پچھلے دنوں تحریک چلی کہ غیر مسلموں کے نام پر قائم اداروں کے نام تبدیل کر دیئے جائیں۔ ہزار اختلاف کے باوجود سابق وزیرا علیٰ شہباز شریف کا یہ عمل اچھا ہے کہ انہوں نے دیال سنگھ کالج، گنگا رام ہسپتال اور گلاب دیوی کا نام تبدیل نہیں ہونے دے ۔ جو انسان بھی اچھا کام کرے اُس
مزید پڑھیے



پاک چین دوستی ۔تاریخ کا سبق

جمعرات 23 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ دنیا کورونا سے لڑ رہی ہے، کسی کو اندازہ نہیں کہ صورتحال کب بہتر ہو گی۔ وزیر اعظم سے ملاقات کرنے والے عظیم سماجی رہنما فیصل ایدھی میں بھی کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی جس کی بناء پر وزیر اعظم کو بھی اپنا ٹیسٹ کرانا پڑا، یہ مسلمہ حقیقت ہے کہ کورونا نے پوری دنیا کو بدل کر رکھ دیا ہے۔کورونا ختم بھی ہو جائے تب بھی دنیا کو سنبھلنے میں بہت وقت لگے گا۔ کورونا فاصلے جغرافیائی فاصلوں کا روپ بھی دھار سکتے ہیں۔ احتیاط کے ساتھ ساتھ بیدار ہونے
مزید پڑھیے


شاعر مشرق علامہ اقبال کا وسیب سے تعلق

بدھ 22 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
شاعر مشرق علامہ اقبال 9 نومبر 1877ء کو شیخ نور محمد کے گھر پیدا ہوئے ۔ 21 اپریل 1938 ء آپ کا یوم وفات ہے ۔ علامہ اقبال ایک شخص نہیں ایک عہد کا نام ہے ۔ آپ کی شخصیت کے مختلف حوالوں پر بہت کام ہوا ہے ، سینکڑوں کتب مارکیٹ میںآ چکی ہیں ، البتہ سرائیکی وسیب کا پہلو تشنہ ہے ۔ اسی کمی کو پورا کرنے کیلئے ’’ علامہ اقبال اور سرائیکی وسیب ‘‘ کے عنوان سے میں نے سرائیکی میں کتاب لکھی ، جسے بہت پذیرائی حاصل ہوئی ، میں نے تاریخی حوالے سے لکھا کہ
مزید پڑھیے


عمران خان بحیثیت سیاستدان

پیر 20 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
صدر عارف علوی نے کہا کہ کورونا سے متعلق وزیراعظم کے فیصلے بہتر ثابت ہوئے کورونا لاک ڈائون کے دوران متوازن حکمت عملی کا پاکستانی عوام کو فائدہ ہوا ہے یہ حقیقت ہے کہ کورونا لاک ڈائون کے معاملے پر وزیراعظم عمران خان کا موقف نرمی کے حق میں رہا جس کا عام آدمی کو فائدہ ہوا ہے۔ ابھی ضرورت اس بات کی ہے کہ جزوی طور پر دکانیں اور پبلک ٹرانسپورٹ کو بھی کھلنا چاہیے تاکہ تعمیراتی شعبے کے مستری مزدور کام پر جا سکیں۔ اسی طرح کپڑے کی دکانیں ہی نہیں کھلیں گی تو درزی ہاتھ پہ ہاتھ
مزید پڑھیے


وزیر اعلیٰ پنجاب کا یتیم بچوں کی کفالت کا اعلان

هفته 18 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
مورخہ 3 اپریل 2020ء کو کالم لکھا کہ صدام حسین کی موت کا ذمہ دار کون ہے؟ اس میں میں نے دوسری باتوں کے علاوہ یہ بھی لکھا کہ صدام کی موت کے ذمہ دار وسیب کے جاگیردار بھی ہیں جو ہمیشہ برسراقتدار رہے مگر اپنے علاقے میں غربت اور بیروزگاری کے خاتمہ کیلئے کوئی اقدام نہ کیا، میں نے اس موقع پر وسیب کے جاگیردار سیاستدانوں سے بھی اپیل کی کہ وہ بیوہ اور یتیم بچوں کی کفالت کریں۔مگر افسوس کہ کئی دن گزر گئے کسی جاگیردار اور کسی صاحب حیثیت نے کسی طرح کی مدد کا کوئی
مزید پڑھیے


وزیر اعظم کو دلیرانہ فیصلے کرنے ہوں گے

جمعرات 16 اپریل 2020ء
ظہور دھریجہ
گزشتہ روز اسلام آباد میں ہونے والے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں لاک ڈائون کی مدت میں دو ہفتے کی توسیع ، البتہ تعمیراتی شعبہ اور صنعتیں کھولنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ وزیر اعظم عمران خان نے بجا اور درست کہا کہ ایک طرف کورونا اور دوسری طرف بھوک ہے۔ اُن کا کہنا تھا کہ سمگلنگ ، ذخیرہ اندوزی اور مصنوعی قلت کے خلاف سخت قانون لا رہے ہیں، اب ملازم نہیں ، مالک گرفتار ہوں گے۔ اچھی بات ہے کہ وزیر اعظم عمران خان پہلے دن سے کرفیو اور سخت قسم کے لاک ڈائون کے خلاف ہیں۔
مزید پڑھیے