BN

عبدالرفع رسول


بھارتی آرمی چیف کی بڑھکیں یاطبل جنگ


بھارت کاجنگی جنون اورہندوتوا پر مبنی سیاست اس وقت عملی طور پر پاکستان سمیت خطہ کی سیاست کے لیے ایک بڑا چیلنج بنی ہوئی ہے ۔اگرچہ بھارت کا جنگی جنون ماضی میں بھی دیکھنے کو ملتاہے مگر بی جے پی اور بالخصوص نریندر مودی کی مجموعی سیاست عملا پاکستان اور مسلم دشمنی کی بنیاد پر کھڑی ہے۔انڈیاکے آرمی چیف جنرل منوج مکند نرونے 11جنوری کو دہلی میں منعقدہ اپنی پہلی میڈیا کانفرنس میں کہا ہے کہ پاکستانی کشمیرکے بارے میں انڈین پارلیمانی قرارداد موجودہے جس کے تحت پانچ اگست2019 ء سے قبل والا پورا جموں اور کشمیر ہمارا حصہ
پیر 13 جنوری 2020ء

امریکی میزبانی میں مگن اسلامی ممالک!

اتوار 12 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
سوال یہ ہے کہ کیامسلم اُمہ امریکی میزبانی پرشاداں وفرحاں ہے۔ اسی لئے سرسے پیرتک اپنے پورے وجودکوامریکہ کے سامنے فرش راہ کئے بیٹھی ہے ۔جب ہم امہ کی بات کرتے ہیں توفہرست ترتیب پانے کے وقت ٹاپ 10میں مشرق وسطی کے دولت سے مالامال ممالک نمایاں رہتے ہیں۔ مشرق وسطی میں رونما ہونیوالی تازہ ترین تبدیلیوں کے باعث خطے میں جنم لینے والے تنائو نے علاقے کے بیدار مغز مکینوں کی توجہ خطے میں موجود امریکی فوجی اڈوں کی طرف ایک مرتبہ پھر مبذول کروا دی ہے، جبکہ خطے کے 8ممالک اپنی سرزمین پر ان فوجی اڈوں میں اپنے
مزید پڑھیے


جواہر لعل نہرو یونیورسٹی پر آرایس ایس کاحملہ

جمعه 10 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
اتوار6جنوری 2020 ء کونئی دہلی کی جواہر لعل نہرو یونیورسٹی میں طلبہ وطالبات پرہونے والے تشدد کے بعد ہندوستان میں جاری احتجاجی تحریک کومزیدآنچ ملی۔ معروف جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے کئی ہوسٹلز میں اتوار کی شام کو طلبہ پر درجنوں نقاب پوش حملہ آوروں نے لوہے کے راڈ، لاٹھیوں اور پتھروں سے حملہ کر دیا جس کے نتیجے میں جواہر لعل نہرو یونیورسٹی یونین کی صدر آئشی گھوش سمیت 20 سے زائد طلبا زخمی ہوئے ہیں۔یونین کی صدر آئشی گھوش کو سر پر دو جگہ لوہے کی راڈ لگنے سے زخم آئے ہیں۔ نفاب پوش افراد’’ بھارت ماتا کی
مزید پڑھیے


جالبؔ اورفیضؔ کی گونج نے مودی کے بام ودرہلادیئے

بدھ 08 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
بھارت میں شہریت ترمیمی قانون کے خلاف جاری مظاہروں میں فیض احمد فیض اور حبیب جالب کا کلام چھایا ہوا ہے۔فیض اور حبیب جالب کے انقلابی ترانے ہندوستان میں گلی گلی گونج رہے ہیں۔ طلبہ اور نوجوان فیض اور جالب کی نظمیں گا گاکرمودی کو یہ بتانے کی کوشش کر رہے ہیں کہ تمہاراظلم اورتمہارایہ سیاسی جبرمساوات اور انصاف کے اصولوں کے خلاف ہے جوہمارے لئے ناقابل برداشت ہے ۔ فیض اور حبیب جالب کی نظموں کے اشعار نعروں کی صورت مودی سرکار کو للکار رہے ہیں اورمودی کے بام ودرکوہلارہے ہیں۔ بھارتی شہریت کے متنازع قانون کے خلاف احتجاج
مزید پڑھیے


کشمیر قراردادوں کا کیا ہوا

منگل 07 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
اکیسویں صدی کوبعض لوگ انصاف کی صدی قراردے کربڑی امیدیں باندھ چکے تھے ۔ اس صدی کابیسواں بر س جو2020کہلاتاہے بھی شروع ہوچکاہے مگرکشمیرسے فلسطین کے افق پرظلم کے سائے بدستورگہرارنگ جمائے بیٹھے ہیں۔کون ساانصاف، کہاں کاانصاف ،کون کرے گا انصاف۔کیاامریکہ انصاف کرے گاکہ جس نے کرہ ارض پر اکیسویں صدی کے آغاز میں ہی افغانستان اورعراق پر اتناظلم ڈھایاکہ چنگیزاورہلاکوبھی شرمسارہیں۔ 5 جنوری اہل کشمیر کے حافظے کی لوح پر ایک بھیانک یاد کے طور پر سوالیہ نشان بن کر محفوظ ہے جب بھی یہ دن آتا ہے تو کشمیریوں کو اپنے مقدر کی وابستگی کی وہ تاریخی داستانیں
مزید پڑھیے



کیاہندوستان اندلس بننے جارہاہے

اتوار 05 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
جب مودی سرکار اور آر ایس ایس ببانگ دہل یہ اعلان کر رہی ہے کہ ہم نے ہندوستان کو پوری اور کامل ہندو راشٹر بنانا ہے تو پھر ہندوستانی مسلمانوں کا اس ہندو راشٹر میں حشر کیا ہو گا محتاج وضاحت نہیں۔ کیونکہ یہ کوئی اسلامی مملکت نہیں بننے جا ری کہ جہاں باقی مذاہب کے پیروکاروں کے حقوق کا بھرپور تحفظ ہو۔ اس ہندو سٹیٹ میں ہندوئوں کے علاوہ کسی اور بالخصوص مسلمانوں کو رہنے کا حق حاصل نہیں ہو گا۔ 2020 ء کے آغاز پہ امن کی امیدوں اور خوشحالی کی تمنائوں کے ساتھ دنیا بھر میں جشن
مزید پڑھیے


مقبوضہ کشمیر!2019ء

جمعرات 02 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
پلوامہ ضلع میں14فروری 2019ء کو عادل احمد ڈار کے قابض بھارتی فوج پر فدائی حملے کے بعد انڈیا کے جنگی طیاروں نے26فروری 2019ء منگل کی شب سہ پہر کو منقسم کشمیرکی جنگ بندی لائن عبورکرکے پاکستان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کی ۔ انڈین فضائیہ کے طیارے کشمیرکی جنگ بندی لائن عبور کر کے مظفرآباد سیکٹر میں کئی میل اندر آئے اوربالاکوٹ کے جنگلات میں بم گراکرواپس چلے گئے۔تاہم یہ بم نہ تو کسی عمارت پر گرے اور نہ ہی اس سے کوئی جانی نقصان ہوا ہے۔خیال رہے کہ یہ71کے بعد پہلا موقع تھا کہ انڈین جنگی طیارے آزادکشمیرسے
مزید پڑھیے


ہندوستان کی مسلم قیادت خاموش کیوں؟

بدھ 01 جنوری 2020ء
عبدالرفع رسول
شہریت ترمیمی ایکٹ کم ازکم ہندوستانی مسلمانوں کے لئے کوئی حیرت واستعجاب کامعاملہ تھا اورنہ ہی وہ اسے کوئی انہونی سمجھ رہے ہیں۔یہی وجہ ہے کہ ان میں سے کسی کے چہرے پہ خوف کے آثار نظرنہیں آرہے۔ انہیں اس امرکابخوبی علم تھاکہ مودی ان کے لئے ہٹلربن کرآچکاہے ۔شہریت ترمیمی ایکٹ لائے جانے کے بعد سے ایک طرف باشندگان ہند میں روز بروز بے چینی بڑھتی جا رہی ہے ، مزاحمت میں ہر دن شدت آ رہی ہے، جو ایک خوش آئند اشارہ ہے اورممکن ہے کہ ہندوستان کے ٹوٹ جانے کایہ نقطہ آغاز ثابت ہو۔شہریت ترمیمی بل
مزید پڑھیے


بھارتی طلباء و طالبات نے مودی سرکار کوہلاکررکھ دیا

پیر 30 دسمبر 2019ء
عبدالرفع رسول
اس میں کوئی دورائے نہیں کہ مسلمانان ہندوستان کے خلاف مودی سرکار کی دشمنی کے خلاف بھارتی جامعات کے طلباء و طالبات کی یکسوئی اورہمہ جہت احتجاجی تحریک نے مودی اینڈکمپنی کوہلاکررکھ دیاہے ۔شہریت قانون کے خلاف بھارت کی بڑی بڑی دانش گاہوں میں احتجاج تیسرے نسل کے راہنمائوں کا پیش خیمہ ہے۔بلاشبہ بھارتی طلبا ء آج جو کردار ادا کررہے ہیں، وہ قابل تعریف ہے۔ ایک طرف وہ پوری قوت کے ساتھ احتجاجی تحریک چلارہے ہیں دوسری طرف وہ اپنی ذہانت ،فطانت ،صلاحیت اورقابلیت کی بنیاد پراعزازات اورگولڈمیڈلزکے مستحق ٹھرانے کے باوجودبھارتی مسلمانوں کے خلاف ہورہی
مزید پڑھیے


’’استنبول یاکوالالمپور ہو گر عالمِ مشرق کا جنیوا‘‘

اتوار 29 دسمبر 2019ء
عبدالرفع رسول
9/11کے بعد مسلم امہ کے خلاف ترتیب دیئے گئے ناپاک منصوبوں کے تحت عرب دنیاپرمسلط حکمرانوں کواس طرح زیرکرلیاگیا کہ وہ سیدھے امریکہ کی جھولی میں آگرے اوراسرائیل کے ساتھ انہوںنے ایک جائزمخاصمت کوختم کرکے مشرقِ وسطی کوامریکہ اوراسرائیل کے رحم وکرم پررکھ دیا ہے۔اب پورے عربستان میں اخوان المسلمین کاپیش کردہ نظریہ اورفلسطینی مجاہدین کافلسفہ متروک ہوگیا۔جس کامطلب یہ ہے کہ بیت المقدس کی بازیابی اورانبیاء کی مقدس سرزمین کی یہودسے آزادی اورنجات کے لئے بالواسطہ کوئی کوشش کرنابھی اب عرب حکمرانوں کے ایمان کاحصہ نہیں رہاہے بلکہ ان تمام باتوں کو وہ ازکارِرفتہ اور معدوم نظریات سمجھتے ہیں۔اس
مزید پڑھیے